-->

اپنے فیس بک آئی ڈی سے بھی آپ ویب سائیٹ پر کسی نیوز
یا بلاگ پر کومنٹ کرسکتے ہیں۔

24 جولائی، 2020

یہ ڈر ہے ٹوٹ نہ جاؤں کہیں کھِچاؤ سے میں

گزر رہا ہوں کسی ہجر کے تناؤ سے میں
یہ ڈر ہے ٹوٹ نہ جاؤں کہیں کھِچاؤ سے میں

یہ سیلِ تشنگی ایسی رَواں ہوئی مجھ میں
اُبھرتا ڈوبتا رہتا ہوں اِس بَہاؤ سے میں

لباسِ زخم مرے جسم پر جچا بھی بہت
ہمیشہ لپٹے رہے گھاؤ مجھ سے،گھاؤ سے میں

فریبِ ذات کا سینے پہ بوجھ ایسا رہا
حصارِ عمر سے نکلا ہوں کس دباؤ سے میں

وہ انہماک تھا آنکھوں میں جسم چھوتے سَمے
دھڑکنا بھول گیا اس قدر لگاؤ سے میں

کسی کے لَمس کو ترسا ہوا پرندہ ہوں
پَلٹ بھی سکتا تھا بس ایک آؤ آؤ سے میں

سفر نکال کوئی ہم قدم، ستارہ شناس
تھکا ہوا ہوں بہت تیرے اس پڑاؤ سے میں

چراغِ بام ، سِتارہ، نہ روشنی انجم
کَشید کر نہ سکا جُگنو بھی اَلاؤ سے میں

آصف انجم




کوئی تبصرے نہیں:
Write comments

خبروں اور ویڈیوز کے لئے ہماری ویب سائیٹ وزیٹ کیجئے: پوسٹ پر تبصرہ کرنے کے لئے شکریہ۔ آپ کا تبصرہ جائزے کے بعد جلد پیج پر نمودار ہوجائے گا۔ شکریہ

نوٹ: ٹائمزآف چترال کی انتظامیہ اور اداراتی پالیسی کا بلاگر کے خیالات سے متفق ہونا ضروری نہیں ہے۔ اگر آپ بھی چاہتے ہیں کہ آپ کا نقطہ نظر پاکستان اور دنیا بھر کے ناظرین تک پہنچے توآپ بھی قلم اٹھائیے اور 400 سے 700 الفاظ پر مشتمل اپنی تحریر تصویر، مکمل نام، فون نمبر، سوشل میڈیا آئی ڈیز اور اپنے مختصر مگر جامع تعار ف کے ساتھ ہمیں ای میل کریں ای میل ایڈریس timesofchitral@outlook.com آپ اپنے بلاگ کے ساتھ تصاویر اور ویڈیو لنک بھی بھیج سکتے ہیں۔

اپنے فیس بک آئی ڈی سے بھی آپ ویب سائیٹ پر کسی نیوز
یا بلاگ پر کومنٹ کرسکتے ہیں۔

تازہ ترین

www.myvoicetv.com

مشہور اشاعتیں

loading...

تازہ ترین خبریں