21 اکتوبر، 2017

زارداری روٹھے ہوئے ناراض ساتھیوں کو منانے لاہور آئے تھے، لیکن ندیم افضل چند بھی پی پی سے نکل گئے: شاہد مسعود کا تجریہ

زارداری روٹھے ہوئے ناراض ساتھیوں کو منانے لاہور آئے تھے، لیکن ندیم افضل چند بھی پی پی سے نکل گئے: شاہد مسعود کا تجریہ

لاہور میں خاتون نے بیک وات 5 بچوں کو جنم دیا، گزشتہ ہفتے ناروال میں پیدا ہونے والوں میں 4 فوت ہوئے


لاہور(ٹائمزآف چترال نیوز ڈیسک) اسی ماہ یہ پاکستان میں 5 بچے پیدا ہونے کا دوسرا واقعہ ہے۔ لاہور کے علاقے منڈی احمد آباد کی رہائشی خاتون کے ہاں بیک وقت 5 بچے پیدا ہوئے ہیں۔

منڈی احمد آباد کی رہائشی خاتون کومل نے لیڈی ایچی سن اسپتال میں 5 بچوں کو جنم دیا ہے۔ نوزائیدہ بچوں میں تین بیٹے اور دو بیٹیاں شامل ہیں۔ ڈاکٹرز کے مطابق ماں اور پانچوں بچے صحت مند ہیں۔ 

ایک ساتھ اللہ کی اتنی ساری رحمت اور نعمت ملنے پر والدین کومل اور شہزاد کی خوشی کا کوئی ٹھکانہ نہ رہا اور انہوں نے صحت مند اولاد عطا کرنے پر اللہ تعالی کا شکریہ ادا کیا ۔ پانچ بچوں کی پیدائش پر صرف والدین ہی نہیں بلکہ ہر شخص خوش نظر آیا اور اسپتال کی جانب سے بھی مٹھائی تقسیم کی گئی۔

اسی ماہ کی 12 تاریخ کو ناروال میں بھی ایک خاتون کے ہاں 5 بچے پیدا ہوئے تھے جن میں سے ایک بچہ زندہ بچا اور 4 بچے فوت ہوگئے۔ بچنے والا بھی نازک حالت میں تھا۔ ڈاکٹروں کے مطابق بچے بے حد کمزور تھے اس وجہ سے سروائیو نہیں کر پائے

چترال یارخون میں 3 ماہ قبل قتل ہونے والے نوجوان اسلم بیگ کے قتل کا ایف آئی آر مستوج تھانے میں مقتول کی بیوی اور آشنا کے خلاف درج، ورثاء انصاف کے منتظر


چترال یارخون میں 3 ماہ قبل قتل ہونے والے نوجوان اسلم بیگ کے قتل کا ایف آئی آر مستوج تھانے میں مقتول کی بیوی اور آشنا کے خلاف درج، ورثاء انصاف کے منتظر

چترال (ابوالحسنین: سپیشل رپورٹ ٹائمز آف چترال 20 اکتوبر 2017) تین ماہ قبل یار خون بریب میں قتل ہونے والے نوجوان اسلام بیگ ولد پردوم کی روح اور ورثاء انصاف کے لئے در بدر پھر رہے ہیں۔ اسلم بیگ کو قتل ہوئے 3 ماہ اور 12 دن کا عرصہ گزر گیا۔ پولیس تاحال ایف آئی آر درج کرنے سے گریزاں تھی۔ کرغیزستان میں مقیم مقتول کے عزیز کا کہنا کہ مستوج تھانے کا ایس ایچ ملزم کا واقف کار ہے اور ملزم پولیس میں ملازم ہے۔ اس کی وجہ سے وہ ملزم اور ملزمہ کے خلاف ایف آر کارٹنے سے انکار کردیا تھا۔ بیرون ملک مقیم مقتول کا کزن رستم ولد ہدایت خان مستوج تھانے میں واقعے کی ایف آئی آر درج کرانے کے لئے ٹیلی فون کیا تو تھانے کے ایس ایچ او نے یہ کہہ کر مقدمہ درج کرنے سے انکار کیا ہے کہ مقتول کا والد آجائے جبکہ ان کا والد اس وقت مزدوری کے سلسلے مین اسلام آباد میں تھا۔ اور مقتول کے بھائی چھوٹے ہیں۔ جبکہ رستم بیرون ملک ملازمت کرتے ہیں، مقتول کے واپسی کے دن ہی چھٹیاں ختم کرکے بیرون ملک واپس چلے گئے تھے۔ ان کے جانے کے کچھ دن بعد ہی قتل کا واقعہ پیش آیا۔

