-->

اپنے فیس بک آئی ڈی سے بھی آپ ویب سائیٹ پر کسی نیوز
یا بلاگ پر کومنٹ کرسکتے ہیں۔

2 اکتوبر، 2020

خیبرپختونخواہ حکومت چترال میں اقتصادی زون قائم کرے گی، چترال اکنامک زون 140 ایکڑ اراضی مشتمل ہوگی

 

خیبرپختونخواہ حکومت  چترال میں اقتصادی زون قائم کرے گی، چترال اکنامک زون 140 ایکڑ اراضی مشتمل ہوگی




پشاور (ٹائمزآف چترال نیوز ڈیسک 2 اکتوبر 2020)  خیبرپختونخواہ کی صوبائی حکومت نے دور دراز خطوں کو ترقی دینے کی کوششوں کے تحت چترال میں اقتصادی زون قائم کرنے کا فیصلہ کیا ہے۔ 'چترال اکنامک زون' کو 140 ایکڑ پر محیط ہوگا اور اگلے ماہ کے آخر تک تجارتی آغاز کے لئے دستیاب ہوگا۔  یہ انکشاف منگل کو خیبرپختونخوا (کے پی) کے وزیراعلیٰ محمود خان کی زیرصدارت تین سالہ صنعتی روڈ میپ پر اجلاس کے دوران کیا گیا۔ 

وزیر اعلیٰ کو بتایا گیا کہ غازی اکنامک زون کے 89 ایکڑ حصے کا ماسٹر پلان مکمل ہوچکا ہے۔ یہ منصوبہ رواں سال دسمبر میں تجارتی آغاز کے لئے تیار ہوگا۔ مزید بتایا گیا ہے کہ درابن اکنامک زون جو صوبے کا سب سے بڑا معاشی زون ہوگا اور یہ 3125 ایکڑ رقبے پر قیام کیا جائے گا جس کے لئے ایک ٹینڈر جاری کیا گیا ہے۔ درابن اکنامک زون چین پاکستان اقتصادی راہداری (سی پی ای سی) راستے سے صرف دو کلومیٹر دور واقع ہے ، جو بین الاقوامی سرمایہ کاروں کے لئے ایک مثالی مقام ہے۔ اس منصوبے کے ذریعے متوقع سرمایہ کاری 56 بلین ارب روپے ہے ، جس میں پانچ ملین سے زیادہ براہ راست اور بالواسطہ روزگار کے مواقع موجود ہیں۔ اجلاس کو بتایا گیا کہ اس منصوبے میں چار سو صنعتی یونٹ لگیں گے۔

اس موقع پر وزیراعلیٰ محمود خان نے کہا کہ حکومت صنعتکاروں کے لئے سرمایہ کاری کا ماحول سازگار بنانے پر توجہ دے رہی ہے۔ 

کوئی تبصرے نہیں:
Write comments

خبروں اور ویڈیوز کے لئے ہماری ویب سائیٹ وزیٹ کیجئے: پوسٹ پر تبصرہ کرنے کے لئے شکریہ۔ آپ کا تبصرہ جائزے کے بعد جلد پیج پر نمودار ہوجائے گا۔ شکریہ

نوٹ: ٹائمزآف چترال کی انتظامیہ اور اداراتی پالیسی کا بلاگر کے خیالات سے متفق ہونا ضروری نہیں ہے۔ اگر آپ بھی چاہتے ہیں کہ آپ کا نقطہ نظر پاکستان اور دنیا بھر کے ناظرین تک پہنچے توآپ بھی قلم اٹھائیے اور 400 سے 700 الفاظ پر مشتمل اپنی تحریر تصویر، مکمل نام، فون نمبر، سوشل میڈیا آئی ڈیز اور اپنے مختصر مگر جامع تعار ف کے ساتھ ہمیں ای میل کریں ای میل ایڈریس timesofchitral@outlook.com آپ اپنے بلاگ کے ساتھ تصاویر اور ویڈیو لنک بھی بھیج سکتے ہیں۔

اپنے فیس بک آئی ڈی سے بھی آپ ویب سائیٹ پر کسی نیوز
یا بلاگ پر کومنٹ کرسکتے ہیں۔

تازہ ترین

www.myvoicetv.com

مشہور اشاعتیں

loading...

تازہ ترین خبریں