24 اگست، 2017

ضلعی صدر سلطان وزیر کی قیادت میں آل پاکستان مسلم لیگ چترال کے وفد کی معززین ایون سے ملاقات

 

چترال (نمائندہ ٹائمز آف چترال: 23 اگست 2017)  ضلعی صدر سلطان وزیر کی قیادت میں آل پاکستان مسلم لیگ کے وفد نے معززین ایون سے ملاقات کی ہے۔ ملاقات اے پی ایم ایل عوامی رابطہ مہم کا حصہ ہے۔ پارٹی چترال بھر میں تنظیم سازی اور نئی سیاسی شخصیات کو پارٹی میں شامل کریگی۔ 23 آگست 2017 کو آل پاکستان مسلم لیگ کی ضلعی قیادت پارٹی کے صدر جناب سلطان وزیر صاحب کی سربراہی میں یو-سی ایون کے معززین سے ملاقات کی۔ جن کے ہمراہ پارٹی کے  دیگر رہنماؤں میں سنئیر نائب صدر شیر ولی خان اسیر ، نائب صدر سلطان نگاہ ، سیکرٹری انفارمیشن جی- کے صریر اور پیرزادہ ناصر علی شاہ بھی موجود تھے۔



ایون کے عمائدین سے ملاقات کا اہم مقصد اے-پی-ایم-ایل کی عوامی رابطہ مہم، تنظیم سازی اور نئے سیاسی اراکین کی شمولت تھا۔ پارٹی نشست جان دولہ خان لال کے گھر واقع درخناندہ میں ہوئی جس میں ایون کے مختلف ویلج کونسل سے تعلق رکھنے والے نمائندے اور عمائدین شریک ہوئے۔ اس موقع پر کارکنان کے علاوہ دیگر پارٹیوں سے تعلق رکھنے والے افراد کی کثیر تعداد اجلاس شریک ہوئے اور اے-پی-ایم-ایل میں شمولیت اختیار کی۔

اجلاس سے خطاب کرتے ہوۓ معززین علاقہ نے پرویز مشرف کی خدمات کو سراہا۔ انہوں نے نئے ولولے سے پارٹی کو فعال بنانے اور مشرف کے لیے ہر قسم کی کاوشوں سے دریغ نہ کرنے کا عہد کیا۔ 

آل پاکستان مسلم لیگ چترال کے رہنماؤں نے خطاب کرتے ہوۓ کہا کہ پرویز مشرف کے ساتھ چترالیوں کا والہانہ لگاؤ ہے جس کے باوجود آج تک پارٹی کی بہتری کا کسی نے نہیں سوچا۔ اے-پی-ایم-ایل گذشتہ انتخابات میں ضلعی سطح پر جیتنے والی جماعت کے طور پر ابھری۔ لیکن بدقسمتی سے اس وقت کے منتخب نمائندوں نے ورکروں اور کارکنوں کے ساتھ روابط رکھنا مناسب نہیں سمجھا جبکہ خود پرویز مشرف کے ساتھ تعلق لاتعلق رہے پارٹی کے نام پر جیتنے کے باوجود مشرف سے مشاورت تک گوارہ نہ کیا۔ اس رویے کی وجہ سے پارٹی سے محبت کرنے والے بھی بدظن ہوگئے جبکہ پرویز مشرف صاحب کو مجبورأ پارٹی کی قیادت نئے ہاتھوں میں دینی پڑی۔ کابینہ کے اراکین نے شرکاء کو زیادہ فغال، نمائندوں اور عوامی خواہشات کے مطابق پارٹی کو ڈھالنے کی یقین دہانی کرائی۔ نئی قیادت کی جدوجہد کا مقصد عوام کی خدمت، ترقی اور نوجوان قیادت سامنے لانا ہے۔

صدر سلطان وزیر اکابرین کا شکریہ ادا کرتے ہوئے شرکاء کو چند دنوں میں یونین کونسل کی سطح پر تنظیمی ڈھانچے کو فغال بنانے پر زور دیا۔ انہوں نے کہا کہ پرویز مشرف چترال کی ترقی کا عزم رکھتے ہیں جس کو عملی شکل دینے کے لیے ضروری ہے کہ پرویز مشرف کی ملک واپسی تک آل پاکستان مسلم لیگ چترال کو دوبارہ ایک مضبوط اور مربوط پارٹی کے طور پر منوائی جاۓ اور گذشتہ تمام تر کوتاہیوں سے اجتناب کیا جاۓ۔


کوئی تبصرے نہیں:
Write comments

خبروں اور ویڈیوز کے لئے ہماری ویب سائیٹ وزیٹ کیجئے: پوسٹ پر تبصرہ کرنے کے لئے شکریہ۔ آپ کا تبصرہ جائزے کے بعد جلد پیج پر نمودار ہوجائے گا۔ شکریہ

مشہور اشاعتیں

تازہ ترین خبریں

Recent Posts Widget