اپنے فیس بک آئی ڈی سے بھی آپ ویب سائیٹ پر کسی نیوز
یا بلاگ پر کومنٹ کرسکتے ہیں۔

24 اپریل، 2019

کرشمہ قدرت: کارایکسیڈنٹ میں بیٹے کو بچاتے ہوئے سرپر چوٹ لگنے سے کومہ میں جانے والی خاتون کو 27 سال بعد ہوش آگیا

 

کرشمہ قدرت: کارایکسیڈنٹ میں بیٹے کو بچاتے ہوئے سرپر چوٹ لگنے سے کومہ میں جانے والی  خاتون کو 27 سال بعد ہوش آگیا



دبئی (ٹائمزآف چترال نیوز) یہ کرشمہ قدرت ہی ہے کہ 27 سال سے کومہ میں رہنے والی خاتون کو ہوش آگیا ہے۔ 1991 میں متحدہ عرب امارات میں کارایکسیڈنٹ میں بیٹے کو بچاتے ہوئے سرپر چوٹ لگنے سے کومہ میں جانے والی  خاتون کو  27 سال بعد ہوش آگیا۔ منیرہ عبداللہ 1991 میں جب وہ 32 سال کی تھی کار ایکسیڈنٹ میں سر پر شدید چوٹ لگنے کی وجہ سے کومہ میں چلی گئی تھی۔ جس کار میں اس وقت وہ تھیں، کار بس سے ٹکر گئی تھی۔ 

گزشتہ سال جرمنی میں جہاں انہیں رکھا گیا ہے، ہسپتال کے کمرے میں اچانک بات کرنی شروع، ہسپتال کے کمرے میں موجود اپنے بیٹے کی کسی سے بات کرتے ہوئے آواز سن کر خاتون نے اچانک بیٹے کو آواز دی۔ بعد ازاں کئی سالوں بعد پہی دفعہ اپنے بیٹے کا نام لیا اور اب خاتون نماز پڑھنے اور تلاوت کے قابل ہوچکی ہے۔ خاتون کے بیٹے عمر نے والدہ کی معجزانہ ہوش میں آنے کا خبر دی۔ بیٹے نے کہا کہ والدہ کی واپسی سے وہ کتنا خوش ہے بیان نہیں کرسکتا۔ عبداللہ نے کہا کہ جب وہ 4 سال کا تھا تو یہ حادثہ پیش آیا تھا۔

امارات میں خاتون 27 سال کوما میں رہنے کے بعد ہوش میں آگئی ۔ منیرہ عبداللہ نامی خاتون1991 میں سڑک حادثے کے نتیجے میں کوما میں چلی گئی تھیں ، ڈاکٹروں کے جواب دینے کے باوجود ان کے بیٹے نے ہمت نہیں ہاری اور قدرت کے اس معجزاتی کرشمے نے سب کو حیران کردیا۔منیرہ عبداللہ العین میں اپنے چار سال کے بیٹے کو اسکول سے گھر لیکر آرہی تھیں جب ان کی گاڑی ایک اسکول وین سے ٹکراگئی، جس کے نتیجے میں ان کو سخت دماغی چوٹیں آئیں جو کوما کا سبب بنیں۔ 

انہوں نے گزشتہ برس جرمنی کے ہسپتال میں آنکھیں کھولیں، سوالات کے جوابات دئیے اور قرآن کی سورتوں کی تلاوت کی،وہ حال ہی میں شیخ زید مسجد بھی گئیں۔



کوئی تبصرے نہیں:
Write comments

خبروں اور ویڈیوز کے لئے ہماری ویب سائیٹ وزیٹ کیجئے: پوسٹ پر تبصرہ کرنے کے لئے شکریہ۔ آپ کا تبصرہ جائزے کے بعد جلد پیج پر نمودار ہوجائے گا۔ شکریہ

نوٹ: ٹائمزآف چترال کی انتظامیہ اور اداراتی پالیسی کا بلاگر کے خیالات سے متفق ہونا ضروری نہیں ہے۔ اگر آپ بھی چاہتے ہیں کہ آپ کا نقطہ نظر پاکستان اور دنیا بھر کے ناظرین تک پہنچے توآپ بھی قلم اٹھائیے اور 400 سے 700 الفاظ پر مشتمل اپنی تحریر تصویر، مکمل نام، فون نمبر، سوشل میڈیا آئی ڈیز اور اپنے مختصر مگر جامع تعار ف کے ساتھ ہمیں ای میل کریں ای میل ایڈریس timesofchitral@outlook.com آپ اپنے بلاگ کے ساتھ تصاویر اور ویڈیو لنک بھی بھیج سکتے ہیں۔

اپنے فیس بک آئی ڈی سے بھی آپ ویب سائیٹ پر کسی نیوز
یا بلاگ پر کومنٹ کرسکتے ہیں۔

تازہ ترین

مشہور اشاعتیں

loading...

تازہ ترین خبریں