-->

اپنے فیس بک آئی ڈی سے بھی آپ ویب سائیٹ پر کسی نیوز
یا بلاگ پر کومنٹ کرسکتے ہیں۔

6 فروری، 2021

اینگرو فرٹیلائزرز اور اینگرو فاؤنڈیشن کے مشترکہ PAVE پراجیکٹ کی بین الاقوامی پذیرائی، منصوبے نے تیسرا ایوارڈ حاصل کیا

 

اینگرو فرٹیلائزرز اور اینگرو فاؤنڈیشن کے مشترکہ PAVE پراجیکٹ  کی بین الاقوامی پذیرائی، منصوبے نے تیسرا ایوارڈ حاصل کیا
کراچی: اینگرو فرٹیلائزرز اور اینگرو فاؤنڈیشن کے مشترکہ PAVE پراجیکٹ کوبرطانیہ میں منعقدہ "رشلائیٹ، سسٹین ایبل ایگریکلچر، فارسٹری اینڈ بائیوڈائیورسٹی ایوارڈ"میں فاتح قرار دیا ہے۔ PAVEپراجیکٹ نے یہ تیسرا عالمی ایوارڈ حاصل کیا ہے اس سے پہلےPAVEپراجیکٹ  تائیوان میں منعقدہ ایشیا رسپانسبل انٹرپرائز ایوارڈز2019اور  آسٹریلیا کے شہر ملبورن میں 2019ایشیا پیسفک شیئرڈ ویلیو ایوارڈ ز میں بھی ایوارڈز حاصل کرچکا ہے۔ 


PAVE پراجیکٹ اینگرو فرٹیلائزرز کے تجربے سے فائدہ اٹھا تے ہوئے  بیجوں کی ویلیو چین کو توسیع دینے کیلئے قائم کیا گیا ہے تاکہ اس کو چھوٹے زمینداروں، ابھرتے ہوئے کاروباری اداروں،بیج کے شعبے اور فوڈ سیکیوریٹی سے تعلق رکھنے والے افراد اور اداروں کیلئے یکسان مفید اور پائیدار بنایاجاسکے۔  

اس پراجیکٹ کے تحت اینگرو خواتین کسانوں سمیت چھوٹے کاشت کاروں کے ساتھ کام کرتی ہے اورسیڈ سپلائی چین کا حصہ بنانے کیلئے انہیں بیج اگانے کی تکنیکس سے متعارف کرانے کے ساتھ ساتھ انہیں تربیت فراہم کرتی ہے۔ اس اقدام نے بیج کے مختلف گروپس کے تعارف کے ذریعے فیصلہ سازی اور اور کمیونٹی کی قیادت میں خواتین کے کردار کو بڑھانے کے ساتھ ساتھ ان کے معاشی استحکام کو بھی فروغ دیا ہے۔  

بطور گلوبل پارٹنر میڈا (MEDA)کنیڈااورآسٹریلیا کے خارجہ اور تجارت ڈپارٹمنٹ PAVEپراجیکٹ کے نفاذ کیلئے رہنمائی فراہم کررہے ہیں۔ 

اینگرو فرٹیلائزرز کے چیف ایگزیکٹو آفیسر نادر سالار قریشی کے مطابق یہ گلوبل ایوارڈPAVE پراجیکٹ اینگرو اور اس کے شراکت داروں کی لگن اور اجتماعی کاوشوں کا ثبوت ہے۔ یہ پراجیکٹ اینگرو فرٹیلائزرز کے ایک مقصد سے چلنے والے ادارے کے عزم کی عکاسی کرتا ہے۔ 

ایوارڈ حاصل کرنے پر اینگرو ٹیم کو مبارکباد پیش کرتے ہوئے رشلائیٹ کے آرگنائزرنے کہاکہ اس ایوارڈ میں پہلی مرتبہ شمولیت کے بعد ایوارڈ جیتنا بہت بڑی کامیابی ہے۔

کوئی تبصرے نہیں:
Write comments

خبروں اور ویڈیوز کے لئے ہماری ویب سائیٹ وزیٹ کیجئے: پوسٹ پر تبصرہ کرنے کے لئے شکریہ۔ آپ کا تبصرہ جائزے کے بعد جلد پیج پر نمودار ہوجائے گا۔ شکریہ

نوٹ: ٹائمزآف چترال کی انتظامیہ اور اداراتی پالیسی کا بلاگر کے خیالات سے متفق ہونا ضروری نہیں ہے۔ اگر آپ بھی چاہتے ہیں کہ آپ کا نقطہ نظر پاکستان اور دنیا بھر کے ناظرین تک پہنچے توآپ بھی قلم اٹھائیے اور 400 سے 700 الفاظ پر مشتمل اپنی تحریر تصویر، مکمل نام، فون نمبر، سوشل میڈیا آئی ڈیز اور اپنے مختصر مگر جامع تعار ف کے ساتھ ہمیں ای میل کریں ای میل ایڈریس timesofchitral@outlook.com آپ اپنے بلاگ کے ساتھ تصاویر اور ویڈیو لنک بھی بھیج سکتے ہیں۔

اپنے فیس بک آئی ڈی سے بھی آپ ویب سائیٹ پر کسی نیوز
یا بلاگ پر کومنٹ کرسکتے ہیں۔

تازہ ترین

www.myvoicetv.com

مشہور اشاعتیں

loading...

تازہ ترین خبریں