19 فروری، 2019

بھارتی فضائیہ کے دو طیارے آپس میں ٹکراکر تباہ، پائلٹ ہلاک

بھارتی فضائیہ کے دو طیارے آپس میں ٹکراکر تباہ، پائلٹ ہلاک


بنگلور(ویب ڈیسک) بھارتی فضائیہ کے دو طیارے آپس میں ٹکراکر تباہ ہوگئے ہیں۔  طیارے  دوران پرواز فضاء میں آپس میں ہی ٹکرا گئے جس کے نتیجے میں ایک پائلٹ ہلاک اور دو زخمی ہوگئے۔ بین الاقوامی خبر رساں ادارے کے مطابق بھارتی شہر بنگلورو میں 2 ’سوریا کرن ایئرکرافٹ‘ نیتی میناکشی انجینئرنگ کالج کے نزدیک آپس میں ٹکرا کر تباہ ہوگئے، حادثے میں 3 پائلٹس شدید زخمی ہوگئے جن میں سے ایک نے اسپتال جاتے ہوئے دم توڑ دیا۔

پولیس کا کہنا ہے کہ دونوں زخمی پائلٹس کی حالت اب خطرے سے باہر ہے، ایک شہری بھی زخمی ہے جسے طبی امداد فراہم کی جارہی ہے۔ طیارے حادثے کی وجوہات جاننے کے لیے تفتیشی کمیٹی تشکیل دے دی گئی ہے۔ وزیر دفاع نرملہ ستھارامن نے طیاروں کے تباہ ہونے کی تصدیق کرتے ہوئے میڈیا کو بتایا کہ وہ افسوسناک واقعے سے آگاہ ہیں تاہم انہوں نے واقعے کی تفصیلات بتانے سے گریز کیا۔ یہ طیارے ’ایئرو انڈیا شو‘ کے دوران پیشہ وارانہ کرتب کا مظاہرہ کرنے کے لیے مشق کررہے تھے، ایئرکرافٹ سوریا کرن ایروبیٹک ٹیم کا حصہ ہیں جو فضاء میں دم بخود کر دینے والے نظاروں کا مظاہرہ کرنے میں مہارت رکھتے ہیں۔


بھارتی کمانڈر کی دھمکی، کشمیری مائیں اپنے بچوں سے ہتھیار پھینکوائیں ورنہ....

بھارتی کمانڈر کی دھمکی، کشمیری مائیں اپنے بچوں سے ہتھیار پھینکوائیں ورنہ....


 سری نگر(نیوز ڈیسک) بھارتی فوج کے کور کمانڈر جنرل ڈھلوں نے دھمکی آمیز لہجے میں کہا ہے کہ کشمیری مائیں اپنے بچوں سے ہتھیار پھنکوائیں، ورنہ  ہتھیار اُٹھانے والوں کا انجام موت ہے۔ 


برطانوی نشریاتی ادارے کے مطابق بھارتی فوج کے کمانڈر لیفٹیننٹ جنرل کے ایس ڈھلوں نے دھمکی آمیز پریس کانفرنس میں کہا کہ کشمیری مائیں اپنے گمراہ ہوجانے والے بیٹوں کو عسکریت پسندی ترک کرنے کے لیے راضی کریں، وہ سرینڈر کرلیں تو اچھا ہے ورنہ مارے جائیں گے۔

بھارتی فوج کی 15 ویں کور کے کمانڈر کا مزید کہنا تھا کہ بچوں کی پرورش میں ماؤں کا ہاتھ سب سے زایدہ ہوتا ہے، اپنے بیٹوں کو عسکری کیمپوں سے واپس آنے کے لیے مجبور کریں۔ یہ بات ذہن نشین کرلی جائے کہ جو بندوق اُٹھائے گا وہ مارا جائے گا۔


عمران خان کی درخواست پر شہزادہ محمد بن سلمان نے سعودی عرب کی جیلوں میں قید 2107 پاکستانیوں کی رہائی حکم دے دیا

عمران خان کی درخواست پر شہزادہ محمد بن سلمان نے سعودی عرب کی جیلوں میں قید 2107 پاکستانیوں  کی رہائی حکم دے دیا


اسلام آباد (ٹائمزآف چترال نیوز) سعودی ولی عہد محمد بن سلمان کو دیئے گئے عشائیے میں جہاں عمران خان نے حاجیوں سے متعلق شاہ سلمان سے عرض کیا وہیں سعودی جیلوں میں قید پاکستانی مزدوروں کی رہائی کے لئے بھی درخواست کی تھی۔  جس پر شاہ سلمان نے وزیراعظم عمران خان سے ان کی بھی رہائی کا وعدہ کیا جو جلد ہی پورا کرتے ہوئے چند گھنٹوں میں  سعودی جیلوں میں قید 2107 پاکستانیوں کو فوری رہاکرنے کا حکم جاری کر دیاہے۔

