مارچ 30, 2018

ایکسرے پر سیدھا کھڑا نہ ہوسکنے پر ٹیکنیشن نے مکہ مار کر بچی کو قتل کردیا

 

بہاول پور(ٹائمزآف چترال ویب ڈیسک) بہاولپور کے ایک نجی ہسپتال کے ایکسرے ٹیکنیشن نے مبینہ طور پر مکا مار کر
بچی کو قتل کردیا ہے۔ تفصیلات کے مطابق ٹیکنیشن جب بچے کا ایکسرا نکالنے لگا تو بچی سیدھا کھڑا نہیں ہو پایا، جس پر ٹیکنیشن نے عصے سے بچی کو سیدھا کھڑا ہونے کا کہا، اور پھر بھی نہ ہوا تو بچی کو مکا مارا۔ والدین کے مطابق مذکورہ ٹیکنیشن نے ان کو بھی زدکوب کیا تھا۔ ٹیکنیشن کے مبینہ تشدد سے 9 سالہ بچی جاں بحق ہو گئی۔ نجی ہسپتال میں ایکسرے کیلئے آنے والی بچی بیماری کے باعث سیدھی کھڑی نہیں ہو سکتی تھی جسے دیکھ کر ٹیکنیشن کو غصہ آ گیا اور اس نے بچی کی کمر پر مکا مار دیا، مکا لگنے سے 9 سالہ سونیا موقع پر دم توڑ گئی۔

سونیا کے والد رفیق نے الزام لگایا ہے کہ ٹیکنیشن نے مجھے بھی مکا مارا اور کہا کہ بچی کو سیدھی طرح پکڑو، بچی کے والد کے احتجاج پر پولیس اور اسسٹنٹ کمشنر موقع پر پہنچ گئے اور کارروائی شروع کر دی۔



کوئی تبصرے نہیں:
Write comments

خبروں اور ویڈیوز کے لئے ہماری ویب سائیٹ وزیٹ کیجئے: پوسٹ پر تبصرہ کرنے کے لئے شکریہ۔ آپ کا تبصرہ جائزے کے بعد جلد پیج پر نمودار ہوجائے گا۔ شکریہ

تازہ ترین

مشہور اشاعتیں

تازہ ترین خبریں