14 جولائی، 2016

حکومت اورضلعی انتظامیہ کی نااہل کی وجہ چترال کے خوبصورت ترین دیہات میں سے ایک کارگین مستوج دریا برد ہورہا ہے

چترال سے 60 کلومیٹر دور واقع مستوج کا خوبصورت گائون کارگین اس وقت دریائے چترال کے بے رحم موجوں کے رحم وکرم پر ہے۔ گاون کے کٹائو کا سلسلہ جاری ہے۔ کارگین چترال کے ان چند علاقوں میں سے ایک ہے جو اپنی خوبصورتی میں بے مثال ہیں لیکن ان کی خوبصورتی کو نظر لگ چکی ہے۔ ریشن کے بعد حکمرانوں کی عدم توجہی اور چترال کے عوامی نمائندہ اور ضلعی انتظامیہ کی نااہلی کی وجہ سے کارگین  صفحہ ہستی سے مٹ رہا ہے۔  گائوں کا بڑا حصہ دریائے برد ہوچکا ہے۔  قیمی زمینیں فصلوں اور باغات سمیت ٹوٹ ٹوٹ کر دریا میں گر رہی ہیں۔ متعدد گھر بھی دریا برد ہوچکے ہیں۔  اگر حکمران اور ضلعی انتظامیہ بروقت  اقدامات کرکے دریائے کے کنارے بند باندھ دیتے تو اس ناقابل تلاقی نقصان سے بچا جاسکتا تھا۔ اور اگر حکومت اور ضلعی انتظامیہ اور چترال کی نااہل سیاسی نمائندے اب بھی اس پرغور فکر نہ کیا تو خدشہ ہے چترال کا 60 فیصد حصہ ختم ہوجائے گا۔ بائی ایڈیٹر

تصاویر ہمیں بھیجی ہیں :   کارگین سے غلام علی





کوئی تبصرے نہیں:
Write comments

خبروں اور ویڈیوز کے لئے ہماری ویب سائیٹ وزیٹ کیجئے: پوسٹ پر تبصرہ کرنے کے لئے شکریہ۔ آپ کا تبصرہ جائزے کے بعد جلد پیج پر نمودار ہوجائے گا۔ شکریہ

تازہ ترین

مشہور اشاعتیں

تازہ ترین خبریں

Recent Posts Widget