سعودی عرب کے ولی عہد شہزادہ محمد بن سلمان نے پاکستان کے لیے ایک اور بڑا اعلان کر دیا۔ شہزادہ محمد بن سلمان نے سعودی عرب کی جیلوں میں قید 2107 پاکستانیوں کی فوری رہائی کا حکم دے دیا۔ سماجی رابطے کی ویب سائٹ ٹوئٹر پر وزیر اعظم آفس کے آفیشل اکاؤنٹ سے جاری کیے گئے بیان میں بتایا گیا ہے کہ سعودی ولی عہد شہزادہ محمد بن سلمان نے وزیر اعظم عمران خان کی درخواست پر پاکستانی قیدیوں کی فوری رہائی کا حکم جاری کیا ہے۔

تفصیلات کے مطابق وزیراعظم عمران خان اور سعودی ولی عہد محمد بن سلمان کے درمیان ملاقات ناشتے پر ہوئی جس دوران انہوں نے یہ خوشخبری سنا دی ہے ۔ دوسری جانب وفاقی وزیر اطلاعات فواد چوہدری نے ٹویٹر پر صبح سویرے خوشخبری سناتے ہوئے ٹویٹر پر اعلان کیا کہ ” وزیراعظم عمران خان کی درخواست پر ولی عہد محمد بن سلمان نے فوری طور پر سعودی جیلوں میں قید 2017 پاکستانیوں کو رہا کرنے کا حکم جاری کر دیا ہے ۔



اسلام آباد سے چترال پی آئی اے کا کرایہ 2100، باقی رقم کہاں جاتی ہے، جاننے کے لئے سنسی خیز انکشاف پڑھیں

اسلام آباد سے چترال پی آئی اے کا کرایہ 2100، باقی رقم کہاں جاتی ہے، جاننے کے لئے سنسی خیز انکشاف پڑھیں



پشاور (ٹائمزآف چترال نیوز) ذرائع کے مطابق قومی ایئرلائن کے اسلام آباد سے چترال 8 ہزار کرایہ میں سے صرف 2100 روپے قومی ایئر لائن کو جاتے ہیں۔ جبکہ باقی مختلف ٹیکسز کی مد میں حکومت کی جھولی میں چلے جاتے ہیں۔ یہ انکشاف قومی ایئرلائن (پی آئی اے) کے نمائندے نے پشاور ہائی کورٹ میں کرایوں کے حوالے سے دائر درخواست کی سماعت کے دوران کیا۔ یاد رہے کہ چترال کے شہری امین الحسن نے چترال کے فضائی کرایوں میں کمی کے لئے پشاور ہائی کورٹ سے رجوع کیا تھا۔ اس کیس کی سماعت کے دوران یہ انکشاف ہوا کہ پی آئی اے کو تو صرف 2100 روپے ملتے ہیں باقی ٹیکسوں کی صورت میں حکومتی خزانے میں جمع ہوجاتے ہیں۔



چترالی موسیقی کا ایک باب بند ہوگیا، استاد تعلیم خان انتقال کر گئے

چترالی موسیقی کا ایک باب بند ہوگیا، استاد تعلیم خان انتقال کر گئے


چترال (ٹائمزآف چترال نیوز) چترالی موسیقی کا ایک باب بند ہوگیا، استاد تعلیم خان انتقال کر گئے ہیں۔ چترال کے سنیئر ترین موسیقار اور چترالی سرنائی کے بے تاج بادشاہ تعلیم خان انتقال کرگئے۔ تعلیم استاد سرنائی بجانے میں ایک مقام رکھتے تھے۔ انہیں ان کے مقامی قبرستان، واقع چترال، کوجو میں تدفین کیا گیا۔


جوبلی انشورنس کے چیف منیجر مارکیٹنگ سید عثمان قیصر احمد شہزاد کو سیف ہینڈ آف دی میچ کا ایوارڈ دیتے ہوئے

جوبلی انشورنس کے چیف منیجر مارکیٹنگ سید عثمان قیصر احمد شہزاد کو سیف ہینڈ آف دی میچ کا ایوارڈ دیتے ہوئے

پاکستان سپر لیگ میں کوئٹہ گلیڈئیٹرز اور اسلام آباد یونائیٹڈ کے درمیان میچ کے بعد جوبلی انشورنس کے چیف منیجر مارکیٹنگ سید عثمان قیصر احمد شہزاد کو سیف ہینڈ آف دی میچ کا ایوارڈ دے رہے ہیں۔ 





18 فروری، 2019

سعودی ولی عہد کی خیبر پختونخوا میں فرمان خان شہید کے نام پر طبی مرکز قائم کرنے کی ہدایت

سعودی ولی عہد کی خیبر پختونخوا میں فرمان خان شہید کے نام پر طبی مرکز قائم کرنے کی ہدایت



اسلام آباد (سعودی پریس ایجنسی) سعودی عرب کے ولی عہد اور وزیر دفاع شہزادہ محمد بن سلمان بن عبدالعزیز نے صوبہ خیبر پختونخوا میں پاکستانی شہری فرمان خان شہید کے نام پر اس کے آبائی علاقے میں ایک طبی مرکز قائم کرنے کی ہدایت جاری کی ہے۔

پاکستان کے دورے پر آئے ہوئے سعودی ولی عہد کی یہ خصوصی ہدایت مملکت میں انسان دوست کارنامہ انجام دینے والے دلیر پاکستانی شہری کے اہل خانہ کے حوالے سے شہزادہ محمد بن سلمان کی ذاتی دل چسپی کو ظاہر کرتی ہے۔ ساتھ ہی اس سے دونوں برادر ملکوں کے درمیان اخوت اور انسانیت کے منفرد تعلق کا بھی اندازہ ہوتا ہے۔

