اپنے فیس بک آئی ڈی سے بھی آپ ویب سائیٹ پر کسی نیوز
یا بلاگ پر کومنٹ کرسکتے ہیں۔

8 نومبر، 2018

حبیب بینک نے اپنے صارفین کو ڈیٹا محفوظ ہونے کی یقین دہانی کرادی، بینک کے مطابق سسٹم پر کوئی سائبر حملہ نہیں ہوا

 

حبیب بینک نے اپنے صارفین کو ڈیٹا محفوظ ہونے کی یقین دہانی کرادی، بینک کے مطابق سسٹم پر کوئی سائبر حملہ نہیں ہوا



کراچی : دنیا بھر بشمول پاکستان میں ای کامرس اور پلاسٹک منی (کارڈز) کے استعمال کا بڑھتا ہوا رجحان دیکھنے میں آیا ہے،جس کے بعد کسٹمرز کے فنانشل ڈیٹا کو نقصان پہنچانے کی کوششوں اور واقعات میں بھی اضافہ ہوا ہے۔جہاں دنیا بھر میں مالیاتی ادارے اپنے کسٹمرز کو محفوظ اور باسہولت ماحول فراہم کرنے کے لیے ان چیلنجز سے نبردآزما ہورہے ہیں ، HBL بھی اس سے مستثنیٰ نہیں۔ 

سائبر حملوں سے متعلق حالیہ خبروں کے پیشِ نظر ، HBL اپنے کسٹمرز کو یقین دہانی کراتا ہے کہ HBL اور اس کے کسٹمرز اِن حملوں سے محفوظ ہیں۔ ہمارے تمام سسٹم باخوبی آپریٹ کررہے ہیں اسی لیے اب تک کسٹمرز کی معلومات کو نقصان پہنچنے کا کوئی واقع پیش نہیں آیا۔ برائے مہربانی HBL کی تمام سروسز اور پروڈکٹس بلا جھجک اور پُراعتماد انداز میں استعمال کرتے رہیں۔

پاکستان کا سب سے بڑا بینک ہونے کی حیثیت سے ،HBL اپنے کسٹمرز کی معلومات کو محفوظ بنانے کے لیے ریگولیٹرز اور گلوبل پیمنٹ سروس فراہم کنندگان کے ہمراہ کام کرتا ہے۔اپنے کسٹمرز کے اعتماد اور بھروسے کو قائم رکھنے کے لیے ہم مسلسل مصروفِ عمل ہیں۔ ہم اپنے کسٹمرز کے تحفظ اور سیکورٹی کو یقینی بنانے کے لیے مسلسل اپنے سسٹم کو بہتر بنانے میں کوشاں ہیں۔ ہم اپنے کسٹمرز کو دھوکہ دہی کی سرگرمیوں سے بچنے کی آگاہی اوررہنمائی کے لئے باقاعدگی سے بذریعہ ایس ایم ایس، ای میلز ، سوشل میڈیا، لیف لیٹس/بروشرز اور معلوماتی پیغامات بذریعہ اپنے ڈیجیٹل پلیٹ فارمزکئی اقدامات کررہے ہیں ۔

HBL اپنے کسٹمرز کی فنانشل سیکورٹی کو اوّلین ترجیح دیتا ہے اور HBL کی مینجمنٹ اپنے تمام کسٹمرز کو اس بات کی یقین دہانی کراتی ہے کہ ہم اپنے سسٹم کو اس قسم کے چیلنجز سے نبردآزما ہونے اور اپنے کسٹمرز کی معلومات اور ڈیٹا کو محفوظ بنانے کے لیے مسلسل بہترین اقدامات کررہے ہیں۔ 


کوئی تبصرے نہیں:
Write comments

خبروں اور ویڈیوز کے لئے ہماری ویب سائیٹ وزیٹ کیجئے: پوسٹ پر تبصرہ کرنے کے لئے شکریہ۔ آپ کا تبصرہ جائزے کے بعد جلد پیج پر نمودار ہوجائے گا۔ شکریہ

نوٹ: ٹائمزآف چترال کی انتظامیہ اور اداراتی پالیسی کا بلاگر کے خیالات سے متفق ہونا ضروری نہیں ہے۔ اگر آپ بھی چاہتے ہیں کہ آپ کا نقطہ نظر پاکستان اور دنیا بھر کے ناظرین تک پہنچے توآپ بھی قلم اٹھائیے اور 400 سے 700 الفاظ پر مشتمل اپنی تحریر تصویر، مکمل نام، فون نمبر، سوشل میڈیا آئی ڈیز اور اپنے مختصر مگر جامع تعار ف کے ساتھ ہمیں ای میل کریں ای میل ایڈریس timesofchitral@outlook.com آپ اپنے بلاگ کے ساتھ تصاویر اور ویڈیو لنک بھی بھیج سکتے ہیں۔

اپنے فیس بک آئی ڈی سے بھی آپ ویب سائیٹ پر کسی نیوز
یا بلاگ پر کومنٹ کرسکتے ہیں۔

تازہ ترین

مشہور اشاعتیں

loading...

تازہ ترین خبریں