اپنے فیس بک آئی ڈی سے بھی آپ ویب سائیٹ پر کسی نیوز
یا بلاگ پر کومنٹ کرسکتے ہیں۔

13 جولائی، 2016

گھوڑے کو گدھے سے بحث مہنگی پڑگئی، گھوڑے کو جیل میں ڈال دیا گیا: ایک سبق آموز کہانی

ایک دفعہ جنگل میں گھوڑے اور گدھے کی بحث ہوئی۔ 

گھوڑے نے کہا آسمان کا رنگ نیلا ہے۔ اور گدھے نے کہا نہیں کالا ہے۔ 


گھوڑے نے کہا چلو جنگل کے بادشاہ شیر کے پاس چلتے ہیں۔ دونوں شیر کے پاس گئے اور واقعہ سنایا۔ 

شیر نے کہا گھوڑے کو جیل میں ڈال دو۔ گھوڑے نے احتجاج کیا۔

بادشاہ سلامت، بات بھی میری ٹھیک ہے اور جیل بھی مجھے جانا پڑ رہا ہے۔؟ یہ کیسا انصاف ہے۔

بادشاہ نے کہا:

بات سچ اور جھوٹ کی نہیں۔
تمہارا قصور یہ ہے کہ تم نے ایک گدھے سے بحث کیوں کی۔؟

(میرے ان عظیم دوستوں کے لئے اس میں ایک خاموش پیغام ہے جو نیکیوں میں بھی کیٹرے نکالتے ہیں) 



1 تبصرہ:
Write comments

خبروں اور ویڈیوز کے لئے ہماری ویب سائیٹ وزیٹ کیجئے: پوسٹ پر تبصرہ کرنے کے لئے شکریہ۔ آپ کا تبصرہ جائزے کے بعد جلد پیج پر نمودار ہوجائے گا۔ شکریہ

نوٹ: ٹائمزآف چترال کی انتظامیہ اور اداراتی پالیسی کا بلاگر کے خیالات سے متفق ہونا ضروری نہیں ہے۔ اگر آپ بھی چاہتے ہیں کہ آپ کا نقطہ نظر پاکستان اور دنیا بھر کے ناظرین تک پہنچے توآپ بھی قلم اٹھائیے اور 400 سے 700 الفاظ پر مشتمل اپنی تحریر تصویر، مکمل نام، فون نمبر، سوشل میڈیا آئی ڈیز اور اپنے مختصر مگر جامع تعار ف کے ساتھ ہمیں ای میل کریں ای میل ایڈریس timesofchitral@outlook.com آپ اپنے بلاگ کے ساتھ تصاویر اور ویڈیو لنک بھی بھیج سکتے ہیں۔

اپنے فیس بک آئی ڈی سے بھی آپ ویب سائیٹ پر کسی نیوز
یا بلاگ پر کومنٹ کرسکتے ہیں۔

تازہ ترین

مشہور اشاعتیں

loading...

تازہ ترین خبریں