طبی مرکز کے قیام کی ہدایت سعودی ولی عہد کی جانب سے فرمان خان کے گھرانے کی براہ راست اور صوبے کے لوگوں کی بالواسطہ فکر کی عکاس ہے۔

یاد رہے کہ سعودی عرب میں مقیم پاکستانی شہری فرمان خان نے جدہ میں 1430 ہجری میں آنے والے سیلاب کے دوران بے مثال دلیری کا مظاہر کرتے ہوئے 14 افراد کو ڈوبنے سے بچا لیا تھا۔ بعد ازاں مزید افراد کو سیلابی ریلے سے نکالنے کے دوران فرمان نے خود جام شہادت نوش کر لیا۔ اس کارنامے کے اعتراف میں فرمان خان کو کنگ عبدالعزیز ایوارڈ سے نوازا گیا جب کہ جدہ شہر کی ایک سڑک بھی اس کے نام سے موسوم کر دی گئی تھی۔




چترال: سنو سکینگ کا دلچسپ کھیل وادی مڈگلشٹ میں احتتا م پذیر۔ اس کھیل میں تین سو کھلاڑیوں نے حصہ لیا۔ بچیوں نے بھی سنو سکینگ کا مظاہرہ کیا۔

چترال: سنو سکینگ کا دلچسپ کھیل وادی مڈگلشٹ میں احتتا م پذیر۔ اس کھیل میں تین سو کھلاڑیوں نے حصہ لیا۔ بچیوں نے بھی سنو سکینگ کا مظاہرہ کیا۔


چترال (گل حماد فاروقی) جنت نظیر وادی مڈگلشٹ میں پہلی مرتبہ باقاعدہ طور پر منانے والا سنو سکینگ فیسٹیویل احتتام پذیر۔ اس کھیل میں مقامی کھلاڑیوں کے علاوہ سوات، گلگت ، اسلام آباد، پنجاب اور ملک کے دیگر حصوں سے بھی سنو سکینگ کھلاڑیوں اور چیمپین نے حصہ لیا اور تماشائیوں کو محظوظ کیا۔ 

اس خوبصورت کھیل میں چار کیٹیگریوں پر مشتمل کھلاڑیوں نے حصہ لیا۔ آٹھ سے بار ہ سال جن میں نذیر احمد نے اول پوزیشن حاصل کی روح الامین نے دوسری اور مرتضےٰ نے تیسری پوزیشن حاصل کی۔

تیر ہ سے سولہ کے کھلاڑیو ں میں عباد الرحمان نے اول ، عماد حسین نے دوسری جبکہ انعام اللہ نے تیسری پوزیشن حاصل کی۔

سولہ سے پچیس سال کے عمر کے کھلاڑیوں میں عاشق حسین نے پہلی پوزیشن، واصف علی نے دوسری جبکہ سلطان نے تیسری پوزیشن حاصل کی۔

چبیس سے پچپن سال کے عمر کے کھلاڑیوں میں عبد الحفیظ نے پہلی پوزیشن حاصل کی، برہان نے دوسری اور سید جعفر نے تیسری پوزیشن حاصل کی۔ 

شہزادہ سکندر الملک جو چترال پولو ایسوسی ایشن کا صدر بھی ہے نے ہمارے نمائندے کو بتایا کہ میں صوبائی ٹورزم تھنگ ٹینکر کا رکن بھی ہوں مگر مجھے حیرانگی اس بات پر ہے کہ ایک طرف صوبائی حکومت دعویٰ کرتی ہے کہ وہ سیاحت کو فروغ دیں گے اور چترال سب سے اول نمبر پر ہے مگر دوسری طرف اس دلچسپ کھیل میں کسی نے شرکت بھی نہیں کی اور نہ کوئی فنڈ فراہم کی۔ 

حاجی انذر گل نے کہا کہ یہاں دو کھلاڑیوں کے ٹانگ ٹوٹ گئے مگر انتظامیہ کی جانب سے کوئی ڈاکٹر بھی موجود نہیں ہے اور نہ کوئی میڈیکل کیمپ لگایا گیا ہے۔ 

بریگیڈئیر افندی کا کہنا ہے وہ ساٹ سالوں سے سنو سکینگ کھیل رہا ہے مگر یہاں آکر اس کی خیرانگی کی انتہاء نہ رہی کہ یہ حطہ قدرتی طور پر اس کھیل کیلئے نہایت موزوں ہے انہوں نے اس بات پر نہایت مایوسی کا اظہار کیا کہ صوبائی حکومت یا ضلعی انتظامیہ کی جانب سے مڈگلشٹ میں پہلی بار منعقد کرنے والا سنو سکینگ کھیلنے والے کھلاڑیوں اور تنظیم کے اراکین کی حوصلہ افزائی بھی نہیں کی گئی نہ سڑک کو ٹریفک کیلئے کھول دیا گیا۔ انہوں نے مقامی لوگوں کو خراج تحسین ؛پیش کرتے ہوئے کہا کہ یہاں کوئی ہوٹل، ریسٹورنٹ یا گیسٹ ہاؤس نہیں ہے مگر تین سو مہمانوں کو مقامی لوگوں نے اپنے گھروں میں رکھ کر مہمان نوازی کی مثال قائم کی۔

