اپنے فیس بک آئی ڈی سے بھی آپ ویب سائیٹ پر کسی نیوز
یا بلاگ پر کومنٹ کرسکتے ہیں۔

11 جون، 2019

خیبرپختونخوا حکومت کی افغان مہاجرین کے مزید پاکستان میں قیام کی مخالفت کردی

 

خیبرپختونخوا حکومت کی افغان مہاجرین کے مزید پاکستان میں قیام کی مخالفت کردی


پشاور (ویب ڈیسک)  افغان جنگ کے بعد لاکھوں افغان مہاجرین پاکستان آئے۔ روس نے 1979 کو افغانستان پر حملہ کردیا اور دو زمینی راستوں اور ایک فضائی راستے سے افغانستان میں داخل ہوئے اور تیزی کے ساتھ اہم شہروں کاکنٹرول سنبھال لیا۔ جنگ نے افغانستان میں تباہی پھیلادی جس کے بعد لاکھوں افغانی ملک بدر ہوگئے۔ اور مختلف ملکوں میں پناہ لئے۔ افغانوں کی ایک بڑی تعداد پاکستان آئی اور یہاں آباد ہوگئے۔

خیبرپختونخوا حکومت نے افغان مہاجرین کے پاکستان میں مزید قیام کی مخالفت کردی، وزیر اطلاعات شوکت یوسف زئی نے کہا ہے کہ افغان مہاجرین کی وجہ سے ملک کا امن، کاروبار اور انفرا اسٹرکچر تباہ ہوگیا۔

ایکسپریس نیوز کے مطابق خیبرپختونخوا حکومت نے افغان مہاجرین کے پاکستان میں مزید قیام کی مخالفت کی ہے اس ضمن میں صوبائی وزیر اطلاعات شوکت یوسف زئی نے کہا ہے کہ وفاقی حکومت سے سفارش کی ہے کہ افغان مہاجرین کے پاکستان میں قیام کی ڈیڈ لائن 30 جون کو ختم ہورہی ہے اس میں مزید توسیع نہ کی جائے۔

وزیر اطلاعات کا کہنا ہے کہ ہم نے  افغان مہاجرین کی 40 سال مہمان نوازی کی لیکن ان کی وجہ سے کے پی سمیت پورے ملک میں امن و امان کے مسائل ہیں، کاروبار اور انفراسٹرکچر بھی تباہ ہو چکا ہے، افغان مہاجرین اپنے وطن جاکر پاکستان کے خلاف موجود جذبات کا خاتمہ کریں۔


کوئی تبصرے نہیں:
Write comments

نوٹ: ٹائمزآف چترال کی انتظامیہ اور اداراتی پالیسی کا بلاگر کے خیالات سے متفق ہونا ضروری نہیں ہے۔ اگر آپ بھی چاہتے ہیں کہ آپ کا نقطہ نظر پاکستان اور دنیا بھر کے ناظرین تک پہنچے توآپ بھی قلم اٹھائیے اور 400 سے 700 الفاظ پر مشتمل اپنی تحریر تصویر، مکمل نام، فون نمبر، سوشل میڈیا آئی ڈیز اور اپنے مختصر مگر جامع تعار ف کے ساتھ ہمیں ای میل کریں ای میل ایڈریس timesofchitral@outlook.com آپ اپنے بلاگ کے ساتھ تصاویر اور ویڈیو لنک بھی بھیج سکتے ہیں۔

اپنے فیس بک آئی ڈی سے بھی آپ ویب سائیٹ پر کسی نیوز
یا بلاگ پر کومنٹ کرسکتے ہیں۔

تازہ ترین

مشہور اشاعتیں

loading...

تازہ ترین خبریں