-->

اپنے فیس بک آئی ڈی سے بھی آپ ویب سائیٹ پر کسی نیوز
یا بلاگ پر کومنٹ کرسکتے ہیں۔

25 جولائی، 2020

ایمریٹس نے دوران سفر کرونا کی تشخیص پر بلامعاوضہ طبی اخراجات اُٹھانے کا اعلان کردیا

 

ایمریٹس نے دوران سفر کرونا کی تشخیص پر بلامعاوضہ طبی اخراجات اُٹھانے کا اعلان کردیا 



کراچی (24 جولائی 2020) ایمریٹس کے صارفین اب زیادہ اعتماد کے ساتھ سفر کرسکتے ہیں کیونکہ اگر دوران سفر کسی مسافر میں کرونا کی تشخیص ہوتی ہے جبکہ وہ گھر سے بھی دور ہو تو ایئرلائن ڈیرھ لاکھ یوروز تک کے طبی اخراجات اور 100 یورو یومیہ کے حساب سے 14 روز کے لئے قرنطینہ کے اخراجات برداشت کرے گی، یہ سہولت ایئرلائن کی جانب سے اپنے مسافروں کو بالکل مفت فراہم کی جائے گی۔ 

ایمریٹس گروپ کے چیئرمین اور چیف ایگزیکٹو عزت مآب شیخ احمد بن سعید المختوم نے کہا، "متحدہ عرب امارات کے نائب صدر اور وزیر اعظم اور دبئی کے حاکم عزت مآب شیخ محمد کی ہدایت کے تحت ایمریٹس کی جانب سے بین الاقوامی سفر کے لئے انتہائی اعتماد کے ساتھ قائدانہ کردار کی ادائیگی پر فخر ہے۔ ہم جانتے ہیں کہ لوگ فضائی سفر کے لئے بے چین ہیں جس میں دنیا بھر کی سرحدیں بتدریج دوبارہ کھل رہی ہیں لیکن وہ سفر کے دوران کسی غیرمتوقع واقعہ پر سہولت اور یقین دہانی کے خواہاں ہیں۔ "

انہوں نے مزید کہا،  "ایمریٹس نے سفر کے ہر مرحلے میں حفاظتی اقدامات کو فعال بنانے کے لئے بھرپور کام کیا ہے تاکہ انفیکشن کے خطرے کو روکا جائے۔ ہم نے باسہولت انداز سے اپنی بکنگ پالیسیاں وضع کی ہیں۔ اب ہم اسے نئی سطح پر لے کر جارہے ہیں اور انڈسٹری میں کرونا کے علاج کے سلسلے میں طبی اخراجات اور قرنطینہ کی لاگت برداشت کرنے والی پہلی ایئرلائن کے طور پر ہم سفر کے دوران انکے اخراجات برداشت کریں گے۔ یہ ہماری جانب سے سرمایہ کاری ہے لیکن ہم اپنے مسافروں کو اولین ترجیح دے رہے ہیں اور ہمیں یقین ہے کہ وہ اس اقدام کا خیرمقدم کریں گے۔ "

ایمریٹس کی جانب سے کرونا سے متعلقہ طبی اخراجات اور قرنطینہ کا کور اپنے مسافروں کو انکی سفری کلاس یا منزل مقصود سے قطع نظر فراہم کیا جارہا ہے۔ یہ کور فوری طور پر 31 اکتوبر 2020 تک ایمریٹس پر سفر کرنے والے صارفین کے لئے کارآمد ہے (31 اکتوبر 2020 سے قبل یا پہلی پرواز مکمل ہو)۔ یہ اس وقت سے 31 روز کے لئے کارآمد ہے جب وہ سفر کرتے ہیں۔ اس کا مطلب ہے کہ ایمریٹس کے صارفین اس کور سے حاصل اضافی یقین دہانیوں سے مستفید رہنے کا سلسلہ جاری رکھ سکتے ہیں، چاہے وہ اپنی منزل پر پہنچنے کے بعد آگے کسی دوسرے شہر کی جانب سفر کریں۔ 

صارفین کو سفر سے قبل کسی فارم کو بھرنے یا اپنا اندراج کرانے کی ضرورت نہیں جبکہ ایمریٹس کی جانب سے فراہم کردہ کور کو استعمال کرنا بھی مسافروں کے لئے لازم نہیں ہے۔ سفر کے دوران کسی متاثرہ صارف میں کرونا کی تشخیص سامنے آنے پر خصوصی ہاٹ لائن سے رابطہ کرکے معاونت اور کور سے فائدہ اٹھایا جاسکتا ہے۔ 

کرونا سے متعلقہ اخراجات کے لئے ہاٹ لائن اور تفصیلات اس لنک (www.emirates.com/COVID19assistance) پر ملاحظہ کی جاسکتی ہیں۔ 


کوئی تبصرے نہیں:
Write comments

خبروں اور ویڈیوز کے لئے ہماری ویب سائیٹ وزیٹ کیجئے: پوسٹ پر تبصرہ کرنے کے لئے شکریہ۔ آپ کا تبصرہ جائزے کے بعد جلد پیج پر نمودار ہوجائے گا۔ شکریہ

نوٹ: ٹائمزآف چترال کی انتظامیہ اور اداراتی پالیسی کا بلاگر کے خیالات سے متفق ہونا ضروری نہیں ہے۔ اگر آپ بھی چاہتے ہیں کہ آپ کا نقطہ نظر پاکستان اور دنیا بھر کے ناظرین تک پہنچے توآپ بھی قلم اٹھائیے اور 400 سے 700 الفاظ پر مشتمل اپنی تحریر تصویر، مکمل نام، فون نمبر، سوشل میڈیا آئی ڈیز اور اپنے مختصر مگر جامع تعار ف کے ساتھ ہمیں ای میل کریں ای میل ایڈریس timesofchitral@outlook.com آپ اپنے بلاگ کے ساتھ تصاویر اور ویڈیو لنک بھی بھیج سکتے ہیں۔

اپنے فیس بک آئی ڈی سے بھی آپ ویب سائیٹ پر کسی نیوز
یا بلاگ پر کومنٹ کرسکتے ہیں۔

تازہ ترین

www.myvoicetv.com

مشہور اشاعتیں

loading...

تازہ ترین خبریں