ہندوکش سنو سپورٹس ایسوسی ایشن کے صدر شہزادہ حشا م الملک نے کہا کہ یہ کھیل پچھلے سو سالوں سے یہاں کھیلا جاتا ہے مگر اسے باقاعدہ طور پر ایک تہوار کے طور پر کبھی نہیں منایا گیا تھا ہم نے پہلی بار اسے منظم طریقے سے منایا جس میں ملک بھر کے کھلاڑیوں نے حصہ لیا اور چترال کے جن علاقوں میں بھی سنو سکینگ کی گنجائش موجود ہیں ہم ضرور وہاں یہ کھیل کھیلیں گے اور اسے بین الاقوامی سطح پر بھی روشناس کرایں گے۔ 

پروگرام کے احتتام میں کرنل معین الدین نے کھلاڑیوں میں انعامات تقسیم کئے۔ راستے پر پہلے سے پڑی ہوئی برف اور مزید برف باری نے لوگو ں کی مشکلات میں اضافہ کیا مگر انتظامیہ کی طرف سے سڑک کھولنے کیلئے کوئی قدم نہیں اٹھایا گیا۔ 

چند بچیو ں نے بھی اس کھیل میں حصہ لیتے ہوئے بتایا کہ ہم بہت خوش ہیں کہ پہلی بار یہاں کی بچیاں بھی سنو سکیگ میں حصہ لے رہے ہیں اور ہماری حواہش ہے کہ آئندہ بھی لڑکیوں کیلئے سنو سکینگ کھیلنے کا اہتمام کیا جائے۔ اس دلچسپ کھیل کو دیکھنے کیلئے کافی تعداد میں لوگ آئے تھے مگر مقامی ناظمین نے شکایت کی ضلعی انتظامیہ نہ صرف باہر سے آنے والے تماشایوں یہاں جانے سے روکتے بھے بلکہ مڈگلشت کے علاوہ چترال کے دیگر علاقوں سے آنے والے مقامی لوگوں کو بھی مڈگلشٹ نہیں چھوڑتے تھے جس کی وجہ سے تماشائیوں کی تعداد کم ررہی مگر اس کے باوجود وادی میں کافی لوگ جمع تھے۔ 











16 فروری، 2019

چترال کے سمندر پار شہری نے زیر تعمیر ہوٹل کا کام رکوانے پر عدالت سے رجوع کیا۔ معروف قانون دان محب اللہ تریچوی کے وساطت سے

چترال کے سمندر پار شہری نے زیر تعمیر ہوٹل کا کام رکوانے پر عدالت سے رجوع کیا۔ معروف قانون دان محب اللہ تریچوی کے وساطت سے محکمہ آثار قدیمہ کے ڈائریکٹر ڈاکٹر عبد الصمد، ڈپٹی کمشنر چترال اور چیف سیکرٹری خیبر پحتون خواہ کے خلاف پشاور ہائی کورٹ میں رٹ پیٹیشن دائر کیا۔ 

درخواست گزار کا موقف ہے کہ وہ معیاری ہوٹل تعمیر کرکے سیاحت کو فروغ دینا چاہتا ہے ہوٹل کا کام پچھلے سال شروع ہوا تھا اب تکمیل کے آحری مرحلے میں ہے۔ 

چترال (گل حماد فاروقی) چترال کے وادی کیلاش میں زیر تعمیر ہوٹل کی بندش پر شہری نے پشاور ہائی کورٹ سے رجوع کیا۔ تفصیلات کے مطابق ڈاکٹر محمد عدنان جن کا تعلق لاہور سے ہے اور بیرون ملک بحرین میں بطور ڈاکٹر فرائض انجام دیتا ہے۔ ڈاکٹر عدنان بھٹہ نے بمبوریت کے پہلواناندہ سے شادی کی ہے اور اس کے سسر نے اسے زمین بھی حبہ کی ہے جس کے بعد اس کا شناحتی کارڈ بھی چترال کا بن چکا ہے۔ اور اب یہا ں مستقل رہائش پذیر ہے۔ 

ڈاکٹر عدنان نے کراکاڑ گاؤں میں آبادی سے کافی دور کھیتوں میں زمین خرید کر وہاں ایک معیاری ہوٹل تعمیر کرنا شروع کیا تھا۔ ڈاکٹر عدنان نے بیرون ملک سے فون پر باتیں کرتے ہوئے ہمارے نمائندے کو بتایا کہ عمران خان نے بھی سمندر پار پاکستانیوں سے اپیل کی تھی کہ وہ پاکستان میں سرمایہ کرے اور صوبائی حکومت بھی سیاحت کو فروغ دینا چاہتے ہیں کپتان کے پکار پر اس نے لبیک کہتے ہوئے بمبوریت میں ایک معیاری ہوٹل کی تعمیر شروع کی کیونکہ اس وادی میں ایک سرکاری ہوٹل کے علاوہ کوئی اور ایسا معیاری ہوٹل نہیں ہے جہاں اہم شحصیات ٹھرسکے اسلئے اس نے اس وادی کو فروغ دینے کیلئے پچیس کروڑ روپے کی سرمایہ کاری کرنا شروع کی اور ایک اعلےٰ معیار کا ہوٹل بنانا چاہا تاکہ ملکی اور غیر ملکی سیاح یہاں ٹھر سکے اور واپس جانے پر مجبور نہ ہو۔ 

