اپنے فیس بک آئی ڈی سے بھی آپ ویب سائیٹ پر کسی نیوز
یا بلاگ پر کومنٹ کرسکتے ہیں۔

18 اگست، 2019

خیبرپختونخواہ کے علاقے دیر بالا میں مسافر بس کے قریب دھماکہ 7 افراد جان بحق جبکہ 17 زخمی

 

خیبرپختونخواہ کے علاقے دیر بالا میں مسافر بس کے قریب دھماکہ 7 افراد جان بحق جبکہ 17 زخمی



دیر بالا (ٹائمزآف چترال مانیٹرنگ ڈیسک) خیبرپختونخوا کے ضلع دیر کے علاقے دیر بالا میں مسافر بس کے قریب دھماکے ہوگیا ہے جس میں 6 افراد جاں بحق ہوگئے ہیں۔ پولیس کے مطابق دھماکا دیر بالا کے علاقے حیاگئی میں ہوا ہے جہاں ایک ڈبل کیبن گاڑی کو ریموٹ کنٹرول بم سے نشانہ بنایا گیا ہے، دھماکے میں 4 افراد موقع پر ہی دم توڑ گئے واقعہ میں زخمی ہونے و الے افراد کو ڈسٹرکٹ ہیڈکوارٹر ہسپتال منتقل کیا گیا جہاں زخموں کی تاب نہ لاتے ہوئے مزید 2 زخمی چل بسے۔ 

ضلع پولیس افسر(ڈی پی او) نے دھماکے میں 6 افراد کے جاں بحق ہونے کی تصدیق کرتے ہوئے بتایا کہ دھماکا کی جگہ میں امدادی کارروائیاں مکمل کرکے اسے سیل کردیا گیا ہے۔ تمام زخمیوں کو ہسپتال منتقل کردیا گیا ہے اور ڈی ایچ کیو میں ایمرجنسی نافذ کردی گئی۔

 ڈی پی او کے میاں نصیب جان مطابق دھماکے میں متعدد زخمیوں کو ڈی ایچ کیو میں طبی امداد دی جارہی ہے۔ ڈی پی او کے مطابق گما ڈھنڈ میں گاڑی کے قریب دھماکا ریموٹ کنٹرول کے ذریعے کیا گیا۔ وزیر اطلاعات خیبرپختونخوا شوکت یوسفزئی کے مطابق اپر دیر واقعہ پرانی دشمنی کا نتیجہ ہے۔انہوں نے کہا کہ حاجی معتبر خان کی جائیداد پر پرانی دشمنی چلی آرہی ہے اور دونوں فریقین نے ایک دوسرے پر کئی حملے کئے ہیں۔ وزیراطلاعات کے مطابق حاجی معتبر خان پر پہلے بھی دو خودکش حملے ہو چکے ہیں، انہیں پولیس اہلکار سیکورٹی کیلئے دئیے گئے تھے جو دھماکے میں زخمی ہوئے۔



کوئی تبصرے نہیں:
Write comments

خبروں اور ویڈیوز کے لئے ہماری ویب سائیٹ وزیٹ کیجئے: پوسٹ پر تبصرہ کرنے کے لئے شکریہ۔ آپ کا تبصرہ جائزے کے بعد جلد پیج پر نمودار ہوجائے گا۔ شکریہ

نوٹ: ٹائمزآف چترال کی انتظامیہ اور اداراتی پالیسی کا بلاگر کے خیالات سے متفق ہونا ضروری نہیں ہے۔ اگر آپ بھی چاہتے ہیں کہ آپ کا نقطہ نظر پاکستان اور دنیا بھر کے ناظرین تک پہنچے توآپ بھی قلم اٹھائیے اور 400 سے 700 الفاظ پر مشتمل اپنی تحریر تصویر، مکمل نام، فون نمبر، سوشل میڈیا آئی ڈیز اور اپنے مختصر مگر جامع تعار ف کے ساتھ ہمیں ای میل کریں ای میل ایڈریس timesofchitral@outlook.com آپ اپنے بلاگ کے ساتھ تصاویر اور ویڈیو لنک بھی بھیج سکتے ہیں۔

اپنے فیس بک آئی ڈی سے بھی آپ ویب سائیٹ پر کسی نیوز
یا بلاگ پر کومنٹ کرسکتے ہیں۔

تازہ ترین

مشہور اشاعتیں

loading...

تازہ ترین خبریں