19 جولائی، 2016

سندھ ہائیکورٹ کے چیف جسٹس کے مغوی بیٹے کو خیبر پختونخوا سے بازیاب کرالیا گیا، پاک فوج کی تعریف

 

کراچی (نیوز ڈیسک) آرمی چیف کی ہدایت پر کامیاب آپریشن کرتے ہوئے پاک فوج نے ایک ماہ بعد چیف جسٹس سندھ ہائی کورٹ سجاد علی شاہ کے مغوی بیٹے اویس شاہ کو صوبہ خیبر پختونخوا کے ضلع ٹانک سے کامیابی سے صحیح سلامت بازیاب کروا لیا ہے۔ اویس شاہ کو کراچی میں واقع ان کی رہائش گاہ پر پہنچا دیا گیا۔ گھرپہنچنے پر والدہ اور ولد اویس سے چمٹ گئے، رقت آمیز مناظر۔ اس موقع پر ڈائریکٹر جنرل (ڈی جی) رینجرز میجر جنرل بلال اکبر بھی ان کے ہمراہ تھے۔ اویس شاہ کے گھر پہنچنے پر گھر کے باہر جمع ہونے والے افراد میں مٹھیاں تقسیم کی گئیں۔

بازیابی کے بعد چیف جسٹس سندھ ہائی کورٹ سجاد علی شاہ کے بیٹنے اویس شاہ کو کو ایک خصوصی طیارے کے ذریعے فیصل ایئر بیس، کراچی لایا گیا، جہاں سے انہیں سخت سیکیورٹی میں ان کے گھر منتقل پہنچا دیا گیا۔

پاک فوج کے شعبہ تعلقات عامہ، انٹر سروسز پبلک ریلشنز (آئی ایس پی آر) کے ڈائریکٹر جنرل (ڈی جی) لیفٹیننٹ جنرل عاصم باجوہ نے اپنے ٹوئٹر اکاونٹ پر اویس شاہ کی بازیابی کی خبر دیتے ہوئے کہا تھا کہ آپریشن کے دوران 3 دہشت گردوں کو بھی ہلاک کر دیا گیا ہے۔ عاصم باجوہ نے مزید کہا تھا کہ ’سندھ چیف جسٹس کے بیٹے کو انٹیلی جنس بیسڈ آپریشن (آئی بی او) کے دروان خیبر پختونخوا کے ضلع ٹانک میں اغوا کاروں کے قبضے سے چھڑایا گیاہے۔

اپنی رہائش گاہ پرمیڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے چیف جسٹس سندھ ہائیکورٹ سید سجاد علی شاہ نے کہا کہ رات تین بجے آرمی چیف جنرل راحیل شریف نے اُنہیں فون کرکے اویس علی شاہ کی بازیابی سے متعلق بتا دیا تھا، آرمی چیف ذاتی طور پر آپریشن کی مانیٹرنگ کر رہے تھے۔ جنرل راحیل شریف نے اویس شاہ سے اُن کی بات بھی کرائی۔ انہوں نے بتایا کہ آرمی چیف نے ایئر پلین کے ذریعے اویس شاہ کو کراچی پہنچایا، اُن کے بیٹے کی بازیابی میں تمام کردار پاک فوج کا ہے۔ بیٹے کی بازیابی پر پاک فوج کا احسان مند ہوں۔


کوئی تبصرے نہیں:
Write comments

خبروں اور ویڈیوز کے لئے ہماری ویب سائیٹ وزیٹ کیجئے: پوسٹ پر تبصرہ کرنے کے لئے شکریہ۔ آپ کا تبصرہ جائزے کے بعد جلد پیج پر نمودار ہوجائے گا۔ شکریہ

تازہ ترین

مشہور اشاعتیں

تازہ ترین خبریں

Recent Posts Widget