اپنے فیس بک آئی ڈی سے بھی آپ ویب سائیٹ پر کسی نیوز
یا بلاگ پر کومنٹ کرسکتے ہیں۔

25 مارچ، 2019

چترال دروش کے قریبی گاوں نغر میں کرتب دکھانا نوجوان کو مہنگا پڑگیا، گاڑی میں دریا عبور کرنے کی کوشش میں دریا میں گاڑی سمیت بہہ گیا

 

چترال دروش کے قریبی گاوں نغر میں کرتب دکھانا نوجوان کو مہنگا پڑگیا، گاڑی میں دریا عبور کرنے کی کوشش میں دریا میں گاڑی سمیت بہہ گیا

چترال (نمائندہ چترال ٹائمز) بعض اوقات انسان زندگی کی قیمت پر کرتب دکھانے کی حامی بھرتا ہے۔ ایسا ہی ہوا چترال میں ایک نوجوان کے ساتھ، چترال دروش کے قریبی گاوں نغر میں کرتب دکھانا نوجوان کو مہنگا پڑگیا، گاڑی میں دریا عبور کرنے کی کوشش میں دریا میں گاڑی سمیت بہہ گیا۔ پہلے یہ نوجوان نغر کے سامنے واقع ریتلی بنجر زمین پر کافی دیر تک گاڑی گھماتا رہا پھر اسے کیا سوجھا کہ گاڑی دریا چترال میں دوڑائی، شاید وہ کوشش کررہا تھا کہ گاڑی سے دریا عبور کرکے کوئی ریکارڈ اپنے نام کرتا۔ لیکن یہ اسٹن اسے مہنگی پڑی اور نوجواد دریا میں بہہ گیا۔

دروش کے قریبی گاؤں نغر میں چترال یونیورسٹی کا ایک طالب علم  اور چترال فور بائی فور (4x4) کلب کا ممبر سلمان احمد ولد نور احمد خان ساکنہ گولدور نے جیپ کے ذریعے دریائے چترال عبور کرنے کی کوشش کرتے ہوئے دریا میں ڈوب کر جان بحق ہوگئے۔ آخری اطاعات تک متوفی کی لاش برآمد نہیں کی جاسکی تھی۔ متوفی کا دوست یہ اسٹن کرتے ہوئے اس کی ویڈیو بنارہا تھا۔ یہ ویڈیو سوشل میڈیا پر وائرل ہوگئی ہے۔ ویڈیو میں دیکھا جاسکتا ہے کہ دریا میں جانے سے قبل متوفی دریائے کنارے ریتیلی جگہ پر تیز رفتاری سے گاڑی دوڑا رہا ہوتا ہے۔ پھر اسی رفتار سے وہ دریا کے دوسرے کنارے جانے کے لئے گاڑی دریا میں لے جاتے ہیں ابھی آدھا دریا عبور کرچکا ہوتا ہے کہ گاڑی پانی میں ڈگمگانے لگتی ہے اور گہرائی میں جاکر گاڑی ڈوب جاتی ہے۔ اور دیکھتے ہی دیکھتے گاڑی پانی میں غائب ہوجاتی ہے۔ 

بتایا جاتا ہے کہ ویڈیو بنانے والے کو علاقہ کے لوگوں نے تشدد کا نشانہ بنایا ہے اور پولیس نے تعزیرات پاکستان کے دفعات 320 اور 279 کے تحت مقدمہ درج کیا ہے۔


کوئی تبصرے نہیں:
Write comments

خبروں اور ویڈیوز کے لئے ہماری ویب سائیٹ وزیٹ کیجئے: پوسٹ پر تبصرہ کرنے کے لئے شکریہ۔ آپ کا تبصرہ جائزے کے بعد جلد پیج پر نمودار ہوجائے گا۔ شکریہ

نوٹ: ٹائمزآف چترال کی انتظامیہ اور اداراتی پالیسی کا بلاگر کے خیالات سے متفق ہونا ضروری نہیں ہے۔ اگر آپ بھی چاہتے ہیں کہ آپ کا نقطہ نظر پاکستان اور دنیا بھر کے ناظرین تک پہنچے توآپ بھی قلم اٹھائیے اور 400 سے 700 الفاظ پر مشتمل اپنی تحریر تصویر، مکمل نام، فون نمبر، سوشل میڈیا آئی ڈیز اور اپنے مختصر مگر جامع تعار ف کے ساتھ ہمیں ای میل کریں ای میل ایڈریس timesofchitral@outlook.com آپ اپنے بلاگ کے ساتھ تصاویر اور ویڈیو لنک بھی بھیج سکتے ہیں۔

اپنے فیس بک آئی ڈی سے بھی آپ ویب سائیٹ پر کسی نیوز
یا بلاگ پر کومنٹ کرسکتے ہیں۔

تازہ ترین

مشہور اشاعتیں

loading...

تازہ ترین خبریں