اپنے فیس بک آئی ڈی سے بھی آپ ویب سائیٹ پر کسی نیوز
یا بلاگ پر کومنٹ کرسکتے ہیں۔

12 جنوری، 2018

بشریٰ بی بی سے 2 سال قبل ملا تھا، ہمیشہ پردہ کرتی ہیں، طلاق کے بعد پروپوزل بھیجا: عمران خان کا دنیا میں انٹرویو

لاہور/ اسلام آباد: (ویب ڈیسک) عمران خان نے دنیا نیوز کے پروگرام 'آن دا فرنٹ' میں اپنی ممکنہ شادی کے متعلق گفتگو کرتے ہوئے کہا ہے کہ بشریٰ بی بی ہمیشہ پردہ کرتی ہیں، شادی کی پیشکش کرنا میرا ذاتی معاملہ ہے، آج تک ان سے جب ملا انہوں نے مکمل پردہ کیا ہوا ہوتا تھا۔

عمران خان نے مزید کہا کہ میرے خاندان کو شادی کی پیشکش کا نہیں پتا تھا، بشریٰ بی بی کی فیملی کو نقصان پہنچایا گیا، اگر بات آگے بڑھتی تو میں سب کو بتاتا۔ انہوں نے مزید کہا کہ مجھے بلیک میل کرنے کیلئے پروپیگنڈا کیا گیا، بشریٰ بی بی کی طلاق ہونے پر ان کو شادی کی پیشکش کی، شادی کی پیشکش کرنا میرا ذاتی معاملہ ہے۔ انہوں نے یہ بھی کہا کہ شریف فیملی سے متعلق اتنا علم ہے، بتاؤں تو وہ عوام کو منہ نہ دکھا سکیں۔

چیئرمین پی ٹی آئی نے بتایا کہ میرے خاندان کو شادی کی پیشکش کا نہیں پتا تھا، اگر بات آگے بڑھتی تو میں سب کو بتاتا، بشریٰ بی بی سے 2 سال پہلے ملاقات ہوئی، مگر 30 سال پہلے میرا روحانی سفر شروع ہو چکا تھا۔ انہوں نے بتایا کہ صوفی ازم پڑھنے سے میرا ایمان اور مضبوط ہوا، پہلے میاں بشیر میری رہنمائی کرتے رہے، کہا گیا کہ میں تمام فیصلے روحانی پیر سے پوچھ کر کرتا ہوں، تنقید کرنے والوں کو معرفت کے بارے میں کچھ پتہ نہیں، جمہوری آدمی ہوں اور اپنے فیصلے خود کرتا ہوں، معرفت یا بشریٰ بی بی کا میری سیاسی زندگی اور دیگر روزمرہ فیصلوں سے قطعاً کوئی تعلق نہیں، میں ان سے صرف روھانی امور میں مدد لیتا ہوں، ابنِ عربی اور مولانا روم کو سمجھنے میں ان سے مدد لیتا ہوں، میرے بارے میں ایک نجی ٹی وی چینل نے بشریٰ بی بی سے پوچھ کر لاہور والا گھر گروانے کی یا پہاڑوں پر جانے کی باتیں چلائیں، وہ یکسر غلط اور بے بنیاد ہیں۔

انہوں نے یہ بھی بتایا کہ زمانہ طالبعلمی میں انہوں نے انگلینڈ میں ایک سٹور پر تیف ہفتے کیلئے ملازمت کی مگر سٹور والوں نے انہیں 10 روز بعد ہی نکال دیا تھا۔ (دنیا نیوز) 





کوئی تبصرے نہیں:
Write comments

خبروں اور ویڈیوز کے لئے ہماری ویب سائیٹ وزیٹ کیجئے: پوسٹ پر تبصرہ کرنے کے لئے شکریہ۔ آپ کا تبصرہ جائزے کے بعد جلد پیج پر نمودار ہوجائے گا۔ شکریہ

نوٹ: ٹائمزآف چترال کی انتظامیہ اور اداراتی پالیسی کا بلاگر کے خیالات سے متفق ہونا ضروری نہیں ہے۔ اگر آپ بھی چاہتے ہیں کہ آپ کا نقطہ نظر پاکستان اور دنیا بھر کے ناظرین تک پہنچے توآپ بھی قلم اٹھائیے اور 400 سے 700 الفاظ پر مشتمل اپنی تحریر تصویر، مکمل نام، فون نمبر، سوشل میڈیا آئی ڈیز اور اپنے مختصر مگر جامع تعار ف کے ساتھ ہمیں ای میل کریں ای میل ایڈریس timesofchitral@outlook.com آپ اپنے بلاگ کے ساتھ تصاویر اور ویڈیو لنک بھی بھیج سکتے ہیں۔

اپنے فیس بک آئی ڈی سے بھی آپ ویب سائیٹ پر کسی نیوز
یا بلاگ پر کومنٹ کرسکتے ہیں۔

تازہ ترین

مشہور اشاعتیں

loading...

تازہ ترین خبریں