نومبر 22, 2017

اقتدار اہلیہ کو منتقلی میں ناکامی 37 سالہ حکمرانی کا خاتمہ ، صدر مستعفی ہوگئے

ہرارے (ٹی او سی نیوز 22 نومبر 2017) موگابے کی 37 سالہ حکمرانی کا خاتمہ ہوگیا۔ عوام خوشیاں منانے سڑکوں پر نکل آئے۔ پارلیمنٹ ہاؤس کے سامنے عوام کا ڈانس کرکے اظہار مسرت۔

زمبابوے کی پارلیمنٹ کے سپیکر نے موگابے کا بھیجا ہوا خط پڑھ کر پارلیمنٹ میں سنا دیا اوراعلان کیا کہ صدر رابرٹ موگابے نے اپنے عہدے سے استعفیی دے دیا ہے اور یہ وہ اپنی خوشی سے کیا ہے اور اب ان کے مواخذے کے حوالے سے جاری بحث کا خاتمہ ہو گیا ہے۔

سپیکر جیکب مودینا کے مطابق صدر موگابے کے مواخذے کے حوالے سے پارلیمنٹ کا مشترکہ اجلاس مقامی ہوٹل میں ہوا اور اس دوران انہوں نے اپنا تحریری استعفیٰ پارلیمنٹ کو بھجوا دیا ہے، صدر موگابے کی عمر 93 سال ہے اور وہ 1980سے اقتدار پر قابض ہیں ۔

بین الاقوامی میڈیا رپورٹس کے مطابق گذشتہ ہفتے زمبابوے کی حکومت پر فوجی قبضے کے بعد پیدا ہونے والی صورت کو کم کرنے کے لئے صدر موگابے نے اپنے استعفے کا اعلان کردیا ہے۔ 

فوج کی جانب سے زبردستی ماگابے اقتدار سے بے دخلی نے ملک میں سیاسی عدم استحکام پیدا کردیا تھا، موگابے اپنے پیش رو کے طور پر اقتدار اپنی اہلیہ کو سپرد کرنا چاہتے تھے جسے فوج نے ہونے نہ دیا اور موگابے کا ہاؤس ایریسٹ کرکے ان کے اقتدار کا خاتمہ کردیا۔

کوئی تبصرے نہیں:
Write comments

خبروں اور ویڈیوز کے لئے ہماری ویب سائیٹ وزیٹ کیجئے: پوسٹ پر تبصرہ کرنے کے لئے شکریہ۔ آپ کا تبصرہ جائزے کے بعد جلد پیج پر نمودار ہوجائے گا۔ شکریہ

تازہ ترین

مشہور اشاعتیں

تازہ ترین خبریں

Recent Posts Widget