اپنے فیس بک آئی ڈی سے بھی آپ ویب سائیٹ پر کسی نیوز
یا بلاگ پر کومنٹ کرسکتے ہیں۔

27 مئی، 2015

کینیائی وکیل کا ابامہ کی بیٹی سے شادی کے لئے حیرت انگیز پیشکش: پیشکش پڑھ کر آپ بھی حیران ہونگے

 

کینیائی وکیل کا ابامہ کی بیٹی سے شادی کے لئے حیرت انگیز پیشکش: پیشکش پڑھ کر آپ بھی حیران ہونگے

سکائی نیوز(افسرخان : ٹی او سی) کینیا کے ایک وکیل نے امریکی صدر کو پیشکش کی ہے کہ وہ ان کی 16 سالہ بیٹی سے شادی کے بدلے ڈھیر سارے مویشی دیں گے۔  کینین لائر فیلیکس  کپرونو نے پیشکش کی ہے کہ وہ ابامہ  کو اس کی بیٹی مالیہ سے شادی کے بدے 50 گائے ، 70 بھیٹریں، 30 بکریا ں  دیں گے۔  کپرونو نے اپنی عمر نہ بتاتے ہوئے کہا کہ یہ اس کی دیرینہ خواہش ہے کہ  وہ امریکی صدر ابامہ کی سب سے بڑی بیٹی سے شادی کرے۔  انہوں نے مزید انکشاف کیا کہ اس کی مالیہ میں دلچسپی 2008 میں شروع ہوگئی تھی۔  اور جب سے لیکر آج تک میں نے کسی سے ڈیٹ نہیں کیا اور مالیہ سے مخلص ہونے کا وعدہ کرتا ہوں۔ 


کپرونو کاکہنا ہے کہ جب بھی ابامہ اپنے آبائی ملک کینیا آئیں گے وہ اپنی پیشکش ان کے سامنے رکھیں گے۔  وہ اس وقت ایک خط بھی لکھ رہے ہیں جس میں وہ ابامہ سے مالیہ کو ساتھ لانے کی درخواست کریں گے۔   کپرونو نے کہا  کہ اس کی مالیہ سے محبت صرف ایک سچی محبت ہے اس کا ابامہ کی دولت میں کوئی لالچ نہیں۔   میں مالیہ کو سکھائوں گا کہ گائیوں سے دودھ  کیسے دوھتے ، مکئی کا دلیہ  اور روایتی ہٹی دوھ  تیار کرنے کا طریقہ بھی سکھائوں گا اور عزم کا اظہار کیا ہے وہ مالیہ کو لیکر ایک سیدھی سادھی زندگی گزاریں گے۔

(ابامہ کے دورہ کینیا اور ابامہ کے جواب کا انتظار آپ بھی کریں ہم بھی کرتے ہیں) 

کوئی تبصرے نہیں:
Write comments

خبروں اور ویڈیوز کے لئے ہماری ویب سائیٹ وزیٹ کیجئے: پوسٹ پر تبصرہ کرنے کے لئے شکریہ۔ آپ کا تبصرہ جائزے کے بعد جلد پیج پر نمودار ہوجائے گا۔ شکریہ

نوٹ: ٹائمزآف چترال کی انتظامیہ اور اداراتی پالیسی کا بلاگر کے خیالات سے متفق ہونا ضروری نہیں ہے۔ اگر آپ بھی چاہتے ہیں کہ آپ کا نقطہ نظر پاکستان اور دنیا بھر کے ناظرین تک پہنچے توآپ بھی قلم اٹھائیے اور 400 سے 700 الفاظ پر مشتمل اپنی تحریر تصویر، مکمل نام، فون نمبر، سوشل میڈیا آئی ڈیز اور اپنے مختصر مگر جامع تعار ف کے ساتھ ہمیں ای میل کریں ای میل ایڈریس timesofchitral@outlook.com آپ اپنے بلاگ کے ساتھ تصاویر اور ویڈیو لنک بھی بھیج سکتے ہیں۔

اپنے فیس بک آئی ڈی سے بھی آپ ویب سائیٹ پر کسی نیوز
یا بلاگ پر کومنٹ کرسکتے ہیں۔

تازہ ترین

مشہور اشاعتیں

loading...

تازہ ترین خبریں