14 اگست، 2018

خیبر سکول اینڈ کالج موری لشٹ چترال میں یوم آزادی کی پروقار تقریب۔ یو۔سی کوہ کے پرائیویٹ اور سرکاری سکولوں کے پوزیشن ہولڈر طلبا و طالبات میں خصوصی ایوارڈز تقسیم

 




چترال (محمد فاروق)  ملک بھر کی طرح چترال کے مختلف سکولوں اور کالجوں میں یوم آزادی انتہائی جوش و خروش سے منایا جارہا ہے اور اسی دن کے حوالے سے "خیبر سکول اینڈ کالج موری لشٹ" میں ایک خصوصی تقریب " تقسیم انعامات برائے پوزیشن ہولڈرز " منعقد کی گئی جسمیں علاقے کوہ کے تمام سرکاری و پرائیویٹ سکولوں کے اساتذہ اور پوزیشن ہولڈرز طلباء و طالبات سمیت علاقہ کوہ کے سیاسی وغیر سیاسی عمائدین نے بڑی تعداد میں شرکت کی۔ 
تقریب کا آغاز باقاعدہ طور پر تلاوت قرآن مجید سے ہوا ۔ اس کے بعد یو۔سی کوہ کے سکولوں کے مختلف رنگوں میں ملبوس ننھے منے بچوں نے ملے نغمے پیش کئے اور حاضرین سے خوب داد حاصل کرلی۔ اس کے علاؤہ سنئیر طلباء و طالبات نے آج کے دن کے حوالے سے تقاریر کی ۔ واضح رہے کہ اس تقریب میں یو۔سی کے مختلف پرائیویٹ اور سرکاری سکولوں کے چھٹی جماعت سے لیکر دسویں جماعت تک پہلی ،دوسری اور تیسری پوزیشن حاصل کرنے والے طلبہ و طالبات کو خصوصی ایوارڈ سے نوازا گیا۔ 
یاد رہے کہ پروگرام کے صدر پرنسپل عتیق الرحمن (آئی۔پی۔ایس کوغزی) نے پوزیشن ہولڈرز طلباء وطالبات کے والدین اور اساتذہ کو مبارکباد دیتے ہوئے کہا کہ کسی بھی شعبے کی ترقی کےلئے تعلیم بہت ضروری ہے اور انھوں نے اس پروگرام کے انتظامیہ کے کاوشوں کو بھی بے حد سراہا اور ان تقریبات کو کرانے میں ہر قسم کی تعاون کی یقین دھائی کرائی۔ ان کے علاؤہ کوغزی دھرتی کے معروف شاعر اور ادیب ولی زمان مسرور نے چترال میں بڑھتی ہوئی خودکشیوں کے حوالے سے اپنی خیالات کا اظہار کرتے ہوئے کہا کہ سکولوں میں بچوں اور بچیوں کے مابین مقابلے کرائے جاتے ہیں جس کی وجہ سے اکثر بچے امتحان میں کم نمبر آنے پر ناامید ہوجاتے ہیں اور خودکشی کرنے پر مجبور ہو جاتے ہیں۔ انھوں نے والدین کی  کیٹیگری بیان کرتے ہوئے کہا  کہ اکثر والدین کے سخت رویہ بھی بچوں کی خودکشی کی سبب بن سکتا ہے اور انھوں نے اس معاملے میں زور دیتے ہوئے کہا کہ والدین اس معاملے میں مثبت کردار ادا کریں اور بچوں کی حوصلہ شکنی کے بجائے حوصلہ افزائی کریں تاکہ ان میں مذید محنت کا شوق پیدا ہوسکے۔

پروگرام کے مہمان خصوصی عبدالولی خان ایڈووکیٹ نے شرکاء سے خطاب کرتے ہوئے تمام پوزیشن ہولڈرز طلباء وطالبات کے والدین اور اساتذہ کو خراج تحسین پیش کی اور کہا کہ طلباء و طالبات میں تعلیمی مقابلے مثبت انداز میں ہونے چاہئیں۔ اس معاملے میں والدین اور اساتذہ کرام اپنا اپنا کردار ادا کریں اور انسانیت کی فلاح و بہبود کی تعلیم دیں تاکہ ایک بہترین معاشرے کی تشکیل ہوسکے۔ انھوں نے یونین کونسل کوہ میں ایک ایسی تنظیم بنانے پر زور دیا جو کہ یوسی کوہ میں موجود قابل طلباء و طالبات کو مالی وسائل فراہم کرکے انکو آگے لے جانے میں مدد فراہم کرسکے اور ان طلباء و طالبات کی قابلیت اور تجربات کو پر غور کرکے انکو پروموٹ کرسکے۔ آخر میں انھوں نے "خیبر سکول اینڈ کالج موری لشٹ" کی لیبارٹری کے لئے 20 ہزار روپے کا بھی اعلان کر دیا۔  

پروگرام کے اختتام پر ڈائیریکٹر خیبر سکول اینڈ کالج جناب فیض الرحمن اور نایاب فارانی نے آنے والے تمام مہمانوں کا شکریہ ادا کیا ۔ ویلج کونسل گولین کے چئیرمن مفتی مطیع الرحمان نے مرحوم استاد نوروز کی روح کے ایصال ثواب کے لئے خصوصی دعا کی اور یوں پاکستان ذندہ باد کے نعروں سے تقریب اپنے اختتام کو پہنچ گئی۔



کوئی تبصرے نہیں:
Write comments

خبروں اور ویڈیوز کے لئے ہماری ویب سائیٹ وزیٹ کیجئے: پوسٹ پر تبصرہ کرنے کے لئے شکریہ۔ آپ کا تبصرہ جائزے کے بعد جلد پیج پر نمودار ہوجائے گا۔ شکریہ

تازہ ترین

مشہور اشاعتیں

تازہ ترین خبریں