4 جنوری، 2018

پشاور پریس کلب کے سامنے صوبائی نشت ختم کرنے کے خلاف چترالیوں کا احتجاجی مظاہرہ۔

 



پشاور (نمائندہ ٹائمزآف چترال) حالیہ دنوں چترال کی ایک صوبائی نشست ختم کرنے کے خلاف پشاور پریس میں چترالیوں احتجاجی مظاہرہ کیا جس کی قیادت رابطہ کمیٹی جمعیت علمائے اسلام چترال حلقہ پشاور کے صدر مولانا محمد عمر فیضی ،بزنس کمیٹی کے صدر صادق آمین پی پی پی چترال سے صوبائی کونسل کے ممبر شاکر الدین اے این پی چترال کے رہنما ڈاکٹر اسرار احمد خان جے یو آئی کے صوبائی رہنما مولانا شیر کریم شاہ اور پاکستان مسلم لیگ چترال کے رہنما قاضی اسلام الدین کر رہے تھے ۔ مظاہرین نے چیف الیکشن کمشنر اور حکومتی فیصلے کے خلاف پلے کارڈ اٹھا رکھے تھے۔

مقررین نے چترال میں ہونے والی مردم شماری کو مسترد کرتے ہوئے کہا کہ یہ مردم شماری زمینی حقائق کے برعکس ہے اور ایک پسماندہ ضلع کے ساتھ سراسر انصافی ہے۔

مظاہرے کے قائدین نے الیکشن کمیشن اور حکومت پاکستان سے پرزور مطالبہ کیا کہ جلد سے جلد نشست بحال کرکے چترالیوں میں پھیلی بے چینی کو ختم کیا جائے بصورت دیگر چترالی عوام الیکشن دو ہزار اٹھارہ کا مکمل بائیکاٹ کریں گے جس کی زمہ الیکشن کمیشن اور حکومت پر عائد ہوگی




کوئی تبصرے نہیں:
Write comments

خبروں اور ویڈیوز کے لئے ہماری ویب سائیٹ وزیٹ کیجئے: پوسٹ پر تبصرہ کرنے کے لئے شکریہ۔ آپ کا تبصرہ جائزے کے بعد جلد پیج پر نمودار ہوجائے گا۔ شکریہ

تازہ ترین

مشہور اشاعتیں

تازہ ترین خبریں