ان کا کہنا ہے کہ اس کے ہوٹل کا کام پچھلے سال شروع ہوا تھا اس وقت نہ تو کسی نے اسے روکا نہ این او سی کا مطالبہ کیا اور پورے وادی میں کوئی بورڈ بھی نہیں لگا ہے کہ یہاں تعمیراتی کام بند ہے جس طرح سول ایوی ایشن والوں نے ائیر پورٹ کے احاطے میں باقاعدہ بورڈ لگایا ہے کہ رن وے سے سات سو فٹ کے فاصلے پر کوئی تعمیراتی کام بند ہے مگر اس کے باوجود بعض بااثر افراد نے ر ن وے کے قریب بھی مکا تعمیر کی ہے جبکہ میرے ہوٹل پر اب تک اسی فی صد کام ہوچکا ہے اور جب میرا ہوٹل تعمیر کے آحری مرحلے میں تھا تو ڈایریکٹر آثار قدیمہ نے ڈپٹی کمشنر چترال کو لکھا کہ وادی کیلاش میں جدید طرز کے تعمیرات بند کرے۔ اس کے بعد بمبوریت کے پولیس نے ڈی سی چترال کے حکم پر بار بار آکر میرا کام روک دیا میرے مزدور، کاریگر، مستری کئی ماہ تک بے روزگار بیٹھے رہے اور ان کو خرچہ بھی مجھے دینا پڑا کیونکہ اسی امید پر وہ بیٹھے تھے کہ این او سی مل جائے گی اور وہ کام دوبارہ شروع کریں گے۔

ڈاکٹر عدنان نے مزید بتایا کہ اس نے ڈپٹی کمشنر چترال کے وساطت سے ڈائریکٹر آثار قدیمہ کو NOC کیلئے باقاعدہ درخواست بھی دی اور اس کے ساتھ بار بار رابطہ بھی کیا جس پر وہ ہر بار وعدہ کرتا رہا کہ وہ این او سی جاری کرے گا مگر کئی ماہ گزرنے کے باوجود بھی اس نے این او سی نہیں دیا جس پر اسے مجبوراً عدالت جانا پڑا۔ 

ڈاکٹر عدنان کا کہنا ہے کہ اس کا ہوٹل کیلاش آبادی سے کافی دور کھیتوں میں زیر تعمیر ہے جس سے کیلاش ثقافت کو کوئی حطرہ یا نقصان کا اندیشہ بھی نہیں ہے ۔ انہوں نے الزام لگایا کہ اسی وادی میں کیلاش کے مقدس جگہہ کے سامنے ہوٹل بن رہا ہے مگر اس سے کوئی نہیں پوچھتا کیونکہ وہ لوگ با اثر ہیں اور مجھے بلا وجہ تنگ کیا جارہاہے اس کے علاوہ بمبوریت میں تھانہ بھی تعمیر ہورہا ہے مگر میرے ساتھ امتیازی سلوک برتا جارہا ہے کہ این او سی لاؤ ۔

چترال کے وادی تریچ سے تعلق رکھنے والے معروف قانون دان محب اللہ تریچوی کے وساطت سے پشاور ہائی کورٹ میں ڈاکٹر عبدالصمد خان، ڈپٹی کمشنر چترال اور چیف سیکرٹری خیبر پحتون خواہ کو فریق بناتے ہوئے رٹ پیٹیشن دائیر کیا گیا جسے عدالت نے منظور کرتے ہوئے فر

یقین کو 21 فروری کو عدالت میں طلب کیا ہے۔ 

واضح رہے ڈاکٹر عدنان پیشے کے لحاظ سے معالج ہے اور جب بھی چترال پر قدرتی آفت کی صورت میں کوئی برا وقت آتا ہے تو وہ یہاں فری میڈیکل کیمپ لگا کر اپنے جیب خرچ سے مریضوں میں مفت ادویات بھی تقسیم کرتا ہے۔ اس کے علاوہ اس نے ایون پل اور بموریت سڑک کی مرمت پر بھی اپنے جیب سے لاکھوں روپے خرچ کئے ہیں اور ایک سماجی کارکن اور مخٰیر بھی ہے جو علاقے کے غریب عوام کی فلاح و بہبود کیلئے کام کرتا رہتا ہے۔ 


15 فروری، 2019

چترال: وادی مڈگلشٹ میں سنو فیسٹیول مقامی طور پر منایا جارہا ہے۔ سنو سکینگ کا کھیل آج دو بجے شروع ہوگا جو 17 فروری اتوار تک جاری رہے گا

چترال: وادی مڈگلشٹ میں سنو فیسٹیول مقامی طور پر منایا جارہا ہے۔ سنو سکینگ کا کھیل آج دو بجے شروع ہوگا جو 17 فروری اتوار تک جاری رہے گا۔ شہزادہ حشام الملک صدر ہندوکش سنو سپورٹس ایسوسی ایشن۔

