مئی 5, 2017

جمعہ: سخت سیکورٹی میں شاہی مسجد میں نماز جمعہ کی ادائیگی، گزشتہ جمعے خطیب شاہی مسجد مولانا خلیق الزمان سخت سیکیوریٹی میں لایا گیا تھا

 

چترال(گل حماد فاروقی) جمعہ کے روز شاہی مسجدسے متصل اور تھانہ چترال کے سامنے کثیر تعداد میں دیر اور دیگر اضلاع سے آئے ہوئے پولیس اہلکار چوکس کھڑے تھے۔ پچھلے جمعہ کو بھی خطیب شاہی مسجد مولانا خلیق الزمان کو سخت سیکورٹی میں لائے گئے تھے۔ 

اکیس اپریل کو جمعہ کے روز جب مبینہ طور پر ایک شحص نے شاہی مسجد میں توہین رسالت کا مرتکب ہوا تھا اس کے بعد لوگوں نے تھانہ چترال پر پتھراؤ کیا تھا اور خطیب کی ذاتی گاڑی کو بھی جلایا تھا۔ اس وقت خطیب شاہی مسجد مولانا خلیق الزمان نے اس شحص کو لوگوں سے بچایا تھا اور اسے پولیس کے حوالہ کیا تھا جس کے حلاف بعد تھانہ چترال میں توہین رسالت اور دہشت گردی کا مقدمہ درج ہوا تھا تاہم مشتعل ہجوم نے خطیب شاہی مسجد کی ذاتی گاڑی بھی جلائی تھی۔ جس کی پاداشت میں کثیر تعداد میں لوگوں کو گرفتار کرکے ان کے حلاف دہشت گردی اور دیگر دفعات کے تحت مقدمات درج ہوئے ہیں۔

اس جمعے کو بھی پولیس کی سخت سیکورٹی میں شاہی مسجد میں نماز جمعہ ادا کیا گیا۔

چترال اور ملک بھر کے عوام نے خطیب کی اس کاوش کو نہایت سراہا اور محکمہ تعلیم سے مطالبہ کیا کہ خطیب شاہی مسجد مولانا خلیق الزمان جو گورنمنٹ سینٹینل ماڈل ہائی سکول میں گریڈ سولہ میں اسلامیات کا استاد بھی ہے اور اضافی طور پر شاہی مسجد میں خطیب بھی ہے اسے مزید ترقی دی جائے ۔ عوام نے مطالبہ کیا کہ اگر ایسے سرکاری ملازمین ایسے نازک موقعوں پر امن عامہ اور حالات کو قابو کرے تو ملک بہت نقصان سے بچا جاسکتا ہے۔

کوئی تبصرے نہیں:
Write comments

خبروں اور ویڈیوز کے لئے ہماری ویب سائیٹ وزیٹ کیجئے: پوسٹ پر تبصرہ کرنے کے لئے شکریہ۔ آپ کا تبصرہ جائزے کے بعد جلد پیج پر نمودار ہوجائے گا۔ شکریہ

تازہ ترین

مشہور اشاعتیں

تازہ ترین خبریں

Recent Posts Widget