-->

اپنے فیس بک آئی ڈی سے بھی آپ ویب سائیٹ پر کسی نیوز
یا بلاگ پر کومنٹ کرسکتے ہیں۔

22 مئی، 2020

کرنل کی بیوی ہوں، ’’صوبیدار کی ماں کی آنکھ‘‘ تمہاری یہ اوقات کہ تم کرنل کی بیوی کو روکو، سوشل میڈیا پر فوجی بیوی کی پولیس اہلکار سے بد تمیزی ، ویڈیو وائرل‎

کرنل کی بیوی ہوں، ’’صوبیدار کی ماں کی آنکھ‘‘  تمہاری یہ اوقات کہ تم کرنل کی بیوی کو روکو، سوشل میڈیا پر فوجی بیوی کی پولیس اہلکار سے بد تمیزی ، ویڈیو وائرل‎

اسلام آباد (مانیٹرنگ ڈیسک 21 مئی 2020) ہزارہ موٹر وے چیک پوسٹ پر ایک خاتون کی سکیورٹی فورسز کے اہلکاروں کے ساتھ بدتمیزی کی ویڈیو سوشل میڈیا پر تیزی سے وائرل،تفصیلات کے مطابق ویڈیو میں دیکھا جا سکتاہے کہ خاتون کی گاڑی سمیت کئی دیگر گاڑیا ں ہزارہ موٹرے وے چیک پوسٹ پرکھڑی ہیں ۔ 

لیکن خاتون وہاں موجود اہلکار کواپنا تعارف کرنل کی بیوی کے طور پر کرواتی ہے اور کہتی ہے کہ ڈنڈے کوہٹایا جائے اور ہمیں جانے دیا جائے لیکن ان سے اہلکار انتظار کرنے کی ہدایت کر تا ہے اور کہتا ہے کہ نائب صوبیدار کو بتایا ہے میں نے ، خاتون آگے سے جواب دیتی ہے کہ ” نائب صوبیدار کی ماں کی آنکھ ، میں کرنل کی بیوی ہوں ۔“اس کے بعد پولیس اہلکارواپس اپنے افسر سے بات کرنے کیلئے مڑتا ہے اتنی دیر میں وہ خاتون گاڑی سے باہر نکلتی ہے اور ہنگامہ شروع کر دیتی ہے ۔خاتون کو چیک پوائنٹس کے بلاکس کے پاس کھڑا دیکھ کر اہلکار واپس مڑتا ہے اور خاتون سے کہتا ہے کہ آپ انتظار کریں ، دس گاڑیاں اور بھی کھڑی ہیں ، باجی آپ انتظار کریں ، خاتون نہایت غصے کے انداز میں کہتی ہیں کہ ” میں نے اپنا تعارف کروا دیاہے ، میرے لیے اتنا کافی ہے ، اسے ہٹائو ورنہ میں نیچے گرا دوں ۔“اہلکار بار بار یہی دہراتا رہتا ہے کہ آپ انتظار کریں میں آپ کو جانے کا راستہ دوں گا لیکن خاتون کسی صورت ایک منٹ انتظار کرنے کیلئےبھی تیار نہیں ہوتی اور پولیس اہلکاروں کے ہاتھ پڑنے کی کوشش کرتی ہے اور آخر میں خاتون زبرد ستی اہلکاروں کے سڑک پر موجود خالی ڈرم کو اٹھا اٹھا کر پھینکتی ہے اور اپنے ساتھ نوجوان لڑکے کو گاڑی آگے لانے کیلئے کہتی ہے ۔اس دوران ان کی گاڑی کے آگے پولیس والا آ کر کھڑ ا ہو جاتاہے تاہم خاتون نوجوان کوڈرائیونگ سیٹ سے اتارتی ہے اور زبردستی وہاں سے گاڑی چلا کر لے جاتی ہے ۔ 



کوئی تبصرے نہیں:
Write comments

خبروں اور ویڈیوز کے لئے ہماری ویب سائیٹ وزیٹ کیجئے: پوسٹ پر تبصرہ کرنے کے لئے شکریہ۔ آپ کا تبصرہ جائزے کے بعد جلد پیج پر نمودار ہوجائے گا۔ شکریہ

نوٹ: ٹائمزآف چترال کی انتظامیہ اور اداراتی پالیسی کا بلاگر کے خیالات سے متفق ہونا ضروری نہیں ہے۔ اگر آپ بھی چاہتے ہیں کہ آپ کا نقطہ نظر پاکستان اور دنیا بھر کے ناظرین تک پہنچے توآپ بھی قلم اٹھائیے اور 400 سے 700 الفاظ پر مشتمل اپنی تحریر تصویر، مکمل نام، فون نمبر، سوشل میڈیا آئی ڈیز اور اپنے مختصر مگر جامع تعار ف کے ساتھ ہمیں ای میل کریں ای میل ایڈریس timesofchitral@outlook.com آپ اپنے بلاگ کے ساتھ تصاویر اور ویڈیو لنک بھی بھیج سکتے ہیں۔

اپنے فیس بک آئی ڈی سے بھی آپ ویب سائیٹ پر کسی نیوز
یا بلاگ پر کومنٹ کرسکتے ہیں۔

تازہ ترین

www.myvoicetv.com

مشہور اشاعتیں

loading...

تازہ ترین خبریں