-->

اپنے فیس بک آئی ڈی سے بھی آپ ویب سائیٹ پر کسی نیوز
یا بلاگ پر کومنٹ کرسکتے ہیں۔

13 اکتوبر، 2020

سلطان گولڈن کی نابالغ لڑکی سےمبینہ شادی : چترال میں 12 سال کی بچی سے شادی کا انکشاف سوشل میڈیا پر نیا تنازعہ کھڑا ہوگیا

سلطان گولڈن کی نابالغ لڑکی سےمبینہ شادی : چترال میں 12 سال کی بچی سے شادی کا انکشاف سوشل میڈیا پر نیا تنازعہ کھڑا ہوگیا




پشاور (ٹائمزآف چترال ویب ڈیسک  13 اکتوبر 2020)  کار جمپنگ سے عالمی شہرت حاصل کرنے والے سلطان محمد گولڈن پر چترال میں 12 سالہ لڑکی کے ساتھ شادی کا الزام سامنے آیا ہے۔ خبر رساں ادارے کی رپورٹ کے مطابق پاکستانی ریکارڈ یافتہ اسٹنٹ مین سلطان محمد خان نے رواں برس جولائی کے مہینے میں چترال کے ایک گاؤں میں کمسن لڑکی کو زائد عمر کی دکھا کر شادی کر لی تھی، جس کا علم ہونے پر چترال کی ایک فلاحی تنظیم نے تفتیش کی تو معلوم ہوا کہ لڑکی کی عمر جعلی کاغذات تیار کرکے زیادہ دکھائی گئی ہے۔ فلاحی تنظیم اور چترال کی انتظامیہ کی جانب سے کی گئی تفتیش کے دوران یہ بات سامنے آئی کہ لڑکی کے والد نے لڑکی کے سکول سرٹیفیکیٹ اور ویکسینیشن کے سرٹیفیکیٹ چھپا کر یونین کونسل سے نیا پیدائشی سرٹیفکیٹ حاصل کیا جس پر لڑکی کی اسلام عمر سے زائد عمر لکھوائی گئی اور اس کا جعلی شناختی کارڈ بنوایا گیا، لڑکی کے اسی جعلی شناختی کارڈ پر سلطان محمد خان نے کم عمر لڑکی سے شادی کرلی۔

خبر رساں ادارے کے مطابق لڑکی کے اسکول اور ویکسی نیشن سرٹیفکیٹ سے معلوم ہوا کہ لڑکی کی عمر 12 سال بنتی ہے، جس کا سلطان محمد خان المعروف گولڈن خان کا نکاح کروانے والے نکاح رجسٹرار کو علم ہوا تو اس نے بھی دونوں کا نکاح نامہ منسوخ کر دیا۔

فلاحی تنظیم اور چترال کی ضلعی انتظامیہ کی جانب سے نادرا کو بھی درخواست دی گئی ہے کہ جعلی سرٹیفکیٹ اور کاغذات تیار کرکے جعلسازی کے ذریعے شناختی کارڈ حاصل کرنے پر کم عمر لڑکی کے والد اور اس سے شادی کرنے والے سلطان محمد کے خلاف نادرا آرڈیننس 2000 کے تحت جعلی سازی کے ذریعے دستاویزات حاصل کرنے پر کاروائی کی جائے اور دونوں ملزمان کو قرار واقعی سزا دی جائے۔

دوسری جانب لڑکی کے والد اور سلطان محمد خان نے دعوی کیا ہے کہ لڑکی کی عمر اٹھارہ سال سے زائد ہے اور لڑکی کی عمر 12 سال کے حوالے سے گردش کرنے والی خبروں میں کوئی صداقت نہیں ہے، تاہم خبر رساں ادارے کی تحقیقات کے مطابق معلوم ہوا ہے کہ لڑکی کے والد اور سلطان محمد خان نے اثرورسوخ استعمال کرتے ہوئے لڑکی کے سکول کے ریکارڈ کو بھی تبدیل کروانے کی کوشش کی ہے۔

واضح رہے کہ سلطان محمد خان المعروف گولڈن خان نے 1982 کے بعد کرتب دکھانے کا کام شروع کیا تھا اور انہوں نے 1986 میں اس وقت کے صدر ضیاء الحق، متحدہ عرب امارات (یو اے ای) کے صدر شیخ زید بن سلطان النہیان کے سامنے لاہور کے ایک اسٹیڈیم میں شاندار کرتب دکھائے تھے، جس پر انہیں مہمانوں کی جانب سے خوب داد دی گئی تھی۔

سلطان محمد خان نے دس کاروں کے اوپر سے چھلانگ لگانے کے بعد انہوں نے 1987 میں لاہور میں ایک ہی وقت میں 22 کاروں کے اوپر سے موٹر سائیکل کو اڑانا کا نیا ریکارڈ بنایا تھا۔ جس پر دینا آج بھی ان کی دل کھول کر تعریف کرتی ہے۔

کوئی تبصرے نہیں:
Write comments

خبروں اور ویڈیوز کے لئے ہماری ویب سائیٹ وزیٹ کیجئے: پوسٹ پر تبصرہ کرنے کے لئے شکریہ۔ آپ کا تبصرہ جائزے کے بعد جلد پیج پر نمودار ہوجائے گا۔ شکریہ

نوٹ: ٹائمزآف چترال کی انتظامیہ اور اداراتی پالیسی کا بلاگر کے خیالات سے متفق ہونا ضروری نہیں ہے۔ اگر آپ بھی چاہتے ہیں کہ آپ کا نقطہ نظر پاکستان اور دنیا بھر کے ناظرین تک پہنچے توآپ بھی قلم اٹھائیے اور 400 سے 700 الفاظ پر مشتمل اپنی تحریر تصویر، مکمل نام، فون نمبر، سوشل میڈیا آئی ڈیز اور اپنے مختصر مگر جامع تعار ف کے ساتھ ہمیں ای میل کریں ای میل ایڈریس timesofchitral@outlook.com آپ اپنے بلاگ کے ساتھ تصاویر اور ویڈیو لنک بھی بھیج سکتے ہیں۔

اپنے فیس بک آئی ڈی سے بھی آپ ویب سائیٹ پر کسی نیوز
یا بلاگ پر کومنٹ کرسکتے ہیں۔

تازہ ترین

www.myvoicetv.com

مشہور اشاعتیں

loading...

تازہ ترین خبریں