21 اگست، 2017

مصطفیٰ کمال نے سب کو حیران کردیا، متحدہ قومی مومنٹ پاکستان کی اے پی ایس کی دعوت قبول کرلی

 

کراچی (این این آئی) پاک سرزمین پارٹی اور مہاجر قومی موومنٹ نے متحدہ قومی موومنٹ پاکستان کی کل جماعتی کانفرنس میں شرکت کی دعوت قبول کرلی ہے جبکہ پاکستان پیپلز پارٹی کے رہنما نثار کھوڑو کا کہنا ہے کہ پارٹی قیادت سے مشاورت کے بعد شرکت کا فیصلہ کیا جائے گا۔تفصیلات کے مطابق ایم کیو ایم پاکستان کے وفود نے کل جماعتی کانفرنس میں شرکت کے لئے رابطے کیے ہیں،عامر خان، فیصل سبزواری اور کامران ٹیسوری پر مشتمل ایم کیو ایم پاکستان کے وفد نے پاک سرزمین پارٹی کے دفتر کا دورہ کیا۔پاک سرزمین پارٹی کے حفیظ الدین، ڈاکٹر صغیر اور وسیم آفتاب نے وفد کا استقبال کیا اور ان سے خیریت دریافت کی۔اس موقع پر سیاسی صورتحال اور بلدیاتی حکومتوں سے متعلق آل پارٹیز کانفرنس سے متعلق تبادلہ خیال کیا گیا جب کہ ایم کیو ایم کے وفد نے 22 اگست کو بلائی جانے والی کل جماعتی کانفرنس میں پی ایس پی کو شرکت کی دعوت بھی دی۔ملاقات کے بعد مشترکہ پریس کانفرنس کے دوران پی ایس پی کے رہنما انیس ایڈووکیٹ نے کل جماعتی کانفرنس میں شرکت کا اعلان کرتے ہوئے کہا کہ سندھ کے عوام ایک ملک دشمن سے نجات کا دن منارہے ہیں، یقین ہے کہ ایم کیو ایم پاکستان سندھ کے عوام کی آواز سن رہی ہے۔

انیس ایڈووکیٹ نے کہا کہ جو لوگ پاکستان کے پرچم کی توہین کرتے ہیں ان کو بے نقاب کیا جائے، بانی متحدہ اور اس کے ساتھیوں کے خلاف کارروائی کی جائے اور اسی میں بقا ہے کہ اس غدار وطن سے ایم کیو ایم پاکستان بھی مکمل لاتعلقی کا اعلان کرے ۔اس موقع پر ایم کیو ایم پاکستان کے رہنما عامر خان نے کہا کہ دو جماعتوں کا ایک ساتھ کھڑا ہونا خوش آئند ہے، ایم کیو ایم پاکستان بانی متحدہ سے پہلے ہی لاتعلقی کا اعلان کرچکی ہے، ہمیں متنازع گفتگو سے پرہیز کرنا چاہیے۔عامر خان نے کہا کہ اے پی سی میں پاکستان بالخصوص سندھ میں کرپشن پر بات ہوگی، ہم چاہتے ہیں کہ کراچی کی بہتری کے لیے متفقہ لائحہ عمل طے کریں۔ایم کیو ایم پاکستان کے رہنما فیصل سبزواری نے کہا کہ ہمارا عزم ہے کہ قاتل اور مقتول کی سیاست ہم نہیں ہونے دیں گے، ہمارا عزم ہے کہ ہماری صفوں میں کوئی قاتل نہیں ملے گا، سب کے پاس جاکر ہم آج اس قوم کا قرض چکا رہے ہیں۔بعد ازاں ایم کیوایم پاکستان کا وفد مہاجر قومی موومنٹ کے چیرمین آفاق احمد کے پاس پہنچا اور انہیں بھی اے پی سی میں شرکت کی دعوت دی جو آفاق احمد نے قبول کرتے ہوئے آل پارٹیز کانفرنس میں شرکت کی یقین دہانی کرائی۔آفاق احمد سے ملاقات کے بعد میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے عامر خان نے کہا کہ سیاسی نظریات ایک جگہ ہیں مگر ہمیں ملنا چاہیے۔جب کہ آفاق احمد کا کہنا تھا کہ عوام نے سیاسی رویوں میں تبدیلی کو اچھا محسوس کیا ہے اس نے دعوت نامے کو سب نے قبول کیا ہے۔انہوں نے کہا کہ مہاجر قوم کے مسائل اور کراچی کے وسائل پر ہم اپنا موقف دیں گے۔خالد مقبول صدیقی کی قیادت میں ایم کیو ایم پاکستان کا وفد اے پی سی میں شرکت کی دعوت دینے کے لئے پیپلزپارٹی کے پاس بھی پہنچا جہاں پی پی رہنما نثار کھوڑو اور دیگر سے ملاقات کے دوران کل جماعتی کانفرنس میں شرکت کی دعوت دی۔پاکستان پیپلز پارٹی کے رہنما کھوڑو نے کہا کہ ہم جمہوریت کے ساتھ تھے،ہیں اوررہیں گے، اے پی سی میں شرکت کی دعوت ملی ہے، پارٹی سے مشاورت کے بعد شرکت سے متعلق جواب دیں گے۔ملاقات کے بعد میڈیا سے بات کرتے ہوئے خالد مقبول صدیقی نے کہا کہ اے پی سی میں تمام جماعتوں کو مجبوریوں ، مصلحتوں سے آگے بڑھ کر دعوت دی، تمام سیاسی جماعتیں اچھے ماحول کے لیے کل اے پی سی میں شرکت کریں اور پوائنٹ اسکورنگ کے بجائے مثبت سوچ کے ساتھ شرکت کریں۔دریں اثناء متحدہ قومی موومنٹ پاکستان رابطہ کمیٹی کے سینئر ڈپٹی کنونیر عامر خان کی سربراہی میں ایم کیو ایم پاکستان کے نمائندہ وفد کی پاکستان تحریک انصاف کے رہنماؤں اسد عمر، عمران اسماعیل اور علی زیدی سے ملاقات کی۔ وفد میں ایم کیو ایم پاکستان رابطہ کمیٹی کے اراکین سید فیصل سبزواری، کامران ٹیسوری اور فرقان اطیب شامل تھے۔ ملاقات میں پاکستان کے موجودہ صورتحال پر تفصیلی تبادلہ خیال کیا گیا اور 22 اگست کو ایم کیو ایم پاکستان کے زیر اہتمام کراچی کے نجی ہوٹل میں ہونے والی کثیر الجماعتی کانفرنس میں شرکت کی دعوت دی۔


کوئی تبصرے نہیں:
Write comments

خبروں اور ویڈیوز کے لئے ہماری ویب سائیٹ وزیٹ کیجئے: پوسٹ پر تبصرہ کرنے کے لئے شکریہ۔ آپ کا تبصرہ جائزے کے بعد جلد پیج پر نمودار ہوجائے گا۔ شکریہ

تازہ ترین

مشہور اشاعتیں

تازہ ترین خبریں

Recent Posts Widget