2 مئی، 2018

حکومت نے ایک سال سے عرصہ کے بعد قومی بچت سکیموں پر شرح منافع بڑھا دیا، کتنا بڑھایا جاننے کے لئے پڑھیں

کراچی (ویب ڈیسک) حکومت نے ایک سال سے عرصہ کے بعد قومی بچت

سکیموں پر شرح منافع بڑھا دیا،  قومی بچت سکیموں پر منافع کی شرح میں 14 ماہ بعد اضافہ کردیا گیا ہے۔ بیواؤں اور پینشنرز کو نئی سرمایاکاری پر اب 10 فیصد سے زائد منافع ملے گا۔ تفصیلات کے مطابق ادارہ قومی بچت کی جانب سے بہبود سیونگ پر شرح منافع 0.72 فیصد بڑھ کر 10.08 فیصد کردی گئی جو پہلے 9.36 فیصد تھی، جبکہ سپیشل سیونگز سرٹیفیکیٹ پر شرح منافع 0.40 فیصد بڑھ کر 6.6 فیصد ہوگئی ہے۔ ڈیفینس سیونگ سرٹیفکیٹ کے شرح منافع 0.56 فیصد بڑھا دیا گیا ہےاب 8.10 فیصد کی شرح سے منافع دیا جائے گا۔ ریگولر انکم سرٹیفکیٹ پر 1.09 فیصد کی شرح سے سب سے زیادہ اضافہ کردیا گیا۔ ریگولر انکم سرٹیفکیٹ پر منافع کی شرح 6.54 فیصد سے بڑھاکر 7.63 فیصد کردی گئی۔ علاوہ ازین سیونگز اکاؤنٹس پر بھی منافع کی شرح 0.55 فیصد بڑھا کر 4.5 فیصد کردی گئی ہے۔ منافع کی نئی شرح کا اطلاق نئی سرمایاکاری پر ہوگا۔ ماہرین کا کہنا ہے کہ اس اقدام سے قومی بچت میں سرمایاکاری کرنے والوں کی آمدن میں اضافہ ہوگا اور بچت کا کلچر بھی فروغ پائے گا۔ تمام سکیموں پر منافع کی نئی شرح کا اطلاق یکم مئی 2018 سے ہوگا۔



کوئی تبصرے نہیں:
Write comments

خبروں اور ویڈیوز کے لئے ہماری ویب سائیٹ وزیٹ کیجئے: پوسٹ پر تبصرہ کرنے کے لئے شکریہ۔ آپ کا تبصرہ جائزے کے بعد جلد پیج پر نمودار ہوجائے گا۔ شکریہ

تازہ ترین

مشہور اشاعتیں

تازہ ترین خبریں