6 نومبر، 2017

امریکہ میں چرچ پر فائرنگ سے 27 افراد ہلاک حملہ آور بھی مارا گیا، کون تھا وہ؟

 

ٹیکساس (مانیٹرنگ ڈیسک) امریکہ میں پیش آنے والا اس ماہ کا دوسرا اہم وقعہ ہے جس میں حملہ آور نے چرچ میں فائرنگ کرکے 27 افراد کو بھون ڈالا۔  امریکی ریاست ٹیکساس کے ایک چرچ میں فائرنگ حملہ آور نے 27 افراد ہلاک کردیا ہے اور 24 سے زائد زخمی ہوگئے ہیں، جبکہ حملہ آور کو پولیس نے گولی مار کر ہلاک کردیا ہے۔



تفصیلات کے مطابق گورنرٹیکساس  نے ہلاک ہونے والوں اور زخمیوں تصدیق کی ، دوسری طرف امریکی صدر ڈونلڈ ٹرمپ نے ٹیکساس واقعے پر افسوس کرتے ہوئے لواحقین سے ہمدردی کا اظہارکیا ہے اور کہا کہ چرچ پر فائرنگ کا واقعہ قابل مذمت ہے، جاپان میں بیٹھ کر صورتحال کو مسلسل مانیٹر کررہا ہوں۔



امریکی میڈیا کے مطابق حملہ آور 26 سالہ ڈیوڈ پیٹرک کیلی ہے۔ جو شادی شدہ تھا ، جسے امریکی ایئرفورس سےبرطرف کیاگیاتھا، حملے کے وقت بیلسٹک جیکٹ پہن رکھی تھی، تاہم سرکاری طور پر حملہ آور کی شناخت ظاہر نہیں کی گئی ہے۔

امریکی ذرائع ابلاغ کے مطابق ٹیکساس کے علاقے سان اینٹونیو کے جنوب مشرق میں واقع چرچ میں فائرنگ کا واقعہ مقامی وقت کے مطابق صبح ساڑھے 11 بجے پیش آیا ، حملہ آور گاڑی سے اتر کر فرسٹ بپٹسٹ چرچ میں داخل ہوا اور فائرنگ شروع کردی ، جس کئی افراد موقع پر ہی ہلاک اور زخمی ہوئے۔

پولیس حکام کے مطابق فائرنگ کے وقت چرچ میں 50 سے افراد موجود تھے ، ملزم گن لیتا ہوا آیا اور اندھا دھند فائر کھول دیا اور فائر کرتے ہوئے چلتا رہا۔ پولیس کے مطابق ملزم سے رائفل بھی برآمد کرلی گئی ہے۔

کوئی تبصرے نہیں:
Write comments

خبروں اور ویڈیوز کے لئے ہماری ویب سائیٹ وزیٹ کیجئے: پوسٹ پر تبصرہ کرنے کے لئے شکریہ۔ آپ کا تبصرہ جائزے کے بعد جلد پیج پر نمودار ہوجائے گا۔ شکریہ

تازہ ترین

مشہور اشاعتیں

تازہ ترین خبریں

Recent Posts Widget