چترال (گل حماد فاروقی) چترال کے جنت نظیر وادی مڈگلشٹ میں پہلی بار سنو سکینگ کا تین روزہ تہوار منایا جارہا ہے۔ سنو سکینگ فیسٹیویل میں ملک بھر سے کھلاڑیوں نے حصہ لینا تھا مگر مسلسل بارش اور برف باری کے بعد اکثر راستے بند ہوئے ہیں جس کی وجہ سے ضلعی انتظامیہ نے اس کھیل کو سرکاری طور پر منانے سے گریز کرکے اسے ملتوی کیا ہے تاہم اس کھیل کو مقامی طور پر کھیلا جاتا ہے۔ 


ہمارے نمائندے سے فون پر باتیں کرتے ہوئے ہندوکش سنو سپورٹس ایسوسی ایشن کے صدر شہزادہ محمد حشام الملک نے بتایا کہ اس کھیل کو بڑے پیمانے پر منانے کا پروگرام تھا مگر موسم نے ساتھ نہیں دیا اس لئے اسے مقامی طور پر منایا جارہا ہے۔

انہوں نے کہا کہ یہ کھیل جمعہ کے روز دو بجے شروع ہوگا جو اتوار تک جاری رہے گا اور اس میں مقامی کھلاڑی حصہ لے رہے ہیں تاہم مقامی کھلاڑیوں کی حوصلہ افزائی کیلئے باہر سے بھی چند کھلاڑی آئیں گے۔ ایک سوال کے جواب میں انہوں نے کہا کہ راستہ صاف ہے اور کسی قسم کا حطرہ نہیں ہے۔ واضح رہے کہ وادی مڈگلشٹ کے پہاڑی علاقہ قدرتی طور پر سنو سکینگ کیلئے نہایت موزوں ہے اور یہاں پہلے بھی مقامی لوگ سنو سکینگ کھیلتے تھے مگر اس بار اسے بڑے پیمانے پر کھیلنے کا پروگرام تھا



ہلاک ہونے والے بھارتی فوجیوں کی تعداد 44 ہوگئی، تعداد بڑھ سکتی ہے: واقعے کی ذمہ داری کس نے قبول کی، جاننے کے لئے پڑھیں



ہلاک ہونے والے بھارتی فوجیوں کی تعداد 44 ہوگئی، تعداد بڑھ سکتی ہے: واقعے کی ذمہ داری کس نے قبول کی، جاننے کے لئے پڑھیں



مقبوضہ جمو کشمیر کے علاقے پلوامہ میں بھارتی فوجی گاڑی پر خود کش حملے میں ہلاک ہونے والے فوجیوں کی تعداد 44 تک جا پہنچی ہے، تاہم بعض زخمی ہیں اور مختلف فوجی ہسپتالوں میں زیر علاج ہیں۔ ہلاکتوں کی تعداد میں اضافہ ہوسکتا ہے۔ واقعے پر بھارت نے پاکستان کو مورد الزام ٹھہرایا ہے، تاہم واقعے کی ذمہ داری جیش محمد نے قبول کی ہے۔ بھارتی حکام پاکستان پر الزام لگا رہےہیں کہ پاکستان نے حملے کے لئے سہولت کاری کی ہے۔ خود کش کار بم دھماکے میں بھارتی کی سنٹرل ریزور پولیس فورس (سی آر پی ایف) کی گاڑی کو نشانہ بنایا تھا۔ جس سے فوجی گاڑی تباہ ہوگئی تھی اور فوجیوں کے چھیتڑے دور دور تک پھیل گئے تھے۔ ہزاروں کمشیریوں کا قاتل بھارت فوجیوں کی ہلاکت پا سیخ ہوگیا ہے۔ واقعے کے بعد بھارتی میڈیا زہر اگلنا شروع کیا ہے۔
ٹائمزآف چترال مانیٹرنگ ڈیسک






کار بم دھماکہ 18 بھارتی فوجی ہلاک ہوگئے، کشمیر میں بھارتی فوج پر خود کش حملے شروع
مقبوضہ کشمیر (ویب ڈیسک) مقبوضہ کشمیر میں بھارتی فوجیوں پر خودکش حملے شروع ہوگئے۔ مقبوضہ کشمیر کے ضلع پلوامہ میں کار بم دھماکے میں 18 بھارتی سیکیورٹی اہلکار ہلاک اور متعدد زخمی ہو گئے۔
کشمیر میڈیا سروس کے مطابق سینٹرل ریزرو پولیس فورس کی بس پر کار بم دھماکا ضلع پلوامہ میں سری نگر جموں ہائی وے پر لٹھ پورا کے مقام پر ہوا۔
بھارتی پولیس حکام کے مطابق کار میں سوار حملہ آور نے دھماکہ خیز مواد سے بھری گاڑی سی آر پی ایف کی بس سے ٹکرائی اور پھر اسے دھماکے سے تباہ کر دیا۔  حکام کے مطابق دھماکے میں 18 سی آر پی ایف اہلکار ہلاک اور کئی زخمی ہوئے۔ زخمیوں کو بھارتی فوج کے 92 بیس اسپتال منتقل کر دیا گیا ہے۔
دھماکے کے بعد بھارتی سیکیورٹی فورسز کی بڑی تعداد نے علاقے کا محاصرہ کر کے سرچ آپریشن شروع کر دیا ہے۔

