13 نومبر، 2016

چترال: سکول کے واٹر ٹینک میں پر اسرار دھماکہ، تمام دیواریں زمین بوس

 

 چترال (طاہر الدین شادان) گورنمنٹ گرلز ہائی سکول کھوت کا واٹر ٹینک زوردار دھماکے سے پھٹ گیا۔  تفصیلات کے مطابق جی جی ایج ایس کھوت کے میں گیٹ کے ساتھ بنایا گیا واٹر ٹینک زوردار دھماکے سے پھٹ گیا دھماکہ اتنا زور دار تھا کہ کہ ٹینکی کی چھت سمیت تمام دیواریں زمیں بوس ہوگئی  جس کا اندازہ زیر نظر نظر تصویر سے لگایا جاسکتا ہے۔


خوش قسمتی سے یہ دھماکہ سکول اوقات میں نہیں ہوا ورنہ اس میں شدید جانی نقصان کا خدشہ تھا واضح رہے کہ مذکورہ واٹر ٹینک سکول کے انچارج مس سعیدہ نے کچھ عرصہ قبل سکول کے واٹر سپلائی فنڈ سے بنوائی تھی دو لاکھ کی لاگت سے بننے والی اس ٹینکی کو سکول کے مین گیٹ کے ساتھ زمین کے اوپر ٹھیکدار نے بنایا تھا قابل غور بات یہ ہے کہ ہمارے لیڈر اور سیاست دان تو پہلے سے سر تا پا کرپشن میں ڈوبے ہوئے ہیں لیکن افسوس ناک بات یہ ہے کہ تعلیمی ادارے بھی اس ناسور سے محفوظ نہیں سکول کے ہیڈ مس اگر سکول کے فنڈ کو درست استعمال  کرکے معیاری کام کرواتے تو یہ واقعہ کبھی پیش نہ آتا سکول کے فنڈ میں کرپشن اور تعلیمی  و سرکاری فنڈ سے عزیز واقارب کو نوازنے کا یہ سلسلہ نہایت قابل مذمت ہے واضح رہے کہ ٹینکی کا ٹھیکہ ہیڈ مس نے اپنے خاوند رحیم کو دیا تھا جس نے پیسہ بچانے کے لئے  ٹینکی کو انڈر گراؤنڈ بنانے کے بجائے زمین کے اوپر انتہائی ناقص میٹیریل سے نہایت غیر معیاری بنا کر معصوم بچیوں کے لئے خطرہ کھڑا کردیا تھا اس قسم کے واقعات کو روکنے اور سرکار کی طرف سے دی جانے والی سکول فنڈ کو کرپشن سے بچانے کے لئے وزیر تعلیم ،محکمہ تعلیم اور میل فیمیل ای ڈی او کو مثبت قدم اٹھانا چاہیے ورنہ سرکاری فنڈ کی بربادی کے ساتھ ساتھ بچوں اور بچیوں کی جانیں بھی  خطرے میں پڑ سکتی ہیں

کوئی تبصرے نہیں:
Write comments

خبروں اور ویڈیوز کے لئے ہماری ویب سائیٹ وزیٹ کیجئے: پوسٹ پر تبصرہ کرنے کے لئے شکریہ۔ آپ کا تبصرہ جائزے کے بعد جلد پیج پر نمودار ہوجائے گا۔ شکریہ

مشہور اشاعتیں

تازہ ترین خبریں

Recent Posts Widget