نومبر 21, 2017

خان صاحب کے نام کهلا خط

 

خان صاحب کے نام کهلا  خط     


جناب عمران خان صاحب !!           
                                          میں آپ کےدیر کے جلسے میں موجود تھا۔ چترال کا جلسہ بھی دیکھا اور میانوالی جلسے میں بھی اپ کی تقریر سنی۔            

آج کل آپ اپنے جلسوں میں اکثر میرٹ کی بالادستی کی بات کر رہے ہیں،  
               
خان صاحب! میں پوچهنے کی جسارت کرونگا کہ آپکی اپنی پارٹی میں کیا جہانگیر ترین میرٹ پر اتنا آگے آیا؟؟                                                                              
کیا پرویز خٹک میرٹ پر وزیر اعلی' بنا؟                                                        
کیا چند ہفتے پہلے ہی پارٹی میں شامل ہونے والے ارباب عامر کو میرٹ پر این اے 4 کا ٹکٹ تهمایا گیا؟؟   

خان صاحب دیرینہ اور نظریاتی کارکن ہی کسی پارٹی کی اصل طاقت ہوتی ہے اور اسی  سے آپ تبدیلی لا سکتے ہیں، پارٹی بدل کر آپ کے ساته شامل ہونا تبدیلی نہیں بلکہ یہ آپکا مشن ہی تبدیل کرکے رکهدینگے۔ 

خان صاحب! ایک اور گلہ یہ ہے کہ آپ تو حکومت کی مخالفت زیادہ تر ہی کرتے ہیں، کبھی کبھی تو ویسے ہی طبعیت خوشگواری کیلؑے حکومت کو دو تین سنا دیتے ہیں لیکن جب بات حکومت کی طرف سے ختم نبوت کے متعلق حلف نامے سے چهیڑ خانی کی جاتی ہے اور قومی سطح پر اس کیخلاف ریکشن بھی آتا ہے تو اس پر آپ پراسرار خاموشی اپنا لیتے ہیں اور ن لیگ حکومت کو ہدف تنقید نہیں بناتے۔                  
آپ کا تو ماٹو بهی ایاک نعبد و ایاک نستعین ہے، آپ تو مدینہ کی ریاست     کی بات بهی کرتے ہیں، پهر ایسی خاموشی یقینا" ہمیں پریشان کردیتی ہے۔                                

جناب کرپشن کیخلاف تو آپ جدوجہد بھی کر رہے لیکن آپ اپنے اردگرد لوگوں پر نظر ڈالیں ان کا کیا حال ہے؟ 

جہانگیرترین کو تو خیر چوڑیں، شاہ محمود قریشی جو پیر بن کر مزاروں پر سادہ لوح عوام کو دھڑا دھڑ لوٹ رہے، کیا یہ کرپشن نہیں؟؟ 
           
عمران خان صاحب ! میں آپ سے محبت کرتا آیا ہوں، مجهے کینسر کے خلاف آپکی جدوجہد عظیم سے محبت ہے، کرپشن کیخلاف بهی آپ کا جذبہ زبردست تھا،، آپکا کهرا پن بهی کمال تها لیکن خان صاحب اب آپ خوشامدیوں اور دودہ کے مجنونان میں گهرے ہوئے ہیں، آپ کو گمراہ کر رہے،ْ، اپ اپنے راستے سے تیزی کیساتھ ہٹ رہے۔۔۔                            
عمران خان صاحب!!                                                                               
واپس آجائیں کہ آپ سے میری محبت برقرار رہ سکے                                       
آپکا خیراندیش
میر محسن الدین

______________________________________________________________

ادارے یا ایڈیٹر کا مراسلہ نگار کی رائے سے متفق ہونا ضروری نہیں۔


کوئی تبصرے نہیں:
Write comments

خبروں اور ویڈیوز کے لئے ہماری ویب سائیٹ وزیٹ کیجئے: پوسٹ پر تبصرہ کرنے کے لئے شکریہ۔ آپ کا تبصرہ جائزے کے بعد جلد پیج پر نمودار ہوجائے گا۔ شکریہ

تازہ ترین

مشہور اشاعتیں

تازہ ترین خبریں

Recent Posts Widget