24 اکتوبر، 2017

زمین پھٹ گئی: کیا کوئی باپ اپنی بیٹی کے ساتھ ایسا کرسکتا ہے؟؟؟ پڑھئے

 

گوجرہ (ویب ڈیسک) درندہ صفت امام مسجد نے اپنی طلاق یافتہ حقیقی بیٹی کو زبردستی زیادتی کا نشانہ بنانے کا دعویٰ سامنے آیا ہے۔ 


پاکستان کے ایک کثیر الاشاعت قومی روزنامہ خبریں کے مطابق زبیر ٹاﺅن کے عطاءالرحمن نے تھانہ سٹی گوجرہ میں مقدمہ درج کراتے ہوئے موقف اختیار کیا ہے کہ اس کا والد اشفاق الرحمن جامع مسجد میں امامت کرواتا ہے۔ اس کی چار بہنیں اور ایک بھائی ہے جبکہ اس کی بڑی بہن بی بی کی شادی چھ سال قبل چک نمبر 371 ج ب کے عبدالغفار سے ہوئی تھی جس کے بطن سے بی بی کا ایک بیٹا اور بیٹی ہے جس نے گھریلو ناچاقی پر اپنے خاوند عبدالغفار سے ایک ماہ قبل بذریعہ عدالت طلاق حاصل کرلی اور جو ان کے گھر سکونت پذیر ہے،والد اس کے کمرے میں چلا گیا اور بی بی کو زبردستی زیادتی کا نشانہ بنادیا جس کے شو رپر اس کا بھائی ضیاءالرحمن ودیگر موقع پر پہنچ گئے۔

درخواست گزار کے مطابق والد کے منت سماجت کرنے اور آئندہ ایسانہ کرنے کے وعدہ پر ہم عزت کی خاطر خاموش رہے لیکن درندہ صفت باپ نے دوبارہ اپنی بیٹی کو زیادتی کا نشانہ بناتے ہوئے سنگین نتائج کی دھمکیاں دیں کہ وہ اپنی زبان کو بند رکھے مگر بیٹی نے چپ کا تالہ توڑتے ہوئے دیگر اہلخانہ کو گناہ کبیرہ کے متعلق آگاہ کردیا۔ سٹی پولیس نے ملزم کے حقیقی بیٹے عطاءالرحمن کی رپورٹ پر مقدمہ درج کرکے ملزم کو گرفتارکرلیا۔

کوئی تبصرے نہیں:
Write comments

خبروں اور ویڈیوز کے لئے ہماری ویب سائیٹ وزیٹ کیجئے: پوسٹ پر تبصرہ کرنے کے لئے شکریہ۔ آپ کا تبصرہ جائزے کے بعد جلد پیج پر نمودار ہوجائے گا۔ شکریہ

تازہ ترین

مشہور اشاعتیں

تازہ ترین خبریں

Recent Posts Widget