7 نومبر، 2018

بیٹے کو نوکری دینے کے بہانے فیصل آباد کی خاتون سے اجتماعی زیادتی

 

بیٹے کو نوکری دینے کے بہانے فیصل آباد کی خاتون سے اجتماعی زیادتی

گوجرانوالہ (ویب ڈیسک) انسان جب شیطان کا روپ دھارتا ہے تو وہ کچھ بھی کر گزرتا ہے۔ ایسا ہوا ہے گجرانوالہ میں۔ اوباش اور بد معاش گروہ نے بیٹے کو نوکری پر رکھنے کا جھانسہ دیکر خاتون سے اجتماعی زیادتی کی۔  لڑکے کو کام پر رکھنے کا جھانسہ دیکر اوباشوں کا خاتون سے گینگ ریپ، تھانہ صدر پولیس نے مقدمہ درج کر کے ملزمان کی گرفتاری کیلئے ٹیمیں تشکیل دے دیں۔


روزنامہ خبریں کے مطابق تھانہ صدر میں درج ہونے والے مقدمہ زیر دفعہ 376II کے مطابق خاتون نے بتایا ہے کہ وہ چک جھمرہ فیصل آباد کی رہائشی ہے اور گھریلو ناچاقی کی وجہ سے اپنی بہن کے گھر کھیالی گوجرانوالہ میں رہائش پذیر ہے پندرہ بیس روز قبل کھانا کھانے کیلئے آئے جہاں نسیم خان نامی شخص سے ملاقات ہوئی جس نے بتایا کہ اسے گھر پر کام کیلئے لڑکے کی ضرورت ہے اس مقصد کیلئے ہمارا اس سے فون پر ابطہ رہا۔

5 نومبر 2018 کو اپنی بہن کے ہمراہ اپنے بیٹے کو لیکر وزیرآباد آئی نسیم خاں ہمیں دھونکل کے ایک مکان میں لے گیا کہ تمہیں اپنی بیوی سے ملواتا ہوں مجھے ایک کمرہ میں بٹھا دیا اور میری بہن کو کہا بچے کو لیکر دوسرے کمرے میں آجائو تمہیں بیوی سے ملوا کر بچے کے بارے میں بات چیت کرتے ہیں جب وہ چلے گئے تو نسیم خاں نے دروازے کے باہر سے کنڈی لگا دی تھوڑی دیر بعد نسیم خان اپنے ہمراہ دیگر اوباش جوانوں فہیم جوندہ ساکن دھونکل ، اسامہ طارق شیخ ، امانت علی سکنہ فیض کالونی صادق آباد ، عمران صفدر سکنہ احمد پور صادق آباد کو لیکر آگیا جہاں ملزمان نے زبردستی اسے اپنی ہوس کا نشانہ بنایا۔ پولیس تھانہ صدر نے مقدمہ درج کرکے تین ملزمان کو گرفتار کرلیا ہے باقی ملزمان کی تلاش کیلئے چھاپے مارے جا رہے ہیں۔



کوئی تبصرے نہیں:
Write comments

تازہ ترین

مشہور اشاعتیں

تازہ ترین خبریں