ستمبر 3, 2014

چترال: زمین کا خونی تنازعہ جس نے 2 جانیں لے لی

 



چترال (ٹی او سی رپورٹر) ضلع چترال کے مستوج سب ڈویژن کے گائوں زیئت میں زمین کے ایک پرانے تنازعے نے خونی شکل اختیار کرلی ہے۔ مزکورہ تنازعے میں گزشتہ سال نجم الرحمن نے بیٹوں کولیکر زمین کے اس تنازعے پر خلیل الرحمن ولد سلیم خان کو فائرنگ کرکے قتل کردیا تھا۔ اس وقت پولیس نے نجم الرحمن کوموقع پر جبکہ ان کے بیٹوں کو مختلف مقامات پر چھاپہ مارکر گرفتار کرلیا تھا۔ اس کیس میں اپنے بیٹوں کو بری کرنے کے لئے نجم الرحمن نے قتل کی ذمہ داری اپنے سر لے لی تھی۔ جو کچھ عرصہ جیل میں رہنے کے بعد ضمانت پر رہا ہوگئے تھے۔ اسطرح مقتول خلیل الرحمن کے لواحقین کو اںصاف نہ مل سکا تھا۔

اور زمین کا یہ تنازع تا حال حل طلب تھا۔ اور دونوں گروہوں کے درمیان حالت کشید ہ تھے۔ منگل کے روز خلیل الرحمن کے رشتے داروں نے نجم الرحمن کے بیٹے صادق الرحمن اور بھتیجے شریف اللہ پر کلاشنکوف سے شدید فائرنگ کردی جس کے نتیجے میں شریف اللہ موقع پر ہلاک ہوگئے جبکہ صادق الرحمن شدید زخمی ہوگئے، جسے فوراً ہسپتال منتقل کردیا گیا۔ صادق کے والد نجم الرحمن نے خلیل گروپ کے پانچ افراد پر تھانہ بونی میں مقدمہ درج کرایا ہے اور پولیس نے ملزمان خلیل، عطاء الرحمن، نصراللہ ، عبدلکریم اور دیگر کو گرفتارکرکے تفتیش شروع کردی ہے۔ 

(نوٹ برائے قارئین: اگر کسی کو دیگر تفصیل معلوم ہے تو پلیز نیچے کومنٹ بکس میں لکھ دیں)


کوئی تبصرے نہیں:
Write comments

خبروں اور ویڈیوز کے لئے ہماری ویب سائیٹ وزیٹ کیجئے: پوسٹ پر تبصرہ کرنے کے لئے شکریہ۔ آپ کا تبصرہ جائزے کے بعد جلد پیج پر نمودار ہوجائے گا۔ شکریہ

تازہ ترین

مشہور اشاعتیں

تازہ ترین خبریں

Recent Posts Widget