26 فروری، 2019

قومی سلامتی کمیٹی کا اجلاس: وقت اور جگہ کا انتخاب کرکے بھارتی جارحیت کا جواب دیا جائے گا: پاکستان

 

قومی سلامتی کمیٹی کا اجلاس: وقت اور جگہ کا انتخاب کرکے بھارتی جارحیت کا جواب دیا جائے گا: پاکستان


اسلام آباد (ویب دیسک)  قومی سلامتی کمیٹی کا آج ہنگامی اجلاس ہوا جس میں  کہا گیا ہے کہ بھارت نے جارحیت کا ارتکاب کرکے عالمی سالمیت کے قوانی کی خلاف ورزی کی ہے اور پاکستان وقت اور جگہ کا تعین کر کے اس کا جواب دے گا۔ بھارت کی دراندازی کے معاملے پر وزیراعظم عمران خان کی زیر صدارت اعلیٰ سطح کا ہنگامی اجلاس ہوا جس میں آرمی چیف جنرل قمر جاوید باجوہ، وزیر خارجہ شاہ محمود قریشی، وزیر دفاع پرویز خٹک اور سینئر عسکری حکام بھی شریک ہوئے۔ 

قومی سلامتی کمیٹی کے اجلاس بھارتی دراندازی کے بعد آئندہ کے لائحہ عمل پر تفصیلی غور کیا گیا، اس دوران وزیر خارجہ شاہ محمود قریشی نے بھارتی طیاروں کی دراندازی کے بعد کی صورتحال پر بریفنگ دی جب عسکری قیادت نے کسی بھی صورتحال سے نمٹنے کے لیے اپنی تیاریوں سے آگاہ کیا، اجلاس کو پاک فضائیہ کے طیاروں کے فوری رسپانس کے حوالے سے بھی بریف کیا گیا۔

اجلاس کے مشترکہ اعلامیے میں بالاکوٹ کےنزدیک مبینہ دہشت گردکیمپ کوٹارگٹ کرنے اور ہلاکتوں کا بھارتی دعوٰی مسترد کیا ہے۔

اعلامیے میں کہا گیا ہے کہ ایک بارپھربھارت نےخودساختہ جھوٹااورغیرمحتاط دعویٰ کیا،بھارت کے اس ڈھونگ کی بنیاد اندرونی انتخابی ماحول ہے۔




کوئی تبصرے نہیں:
Write comments

خبروں اور ویڈیوز کے لئے ہماری ویب سائیٹ وزیٹ کیجئے: پوسٹ پر تبصرہ کرنے کے لئے شکریہ۔ آپ کا تبصرہ جائزے کے بعد جلد پیج پر نمودار ہوجائے گا۔ شکریہ

تازہ ترین

مشہور اشاعتیں

loading...

تازہ ترین خبریں