اپنے فیس بک آئی ڈی سے بھی آپ ویب سائیٹ پر کسی نیوز
یا بلاگ پر کومنٹ کرسکتے ہیں۔

25 مئی، 2019

چترال تورکہو میں 2 بچوں کی ماں 40 سالہ خاتون نے خودکشی کرلی، وجہ شوہر کی بے رخی اور سندگدلی

 

چترال تورکہو میں 2 بچوں کی ماں 40 سالہ خاتون نے خودکشی کرلی، وجہ شوہر کی بے رخی اور سندگدلی


چترال، تورکہو(مانیٹرنگ ڈیسک)‌ خود کشی حرام بھی ہے اور یہ ایک سخت اور آخری فیصلہ بھی۔ انسان جب ہر طرف مایوس ہوجاتا ہے تو یہ انتہائی قدم اٹھاتا ہے۔ چترال خودکشی کے واقعات بڑھ رہے ہیں۔ چترال تورکہو کے علاقے شاگرام کے نواحی گاوں شیرجولی میں ایک خاتون نے خودکشی کر لی ہے۔ خاتون ش بی بی دختر مسار نے  مبینہ طور پردریا ئے تورکہو میں چھلانگ لگا کر اپنی زندگی کے چراغ گل کردیئے۔



پولیس ذرائع کے مطابق متوفی کی عمر تقریبا 40 برس تھی اورچند سال پہلے ان کی اپنے شوہر سے علیحدگی (طلاق) ہوئی  تھی اورمتوفی کے  دو بچے با پ یعینی خاتون کے سابقہ شوہر کے پاس رہتے تھے۔ مامتا کی تڑپ تھی کی خاتون اپنے بچوں سے ملنے کیلئے اصرار کررہی تھی۔ اور بچوں کی خاطر دوبارہ سابقہ شوہر سے کے ساتھ رہنا چاہتی تھی لیکن شوہر بضد تھے کہ وہ ساتھ نہ رہے۔

یہ بھی کہا جاتا ہے کہ خاتون کا دماغی توازن درست نہیں تھا ، جب ہر طرف سے دیواریں کھڑی کردی گئیں تو خاتون دل برداشتہ ہوگئی اور اس نے زندگی کے خاتمے کو ہی نجات کا زریعہ جانا اور دریا میں چھلانگ لگادی اور اپنے آپ کو دریا کے بے رحم موجوں کے آغوش میں دے دیا۔  

لاش نکال کر ٹی ایچ کیو ہسپتال بونی سے پوسٹ مارٹم کے بعد آبائی قبرستان میں سپرد خاک کردیا گیا۔ مقامی پولیس واقعے کے اسباب جاننے کے لئے تحقیقات کر رہی ہے۔ 


کوئی تبصرے نہیں:
Write comments

خبروں اور ویڈیوز کے لئے ہماری ویب سائیٹ وزیٹ کیجئے: پوسٹ پر تبصرہ کرنے کے لئے شکریہ۔ آپ کا تبصرہ جائزے کے بعد جلد پیج پر نمودار ہوجائے گا۔ شکریہ

نوٹ: ٹائمزآف چترال کی انتظامیہ اور اداراتی پالیسی کا بلاگر کے خیالات سے متفق ہونا ضروری نہیں ہے۔ اگر آپ بھی چاہتے ہیں کہ آپ کا نقطہ نظر پاکستان اور دنیا بھر کے ناظرین تک پہنچے توآپ بھی قلم اٹھائیے اور 400 سے 700 الفاظ پر مشتمل اپنی تحریر تصویر، مکمل نام، فون نمبر، سوشل میڈیا آئی ڈیز اور اپنے مختصر مگر جامع تعار ف کے ساتھ ہمیں ای میل کریں ای میل ایڈریس timesofchitral@outlook.com آپ اپنے بلاگ کے ساتھ تصاویر اور ویڈیو لنک بھی بھیج سکتے ہیں۔

اپنے فیس بک آئی ڈی سے بھی آپ ویب سائیٹ پر کسی نیوز
یا بلاگ پر کومنٹ کرسکتے ہیں۔

تازہ ترین

مشہور اشاعتیں

loading...

تازہ ترین خبریں