5 نومبر، 2014

'The Republican Party Is Back': GOP Celebrates Big Gains



روسی پارلیمانی کمیٹی برائے امور خارجہ کے صدرآلکسئی پوشکوو سمجھتے ھیں کہ کانگریس کے انتخابات میں صدر اوباما کی پارٹی یعنی ڈیموکریٹک پارٹی کے امیدواروں نے جو شکست کھائی ھے وہ در اصل خود صدر اوباما کی شکست ھے۔

پوشکوو نے ٹویٹر میں لکھا کہ موجودہ صدر امریکہ ووٹروں میں اس قدر غیر مقبول ھیں کہ انتخابی مہم کے دوران ڈیموکریٹک پارٹی کے امیدوار صدراوباما کے نام کا تذکرہ کرنے سے بھی ڈر رھے تھے۔ آلیکسئی پوشکوو کے مطابق اوباما کی صدارت سے زیادہ امیدیں وابستہ تھیں لیکن انکی صدارت گہری مایوسی کا سبب ھے۔ واضح رھے کہ منگل کو امریکہ میں ھونے والے انتخابات کے نتیجے میں ری پبلکن پارٹی نے کانگریس کا کنٹرول سنبھال لیا ھے۔ ابتدائی نتائج کے مطابق ری پبلکن پارٹی کو سینٹ میں مزید چھہ نشستیں حاصل ھوگئی ھیں یوں ایوان نمائندگان کے علاوہ سینٹ میں بھی ری پبلکن پارٹی کو ڈیموکریٹک پارٹی پر برتری حاصل ھو گئی ھے۔ اب سینٹ میں ری پبلکن پارٹی کے اراکین کی تعداد اکاون ھے اور ڈیموکریٹک پارٹی کے اراکین کی تعداد انچاس ھے۔

مزید پڑھیں: http://urdu.ruvr.ru/news/2014_11_05/279622690/?utm_source=dlvr.it&utm_medium=twitter

'The Republican Party Is Back': GOP Celebrates Big Gains
Republicans on Wednesday celebrated historic electoral gains and “a direct rejection of the Obama agenda” in races up and down the ballot on Election Night, predicting long-term gains for a reenergized GOP.

“The Republican Party is back,” said National Republican Congressional Committee Chairman Greg Walden. “We’re back with youth, we’re back with diversity, and we’re back with women.”

Walden added that the victory built by the GOP may be “a hundred –year majority.”

On the morning after Election Day, Republicans surveyed midterm results that saw them wresting back control of the United States Senate with room to spare, expanding their majority in the House and running up the score in competitive gubernatorial contests.

Republican National Committee head Reince Priebus told reporters that the results demonstrated voters’ rejections of Senate Majority Harry Reid’s tactics in the upper chamber – and, more importantly, the Obama administration as a whole.

And he pointed out Democratic losses in blue states like Illinois and Maryland – where Obama campaigned with gubernatorial candidates – and Kentucky, where likely 2016 presidential candidate Hillary Clinton stumped aggressively for losing Democrat Alison Lundergan Grimes.

“We won in red states, we won in blue states and we won in purple states,” Priebus said.

Republican leaders also highlighted the diversity and comparative youth of many incoming GOP lawmakers, congratulating history-making candidates like Mia Love (who will be the first black Republican woman in Congress) and Elise Stefanik (who, at 30, 
 will be the youngest woman ever elected to Congress.)

CNBC News

کوئی تبصرے نہیں:
Write comments

خبروں اور ویڈیوز کے لئے ہماری ویب سائیٹ وزیٹ کیجئے: پوسٹ پر تبصرہ کرنے کے لئے شکریہ۔ آپ کا تبصرہ جائزے کے بعد جلد پیج پر نمودار ہوجائے گا۔ شکریہ

تازہ ترین

مشہور اشاعتیں

تازہ ترین خبریں

Recent Posts Widget