اگست 19, 2014

Best #Urdu poetry - Yehi Bohat Hai Ke Dil Us Ko Dhund Laaya Hai



Yehi Bohat Hai Ke Dil Us Ko Dhund Laaya Hai
Kisi Ke Saath Sahi Wo Nazar To Aaya Hai

Karun Shikayatein, Takta Rahun Ke Pyaar Karun
Gaye Bahaar Ki Surat Wo Laut Aaya Hai

Wo Saamne Tha Magar Ye Yaqin Na Aata Tha
Wo Aap Hai Ke Meri Khwahisho Ka Saaya Hai

Azaab Dhup Ke Kaise Hain Baarishe Kya Hain
Fasil-E-Jism Giri Jab To Hosh Aaya Hai

Main Kya Karunga Agar Wo Na Mil Saka ‘Amjad’
Abhi Abhi Mere Dil Main Khayal Aaya Hai

یہی بہت ہے کہ دل اس کو ڈھونڈ لایا ہے
کسی کے ساتھ سہی وہ نظر تو آیا ہے

کروں شکائتیں، تکتا رہوں کہ پیار کروں
گئی بہار کی صورت وہ لوٹ آیا ہے

وہ سامنے تھا مگر یہ یقیں نہ آتا تھا
وہ آپ ہے کہ میری خواہشوں کا سایہ ہے

عذاب دھوپ کے کیسے ہیں بارشیں کیا ہیں
فصلِ جسم گری جب تو ہوش آیا ہے

میں کیا کروں گا اگر وہ نہ مل سکا امجد
ابھی ابھی میرے دل میں خیال آیا ہے
(امجد اسلام امجد)

By: Amjad Islam Amjad

کوئی تبصرے نہیں:
Write comments

خبروں اور ویڈیوز کے لئے ہماری ویب سائیٹ وزیٹ کیجئے: پوسٹ پر تبصرہ کرنے کے لئے شکریہ۔ آپ کا تبصرہ جائزے کے بعد جلد پیج پر نمودار ہوجائے گا۔ شکریہ

تازہ ترین

مشہور اشاعتیں

تازہ ترین خبریں

Recent Posts Widget