عدالت نے بلاول بھٹو کو معصوم کہا تھا بے قصور نہیں کہا: معاون خصوصی برائے احتساب بیرسٹر شہزاد اکبر

عدالت نے بلاول بھٹو کو معصوم کہا تھا بے قصور نہیں کہا: معاون خصوصی برائے احتساب بیرسٹر شہزاد اکبر


اسلام آباد (ویب ڈیسک) معاون خصوصی برائے احتساب بیرسٹر شہزاد اکبر نے کہا ہے کہ عدالت نے بلاول بھٹو کو بے قصور نہیں کہا، عدالت نے معصوم کہا تھا یہ بات شیخ رشید روز کہتے ہیں، آصف زرداری کے صدر بنتے ہیں بلاول بھٹو امیر ہوگئے۔

معاون خصوصی برائے احتساب بیرسٹر شہزاد اکبر نے میڈیا سے گفتگو میں بلاول کے بیان کا تنقید جواب دیتے ہوئے کہا کہ سپریم کورٹ کے فیصلے کا پیرا23 تھا کہ بلاول کو نیب میں پیش کیا جائے۔عدالت نے بلاول بھٹو کو بے قصور نہیں کہا، بلاول بھٹو گمراہ کرتے ہیں کہ جائیداد کی خریداری کے وقت وہ چار سال کے تھے، 2011 میں خریدی گئی جائیداد کے کیس میں بلاول کو بلایاگیا، کاش بلاول بھٹو نے کچھ تعلیم پاکستان میں حاصل کی ہوتی۔انہوں نے کہا کہ بلاول بھٹو کہتے ہیں چیف جسٹس نے کہا میں بے گناہ ہوں، پہلے ایک صاحب کہتے تھے مجھے کیوں نکالا ، اب ایک صاحب کہتے ہیں، مجھے کیوں بلایا۔

بیرسٹر شہزاد اکبر نے کہا ہے بلاول بھٹو گمراہ کرتے ہیں کہ جائیداد کی خریداری کے وقت وہ چار سال کے تھے، بلاول نے منی لانڈرنگ کی رقوم سے جائیدادیں بنائیں۔ آصف زرداری کے صدر بنتے ہیں بلاول بھٹو امیر ہوگئے۔2011 میں خریدی گئی جائیداد کے کیس میں بلاول کو بلایاگیا، کاش بلاول بھٹو نے کچھ تعلیم پاکستان میں حاصل کی ہوتی۔ ان کا مزید کہنا تھا کہ کہا کہ قانون سے کوئی مبرا نہیں ا?پ کو بلایا جاتا ہے تو جواب دینا ہوگا، بلاول بھٹو کو کہیں سے کوئی سرٹیفکیٹ نہیں ملا کہ انہیں ہاتھ نہیں لگایا جاسکتا۔


Post a Comment

Thank you for your valuable comments and opinion. Please have your comment on this post below.

Previous Post Next Post