11 مئی، 2015

ملیشیا کے 2100 فوجی یمن جنگ میں عرب اتحاد میں شامل ہوگئے

 

جدہ (ویب ڈیسک )  اتوار کے روز ملائیشیا کے فوجی یمن جنگ میں عرب اتحاد میں شامل ہونے کے لئے  سعودی رائل ایئر فورس بیس پہنچے ۔  ملائیشیا کی حکومت نے  حوثی باغیو ں اور سابق صدر علی عبداللہ صالح کےحامیوں سے لڑنے کے لئے 2100 فوجی بھیج دیئے ہیں ۔ میلیشا سینیگال کے بعد اتحاد میں شامل ہونے ولا 12 واں ملک بن گیا ۔ سعوی وزارت دفاع نے وضاحت کی  کہ اتحاد ی آپریشنز سنٹر سینگال اور ملیشین فوج کو اتحادی فوجیوں کی صفوں میں شامل کرکے انہیں ذمہ داریاں تفویض کرنے کی تیاری کر رہا ہے۔


درین اثنا یمن کے حوثی ملیشیا نے سعودی عرب کی جانب سے تجویز کردہ پانچ روزہ انسانی بنیادوں پر فائر بندی قبول کی ہے۔  تاہم اتحادیوں کے حملے بھی جاری ہیں اتوار کے دن ایک تازہ ترین راکٹ حملے میں نجران میں چار خواتین زخمی بھی ہوئیں۔ 

اے ایف پی سے بات کرتے ہوئے  اتحادی ترجمان بریگیڈیئر جنرل احمد امام الاسیری  نے کہا کہ سعودی قیادت میں اتحادی افواج 11 بجے منگل فائر بندی کی ڈیڈ لائن تک سرحد پر اہداف کے خلاف کاروائی جاری رکھیں گے، اگر وہ ہمارے شہروں، ہماری آبادی کی طرف راکٹ حملے جاری رکھے۔ 

کوئی تبصرے نہیں:
Write comments

خبروں اور ویڈیوز کے لئے ہماری ویب سائیٹ وزیٹ کیجئے: پوسٹ پر تبصرہ کرنے کے لئے شکریہ۔ آپ کا تبصرہ جائزے کے بعد جلد پیج پر نمودار ہوجائے گا۔ شکریہ

مشہور اشاعتیں

تازہ ترین خبریں

Recent Posts Widget