اپنے فیس بک آئی ڈی سے بھی آپ ویب سائیٹ پر کسی نیوز
یا بلاگ پر کومنٹ کرسکتے ہیں۔

30 مئی، 2019

استاد کی انوکھی سزا - بھرے سکول میں طالبعلم کو گھاس کھانے پر مجبور کیا، ویڈیو وائرل، حکام کا نوٹس، پولیس کے چھاپے ، استاد روپوش

 



استاد کی انوکھی سزا - بھرے سکول میں طالبعلم کو گھاس کھانے پر مجبور کیا، ویڈیو وائرل، حکام کا نوٹس، پولیس کے چھاپے ، استاد روپوش



لودھراں( آن لائن ) صوبہ پنجاب کے علاقے لودھراں میں سرکاری پرائمری اسکول میں سبق یاد نہ کرنے پر کم عمر طالب علم کو گھاس کھانے کے لیے دبا ئوڈالنے کے الزام میں استاد کو مقدمے میں نامزد کردیا گیا۔مذکورہ واقعے کی سوشل میڈیا پر وائرل ہونے والی ویڈیو میں دیکھا جاسکتا ہے کہ پرائمری اسکول کے 7 سالہ خاشان کو اس کے دیگر طالب علم ساتھیوں کے سامنے گھاس کھانے کے لیے مجبور کیا جارہا ہے۔ویڈیو میں دیکھا جاسکتا ہے کہ خاشان سبق یاد نہیں رکھ سکا جس پر اس کے استاد حامد رضا نے اسے زبردستی گھاس کھانے پر مجبورکیا۔

استاد کے حوالے سے معلوم ہوا ہے کہ وہ اسکول میں کانٹریکٹ پرکام کررہے ہیں، متاثرہ بچے کے والد محمد اصغر کا کہنا تھا کہ واقعہ 2 روز قبل پیش آیا تھا۔انہوں نے بتایا کہ استاد ان کا عزیز ہے اور انہوں نے استاد کو اس کے عمل پر معاف کردیا، کیونکہ ان کی جانب سے کیا جانے والا ایک مذاق تھا۔ڈسٹرکٹ پولیس افسر ملک جمیل ظفر نے واقعے کا نوٹس لیا اور پولیس کو واقعے کی منظر عام پر آنے والی ویڈیو کی تحقیقات کا حکم دیا۔انہوں نے حکم دیا کہ اگر استاد ذمہ دار ہو تو ان کے خلاف سخت کارروائی عمل میں لائی جائے۔تحقیقات کے بعد فتح پور کے جلال آرائیں پولیس اسٹیشن نے متاثرہ بچے کے والد کی مدعیت میں حامد رضا کے خلاف ایف آئی آر درج کرلی ۔دوسری جانب بچے کے والد کا کہنا تھا کہ وہ استاد کو عدالت میں بھی معاف کردیں گے۔بعد ازاں پولیس نے استاد کی گرفتاری کے لیے ان کے گھر پر چھاپہ مارا لیکن وہ گھر میں موجود نہیں تھے۔لودھراں کے ایجوکیشن چیف ایگزیکٹو افسر عبدالرزاق کا کہنا تھا کہ وہ معاملے کو دیکھ رہے ہیں اور استاد کے خلاف کارروائی عمل میں لائی جائے گی۔



کوئی تبصرے نہیں:
Write comments

خبروں اور ویڈیوز کے لئے ہماری ویب سائیٹ وزیٹ کیجئے: پوسٹ پر تبصرہ کرنے کے لئے شکریہ۔ آپ کا تبصرہ جائزے کے بعد جلد پیج پر نمودار ہوجائے گا۔ شکریہ

نوٹ: ٹائمزآف چترال کی انتظامیہ اور اداراتی پالیسی کا بلاگر کے خیالات سے متفق ہونا ضروری نہیں ہے۔ اگر آپ بھی چاہتے ہیں کہ آپ کا نقطہ نظر پاکستان اور دنیا بھر کے ناظرین تک پہنچے توآپ بھی قلم اٹھائیے اور 400 سے 700 الفاظ پر مشتمل اپنی تحریر تصویر، مکمل نام، فون نمبر، سوشل میڈیا آئی ڈیز اور اپنے مختصر مگر جامع تعار ف کے ساتھ ہمیں ای میل کریں ای میل ایڈریس timesofchitral@outlook.com آپ اپنے بلاگ کے ساتھ تصاویر اور ویڈیو لنک بھی بھیج سکتے ہیں۔

اپنے فیس بک آئی ڈی سے بھی آپ ویب سائیٹ پر کسی نیوز
یا بلاگ پر کومنٹ کرسکتے ہیں۔

تازہ ترین

مشہور اشاعتیں

loading...

تازہ ترین خبریں