13 مئی، 2015

کراچی میں اسماعیلی کمیونیٹی بس پر حملے میں 43 افراد ہلاک ہوگئے

کراچی (نمائندہ ٹی او سی ) کراچی میں اسماعیلی جماعت کی کمیونٹی بس کو آج صبح دہشت گردوں نے نشانہ بنایا، دہشت گرد بس میں گھس کر پہلے ڈرائیور کو مارا پھر اندھا دھند فائرنگ کی جس کے نتیجے میں 43 افراد ہلاک اور متعدد زائد زخمی ہوگئے۔۔۔ تفصیلات کے مطابق بس گلشن نور سے کریم آباد جارہی تھی ۔ جسے صفوار چورنگی پر روک کر دہشت گردی کا نشانہ بنایا گیا۔ تاہم اب تک واقعے کی ذمہ داری کسی نے نہیں لی ہے۔ سندھ حکومت نے روایتی سستی کا مظاہر کرتے ہوئے محض علاقے کے ایس ایچ او کو معطل کرکے واقعے سے بری ذمہ ہونے کی  
کوشش کی ہے۔ 

عینی شاہدین کے مطابق دہشت گردوں کی تعدا 6 تھی جو موٹر سائیکلوں پر سوار تھے۔ دہشت گرد بس میں گھس گئے اور تمام افراد کو سروں پر گولیاں ماری دہشت گردوں کی کوشش تھی کہ کوئی بھی بچ نہ پائے۔ 

پولیس کا کہنا ہے کہ دہشت گردوں کی تعداد 6 تھی جو بائکس پر آئے۔ بائکس سے اترے اور بس میں گھس کر 9 ایم ایم رائفل سے اندھادھند فائرنگ کی ۔

کوئی تبصرے نہیں:
Write comments

خبروں اور ویڈیوز کے لئے ہماری ویب سائیٹ وزیٹ کیجئے: پوسٹ پر تبصرہ کرنے کے لئے شکریہ۔ آپ کا تبصرہ جائزے کے بعد جلد پیج پر نمودار ہوجائے گا۔ شکریہ

تازہ ترین

مشہور اشاعتیں

تازہ ترین خبریں

Recent Posts Widget