3 نومبر، 2017

بریپ کے عوام کی احتجاجی ریلی، اسلم بیگ کے قاتلوں کو جلد ازجلد گرفتار کرکے سزادینے کا مطالبہ

چترال (رپورٹ کریم اللہ) آج سے 6 ماہ قبل یعنی 14 اپریل 2017ء کو وادی یارخون
کے  گاؤں بریپ میں مبینہ طور پر بیوی اور ان کے آشنا کے ہاتھوں قتل ہونے والے نوجوان اسلم بیگ کے قتل کا مقدمہ درج ہوئے کافی  عرصہ بیت گیا ۔ اس دوران کافی لیت ولعل کے بعد پولیس نےاسلم بیگ کے ورثاء کی درخواست پر ان کی بیوی اور ایک پولیس اہلکار کے خلاف ایف آئی آردرج کر کے لڑکی کو گرفتار بھی کیا تھا البتہ ابھی تک اس قتل کے ایک اور مبینہ ملزم جو کہ پولیس کانسٹبل ہےگرفتار نہیں نہ ہوسکا ۔ جس کے خلاف علاقے کے مردوخواتین کی بڑی تعداد نے آج بریپ میں ایک پرامن احتجاجی ریلی کا انعقاد کیا  جس میں سینکڑوں افراد شامل ہوئے  ۔  مقررین کا کہنا تھا کہ جلد ازجلد مجرموں کو گرفتار کرکے سزا دی جائے  ۔مقتول کے چچا حکیم خان نے بتایا کہ اس پرامن ریلی کا مقصد یہ تھا کہ چونکہ ایف آئی آر میں مطلوب  پولیس اہلکار بی بی اے کرکے کھلے عام گھوم پھیر رہے ہیں ،جبکہ قبر کشائی کے بعد لاش کی پوسٹ ماٹم کا وغدہ بھی کیا گیا تھا جن پر ابھی تک عمل درآمد نہ ہوسکا جس کے خلاف بریپ کے عوام نے اپنا پرامن رحتجاج ریکارڈ کیا۔


کوئی تبصرے نہیں:
Write comments

خبروں اور ویڈیوز کے لئے ہماری ویب سائیٹ وزیٹ کیجئے: پوسٹ پر تبصرہ کرنے کے لئے شکریہ۔ آپ کا تبصرہ جائزے کے بعد جلد پیج پر نمودار ہوجائے گا۔ شکریہ

تازہ ترین

مشہور اشاعتیں

تازہ ترین خبریں

Recent Posts Widget