14 فروری، 2019

کار بم دھماکہ 18 بھارتی فوجی ہلاک ہوگئے، کشمیر میں بھارتی فوج پر خود کش حملے شروع

کار بم دھماکہ 18 بھارتی فوجی ہلاک ہوگئے، کشمیر میں بھارتی فوج پر خود کش حملے شروع


مقبوضہ کشمیر (ویب ڈیسک) مقبوضہ کشمیر میں بھارتی فوجیوں پر خودکش حملے شروع ہوگئے۔ مقبوضہ کشمیر کے ضلع پلوامہ میں کار بم دھماکے میں 18 بھارتی سیکیورٹی اہلکار ہلاک اور متعدد زخمی ہو گئے۔

کشمیر میڈیا سروس کے مطابق سینٹرل ریزرو پولیس فورس کی بس پر کار بم دھماکا ضلع پلوامہ میں سری نگر جموں ہائی وے پر لٹھ پورا کے مقام پر ہوا۔

بھارتی پولیس حکام کے مطابق کار میں سوار حملہ آور نے دھماکہ خیز مواد سے بھری گاڑی سی آر پی ایف کی بس سے ٹکرائی اور پھر اسے دھماکے سے تباہ کر دیا۔  حکام کے مطابق دھماکے میں 18 سی آر پی ایف اہلکار ہلاک اور کئی زخمی ہوئے۔ زخمیوں کو بھارتی فوج کے 92 بیس اسپتال منتقل کر دیا گیا ہے۔

دھماکے کے بعد بھارتی سیکیورٹی فورسز کی بڑی تعداد نے علاقے کا محاصرہ کر کے سرچ آپریشن شروع کر دیا ہے۔



لوس ترپی میں گراڈی کا رسہ ٹوٹنے سےتین سالہ بچی دریا میں گر کر لاپتہ، تین افراد زخمی

لوس ترپی میں گراڈی کا رسہ ٹوٹنے سےتین سالہ بچی دریا میں گر کر لاپتہ، تین افراد زخمی

استور: استور کے نشیبی گاوں لوس ترپی میں گراڈی کا رسہ ٹوٹنے سےتین سالہ بچی لاپتہ ۔ مقامی افراد نے تین افراد کو زخمی حالت میں دریائے استور سے نکل کر ڈسٹرکٹ ہسپتال پہنچا دیا۔


علاقے کے لوگوں کا کہنا ہے کہ لوس ترپی کے باسی آج بھی پھتر دور کی زندگی گزارنے پر مجبور ہیں۔ یہاں ایک لکڑی کا پل تک تعمیر کیا گیا ۔ آج بھی چین گراڑی سے دریا کاس کرتے ہے۔ اس حادثےکی تمام تر ذمہ داری حکومت گلگت بلتستان اور منتخب ممبران اسمبلی اور استور انتظامیہ کی ہے۔

حکام بالا اور ضلعی انتظامیہ کی نوٹس میں لانے کے باوجود پل کی تعمیر کے لیئے اقدامات نہیں اٹھائے گئے۔  

کرٹیسی پامیر ٹائمز




پاکستان سپر لیگ فورتھ ایڈیشن-فوجی فوڈز نے کراچی کنگز کے ساتھ اشتراک کرلیا

پاکستان سپر لیگ فورتھ ایڈیشن-فوجی فوڈز نے کراچی کنگز کے ساتھ اشتراک کرلیا 

کراچی (ٹائمزآف چترال نیوز) پاکستان کی مشہور فوڈ اور بیوریج کمپنی اور ہاؤس آف نور پور برانڈ کے مالکان فوجی فوڈز لمیٹڈ نے پاکستان سپر لیگ کے چوتھے ایڈیشن کو کامیابیوں کی نئی بلندیوں تک پہنچانے کے لئے کراچی کنگز کے ساتھ اشتراک کیا ہے۔ پی ایس ایل 2019 کا آغاز 14 فروری 2019 سے ہورہا ہے جس میں مجموعی طور پر 34 میچز کھیلے جائیں گے جن میں 8 میچز پاکستان میں کھیلے جائیں گے۔ 



اس اشتراک کے ذریعے فوجی فوڈز پاکستانی نوجوانوں کے پسندیدہ کھیل کی نمائندگی کے ذریعے کھیلوں کی سرگرمیوں کو فروغ دینے اور اور صحت و غذائیت کی حوصلہ افزائی کے فلسفے کی توثیق کرے گا۔ فوجی فوڈز لمیٹڈ کے جی ایم سیلز اینڈ مارکیٹنگ عمران خٹک نے کہا، " ہم پاکستان میں کرکٹ سے وابستہ جذباتی وابستگی کے ذریعے دہائیوں پرانی روایت کے تصور کو سراہتے ہیں ۔ پاکستان میں 50 سال سے زائد عرصہ سے غذائیت کی روایت کی نمائندگی رکھنے والا ہمارا برانڈ اس اشتراک کو سامنے لانے کے لئے قدرتی طور پر موزوں نظر آتا ہے اور ہر اس بات پر خوشی مناتا ہے جس سے پاکستان کے مثبت امیج کو آگے بڑھایا جائے۔" 

