اپنے فیس بک آئی ڈی سے بھی آپ ویب سائیٹ پر کسی نیوز
یا بلاگ پر کومنٹ کرسکتے ہیں۔

21 مارچ، 2019

بلوچستان سے متعلق بہت بڑی خبر آگئی، کمانڈر سدرن نے اہم بات کہہ دی

 

بلوچستان میں کوئی نوگو ایریا نہیں: کمانڈر سدرن کمانڈ



کوئٹہ (آئی این پی ) کمانڈر سدرن کمانڈ لیفٹننٹ جنرل عاصم سلیم باجوہ نے کہا ہے کہ بلوچستان کے حالات تبدیل ہورہے ہیں،اب صوبے میں کوئی نوگو ایریا نہیں،کوئٹہ کے بعد گوادر اور حب کو سیف سٹی بنائیں گے،ہم صوبائی حکومت کو ہر ممکن تعاون فراہم کریں گے، اب تک ہم سرحد پر 370 کلو میٹر باڑ لگا چکے ہیں، اگلے ماہ پر سرحد پر مزید باڑ لگانے کا کام ہوگا، ایران کے ساتھ بارڈر پر باڑ کی تعمیر کا آغاز کر رہے ہیں۔کوئٹہ میں معدنی ترقی سے متعلق سیمینار سے خطاب کے دوران لیفٹننٹ جنرل عاصم سلیم باجوہ نے کہا کہ بلوچستان کو گزشتہ 10 سال سے دہشت گردی کا سامنا رہا لیکن اب حالات تبدیل ہورہے ہیں، امن و امان کی صورتحال بہتر ہوئی ہے، صوبے میں کوئی نوگو ایریا نہیں۔ بلوچستان میں امن قائم ہوچکا اب ترقی کے سفر کا آغاز کرنے جارہے ہیں ،اس طرح کی نشستیں ہمیں سرمایہ کاری کی جانب لے جاسکتی ہیں۔ 

لاہور اور اسلام آباد کے بعد جلد کوئٹہ میں سیف سٹی پروجیکٹ پر کام شروع ہوگا، کوئٹہ کے بعد گوادر اور حب کو سیف سٹی بنائیں گے۔ہم صوبائی حکومت کو ہر ممکن تعاون فراہم کریں گے۔کمانڈر سدرن کمانڈ کا کہنا تھا کہ سرحدوں کی حفاظت ناگزیر ہے جو معاشی ترقی اور امن کی بحالی میں معاون ثابت ہوگا، اب تک ہم سرحد پر 370 کلو میٹر باڑ لگا چکے ہیں، اگلے ماہ پر سرحد پر مزید باڑ لگانے کا کام ہوگا، ایران کے ساتھ بارڈر پر باڑ کی تعمیر کا آغاز کر رہے ہیں۔لیفٹیننٹ جنرل عاصم سلیم باجوہ نے کہا کہ بلوچستان کے قدرتی وسائل سے اب تک فائدہ نہیں اٹھایا گیا، ماضی میں انفرااسٹرکچر پالیسی اور شفافیت کے فقدان کا سامنا رہا، معدنی شعبے میں بہت مواقع ہیں اس سے فائدہ اٹھانا ہوگا، بہتر سیکیورٹی اور جدید مائننگ سے اس شعبے کو ترقی دی جاسکتی ہے، مائننگ کمپنیاں آئیں انہیں مکمل تحفظ فراہم کیا جائے گا، مقامی کان مالکان کی سیکورٹی کے مسائل بھی حل کریں گے۔



کوئی تبصرے نہیں:
Write comments

خبروں اور ویڈیوز کے لئے ہماری ویب سائیٹ وزیٹ کیجئے: پوسٹ پر تبصرہ کرنے کے لئے شکریہ۔ آپ کا تبصرہ جائزے کے بعد جلد پیج پر نمودار ہوجائے گا۔ شکریہ

نوٹ: ٹائمزآف چترال کی انتظامیہ اور اداراتی پالیسی کا بلاگر کے خیالات سے متفق ہونا ضروری نہیں ہے۔ اگر آپ بھی چاہتے ہیں کہ آپ کا نقطہ نظر پاکستان اور دنیا بھر کے ناظرین تک پہنچے توآپ بھی قلم اٹھائیے اور 400 سے 700 الفاظ پر مشتمل اپنی تحریر تصویر، مکمل نام، فون نمبر، سوشل میڈیا آئی ڈیز اور اپنے مختصر مگر جامع تعار ف کے ساتھ ہمیں ای میل کریں ای میل ایڈریس timesofchitral@outlook.com آپ اپنے بلاگ کے ساتھ تصاویر اور ویڈیو لنک بھی بھیج سکتے ہیں۔

اپنے فیس بک آئی ڈی سے بھی آپ ویب سائیٹ پر کسی نیوز
یا بلاگ پر کومنٹ کرسکتے ہیں۔

تازہ ترین

مشہور اشاعتیں

loading...

تازہ ترین خبریں