اپنے فیس بک آئی ڈی سے بھی آپ ویب سائیٹ پر کسی نیوز
یا بلاگ پر کومنٹ کرسکتے ہیں۔

21 مارچ، 2017

یوٹیلٹی سٹورز پر دالوں کی قیمتیں 3 سے 42 روپے تک کم کردی گئیں

 

اسلام آباد (ویب ڈیسک ) یوٹیلٹی سٹورز پر دالوں کی قیمتیں 3 سے 42 روپے تک کم کردی گئیں ۔یوٹیلٹی سٹورز کارپوریشن پاکستان نے مختلف دالوں کی قیمتوں میں 3 سے 42 روپے تک کمی کرنے کا اعلان کیا ہے۔ تفصیلات کے مطابق ماش،
مسور، مونگ ، دال چنا اور کالے چنے کی قیمتیں کم کردی گئی ہیں جس کا نوٹیفیکیشن بھی جاری کر دیا گیا ۔ یوٹیلٹی سٹورز کارپوریشن کے ترجمان کے مطابق یوٹیلٹی سٹورز کارپوریشن نے مختلف دالوں کی قیمتوں میں کردی ہے جس کے مطابق مونگ دھلی ہوئی کی قیمت میں3 روپے ، دال مسور کی قیمت میں 5 روپے،کالے چنے کی قمیت میں 10روپے ، دال چنا کی قیمت میں 10 روپے ، ما ش دھلی ہوئی کی قیمت میں 38 روپے ، مونگ ثابت کی قیمت میں 5 روپے ، مسور ثابت کی قمیت میں 15روپے ، ماش ثابت کی قمیت میں 30 روپے اور ماش چھلکہ والے دال کی کی قیمت میں 42 روپے کی کمی کر دی گئی ہے۔

اب مونگ دھلی ہوئی کی قیمت 108روپے سے 105روپے فی کلو، دال مسور 110روپے سے 105روپے فی کلو، دال چنا 120روپے سی110روپے فی کلو ، کالا چنا 110روپے سی100 روپے فی کلو، ماش دھلی ہوئی 198روپے سے 160روپے فی کلو، مونگ ثابت 110روپے سی105روپے فی کلو ، مسور ثابت 110سے 95روپے فی کلو، ماش ثابت 180سے 150روپے فی کلو، مونگ چھلکہ 125سی110روپے فی کلو جبکہ ماش چھلکہ کی قیمت 252روپے سے 210روپے فی کلو کمی کر دی گئی ہے۔واضح رہے کہ چند دن پہلے کارپوریشن مختلف کمپنیوں کے برانڈڈگھی ،کوکنگ آئل، چائے اوردیگر اشیاء ضروریہ کی قیمتوں میں بھی کمی کر چکی ہیں تاکہ عوام کو زیادہ سے زیادہ سہولت دی جائے۔ یوٹیلٹی سٹورز پر تمام اشیاء بازار سے کم قیمت میں مہیا کی جاتی ہے جو معیار کے اعتبار سے اعلی ہوتی ہے۔

کوئی تبصرے نہیں:
Write comments

نوٹ: ٹائمزآف چترال کی انتظامیہ اور اداراتی پالیسی کا بلاگر کے خیالات سے متفق ہونا ضروری نہیں ہے۔ اگر آپ بھی چاہتے ہیں کہ آپ کا نقطہ نظر پاکستان اور دنیا بھر کے ناظرین تک پہنچے توآپ بھی قلم اٹھائیے اور 400 سے 700 الفاظ پر مشتمل اپنی تحریر تصویر، مکمل نام، فون نمبر، سوشل میڈیا آئی ڈیز اور اپنے مختصر مگر جامع تعار ف کے ساتھ ہمیں ای میل کریں ای میل ایڈریس timesofchitral@outlook.com آپ اپنے بلاگ کے ساتھ تصاویر اور ویڈیو لنک بھی بھیج سکتے ہیں۔

اپنے فیس بک آئی ڈی سے بھی آپ ویب سائیٹ پر کسی نیوز
یا بلاگ پر کومنٹ کرسکتے ہیں۔

تازہ ترین

مشہور اشاعتیں

loading...

تازہ ترین خبریں