فوجی فوڈز لمیٹڈ صحت، توانائی اور ذائقہ کے ساتھ مکمل زندگی کے اہم اجزاء کی اہمیت کو تسلیم کرتا ہے۔ یہ ملک کی نوجوان نسل کے لئے نئے مواقع کی فراہمی پر مستحکم انداز سے یقین رکھتا ہے۔ کرکٹ صرف پاکستان کا پسندیدہ کھیل ہی نہیں بلکہ یہ صحت مند ذہن اور جسم کے ذریعے کامیابی حاصل کرنے کے تصور کی بھی نمائندگی کرتا ہے اور یہ نوجوانوں کے لئے سب سے اہم سبق ہے۔ 

پاکستان سپر لیگ نے انتہائی مختصر وقت میں ملک کے اندر کرکٹ کے ٹیلنٹ کو فروغ دینے کے لئے قابل ذکر مقبولیت کے ساتھ سب سے بڑے پلیٹ فارم کے طور پر اپنی پہچان بنا لی ہے۔ اس پلیٹ فارم کے ذریعے بہت سے نوجوان کھلاڑیوں کو اپنے خوابوں کی تعبیر کا احساس ہوگیا ہے اور وہ پرامید ہیں ایک روز وہ قومی کرکٹ اسٹار بن جائیں گے۔ فوجی فوڈز رواں سال دلچسپ آن لائن سرگرمیوں کے ذریعے اپنے پرستاروں کے ساتھ پی ایس ایل کو مزید دلچسپ بنانے کا عزم رکھتا ہے جس سے ان کے اندر مزید جوش بڑھ جائے گا۔ 




جوبلی لائف انشورنس پاکستان سپرلیگ کے چوتھے سیزن کا گولڈ اسپانسر بن گیا

جوبلی لائف انشورنس پاکستان سپرلیگ کے چوتھے سیزن کا گولڈ اسپانسر بن گیا


کراچی (پی آر) پاکستان میں صف اول کی لائف انشورنس فراہم کرنے والے ادارے اور ملک میں کھیلوں کے فروغ کے لئے مشہور کمپنی جوبلی لائف انشورنس نے 14 فروری 2019 سے شروع ہونے والی پاکستان سپرلیگ کے چوتھے سیزن کے لئے گولڈ اسپانسرشپ کا اعلان کیا ہے۔ جوبلی لائف ،پاکستان سپرلیگ کی میزبانی میں ایک بار پھر اہم کردار ادا کرنے پر فخر کرتا ہے جس کے ذریعے کرکٹ کی دنیا کے شائقین کو ایک ماہ تک عالمی معیار کی کرکٹ سے لطف اندوز ہونے کا موقع ملے گا۔

گزشتہ سال میں پی ایس ایل کے شاندار سیزن کے ساتھ اس بار شائقین کرکٹ کی جانب سے پہلے سے کہیں زیادہ توقعات وابستہ ہوگئی ہیں اور وہ رواں سال مزید دلچسپ سیزن کی امید کرتے ہیں۔ جوبلی لائف انشورس کے منیجنگ ڈائریکٹر اور سی ای او جاوید احمد نے کہا، "ہم پاکستان میں کرکٹ کے فروغ کے لئے پرعزم ہیں جس کا ثبوت وقتا فوقتا سامنے آتا رہتا ہے اور اس سے ملک میں نئے ٹیلنٹ کو سامنے لانے اور اسے پروان چڑھانے میں مدد ملتی ہے۔

پاکستان میں کرکٹ کی بحالی کے لئے مضبوط ستون کا کردار ادا کرنے پر ہمیں انتہائی مسرت ہے۔ رواں سال پی ایس ایل کے مختلف میچوں کی اپنے ہوم گراؤنڈ میں میزبانی کی خبر سے پاکستانی شائقین میں خوشی کی لہر دوڑ گئی ہے اور وہ اپنے پسندیدہ کھلاڑیوں سے سنسنی خیز پرفارمنس کی توقع کر رہے ہیں۔" پی ایس ایل کے چوتھے سیزن کے دوران متحدہ عرب امارات میں 26 میچز کھیلے جارہے ہیں جبکہ آخری مراحل کے 8 میچز پاکستان میں کھیلے جائیں گے۔ پی ایس ایل کا فائنل کراچی میں کھیلا جائے گا۔



13 فروری، 2019

چترال کے محمد رفیع، منصور علی شبابو ہواز 2 بو شیلی باشونو پیش خدمت شینی: کارکوری شیئر دی کورور پلیز

چترال کے محمد رفیع، منصور علی شبابو ہواز 2 بو شیلی باشونو پیش خدمت شینی: کارکوری شیئر دی کورور پلیز
چترال کے محمد رفیع، منصور علی شبابو ہواز 2 بو شیلی باشونو پیش خدمت شینی: کارکوری شیئر دی کورور پلیز



تازہ ترین

مشہور اشاعتیں

loading...

تازہ ترین خبریں