چترال، آیون کی معروف سیاسی اور سماجی شخصیت فضل رحمان انتقال کر گئے ، تدفین میں ہر شعبہ ہائے زندگی کے افراد کی ہزاروں کی تعداد میں شرکت ، مرحوم کی خدمات ہمیشہ یاد رکھا جائے گا

چترال، آیون کی  معروف سیاسی اور سماجی شخصیت فضل رحمان انتقال کر گئے ، تدفین میں ہر شعبہ ہائے زندگی   کے افراد کی ہزاروں کی تعداد میں شرکت ، مرحوم کی خدمات ہمیشہ یاد رکھا جائے گا



چترال (گل حماد فاروقی 7 نومبر 2020) چترال  آیون مولدہ سے تعلق رکھنے والے معروف سیاسی اور سماجی کارکن سابقہ ناظم یونین  کونسل آیون فضل رحمان نہایت جوانی میں داغ رفاقت دیکر سب کو چھوڑ دیا۔ فضل رحمان ولد فضل رحمان کا والد فضل قادر بھی پچھلے سال اچانک فوت ہوئے تھے۔ فضل رحمان مرحوم ٹمبر مافیا کے حلاف مہم میں نہایت سرگرم تھے اور آیون میں جب کرفیو لگا تھا اس وقت بھی مرحوم نے ٹمبر مافیا کے حلاف آواز اٹھایا تھا۔ان پر  دہشت گردی سمیت کئی دفعات  کے تحت مقدمہ بھی درج کیا گیا تھا  مگر انہوں نے اپنا مشن جاری رکھا کہ جنگلات کی بے دریغ کٹائی  کو روکا جائے ورنہ وادی کیلاش کے ساتھ ساتھ اس کے دامن میں واقع وادی آیون بھی قدرتی آفات سے تباہ ہوجائے گا۔ 
فضل رحمان نے جیل کی ہوا بھی کھائی اور مقدمہ کے سلسلے میں سوات دار لقضاہ اور انسداد دہشت گردی کے عدالت بھی کئی سال تک جاتا رہا۔وہ یونین کونسل مولدہ  آیون کے ناظم بھی تھے اور اپنی نظامت کے دوران بھی انہوں نے گراں قدر خدمات سرانجام دئے۔ 
فضل رحمان مرحوم نہایت ملنسار، خوش اخلاق، مہمان نواز اور ہنس مکھ انسان تھے اور ہمیشہ سماجی کاموں میں بڑھ چڑھ کر حصہ لیتا رہا۔مرحوم کے گردوں نے اچانک کام چھوڑا جس کی علاج کیلئے اسے کراچی کے ہسپتال جانا پڑا مگر وہ وہاں سے مطئمن نہیں تھا اور اسلام آباد کے شفاء ہسپتال آئے اس کے بعد پشاور سے انہوں نے علاج شروع کیا مگر دو ہفتوں کے قلیل عرصے میں وہ اس بیماری سے جانبرد نہ ہوسکے اور پشاور کے ہسپتال میں انتقال کرگئے۔ ان کی جسد خاکی کو ایمبولنس کے ذریعے آیون لایا گیا اور مولدہ  میں ان کا نماز جنازہ ادا کی گئی۔ 
مرحوم کے نماز جنازہ میں تمام طبقہ فکر سے تعلق رکھنے والے  ہزاروں لوگوں نے شرکت کی بعد ازاں ان کو  اشک بار آنکھوں سے آبائی قبرستان میں سپرد خاک کیا گیا۔ مرحوم کے تین چھوٹے بچے اور ایک بیوہ پسماندگان میں رہ گئے۔ 

Post a Comment

Thank you for your valuable comments and for taking the time to point out options to improve our service. Please have your opinion on this post below.

Previous Post Next Post