مقتول کے خاندان والوں کا کہنا کہ مقتول اسلم بیگ شادی کے ایک سال بعد روزگار کے سلسلے میں سعودی عرب چلا گیا۔ مقتول کے لواحقین کا کہنا کہ اسلم کے سعودیہ جانے کے بعد اس کی اہلیہ کا ایک پولیس اہلکار سے ناجائز تعلقات پروان چڑھے اور یہ تعلقات دو سال میں اتنے مضبوط ہوگئے کہ وہ اپنے حقیقی شوہر کو بھلادیا۔ دو سال بعد جب چھٹیوں پر اسلم گھر لوٹا تو اس وقت مذکورہ پولیس اہلکار سوات میں تعینات تھا، اسلم کے آنے کی خبر ملتے ہی اسے مقتول کی بیوی نے بلوا رکھا تھا، دونوں کے اس وقت ٹیلی فونک رابطے تھے۔ اس کی بیوی اپنے آشنا کے ساتھ اس کے قتل کی منصوبہ بندی پہلے ہی کرچکی تھی۔ واپسی والی رات ہی اسلم کو اپنے آشنا کے ساتھ قتل کردیا۔ مقتول کے ایک اور عزیز نے مزید بتایا کہ مقتول اسلم شدید زخمی تھا، اس کے جسم گلے پر زخم کے گہرے نشانات نشانات تھے۔ ملزم پولیس اہلکار پہلے سے شادی شدہ اور تین بچوں کا باپ ہے۔ تاہم ابھی تک یہ الزامات ہیں پولیس کو چاہئے کہ اس کیس کو صحیح معنوں میں تفتیش کرے اور ملزمان کو پکڑ کر قانون کے کٹھرے میں لا کھڑا کرے۔

اسلم کا قتل معمہ بن چکا تھا لیکن عزیزوں کو اس کی بیوی پر شک تھا۔ اسلم کے والدین بے حد غریب تھے اس وجہ سے وہ کیس کو آگے نہ بڑھاسکے۔ لیکن بیٹے کی یوں اچانک جدائی کا غم بھولنے والا نہیں تھا۔ اسلم کے عزیزوں کے بے حد اصرار پر اس معاملے کو دوبارہ اٹھا لیا گیا۔ اسلم کے ایک عزیز نے ٹائمز آف چترال کو بتایا کہ جب دونوں ملزمان کے فون ریکارڈز نکال کر چیک کیا گیا تو معلوم ہوا کہ دونوں کے گہرے روابط تھے۔ مزے کی بات یہ ہے کہ مذکورہ لڑکی شوہر کے قتل کے کچھ ہی عرصہ بعد مذکوہ پولیس اہلکار سے شادی کر بیٹھی۔ موبائل کالز ریکارڈ سامنے آنے کے بعد لواحقین کا شک یقین میں بدل گیا اور ایک بار پھر مستوج تھانے میں فرسٹ انویسٹیگیشن رپورٹ درج کروانے کے لئے رجوع کیا لیکن وہاں کے موجودہ ایس ایچ او نے معاملہ رفع دفع کرنے کے لئے دباؤ ڈالا اور صلح نہ کرنے کی صورت میں جیل میں ڈالنے کی دھمکیاں دیں۔ اور معاملہ مجسٹریٹ کے سامنے چلا گیا۔

مستوج تھانے کے ایس ایچ او نے مقدمے کے مدعی حکیم اور دیگر افراد کو مجسٹریٹ کے سامنے پیش کرتے ہوئے مجسٹریٹ سے مداعلیان کے بجائے مدعیوں کے جسمانی ریمانڈ کا مطالبہ کیا جس پر مجسٹریٹ نے ایس ایچ او کو ڈانٹ پلادی، اور کہا کہ کس نے تمہیں ایس ایچ او بنایا ہے۔ تب جاکے مذکورہ ایس ایچ او کا ہوش ٹھکانہ آگیا اور مدعیوں کو لیکر مستوج تھانے گیا اور ایف آر ملزمان مقتول کی بیوی اور اس کے آشنا کے خلاف قتل کا مقدمہ درج کیا۔

جس کا ایف آئی آر نمبر 72 302 34 ttc یعنی 20 اکتوبر 2017 کو تھانہ مستوج میں درج کر لیا گیا ہے۔

20 اکتوبر، 2017

بیٹی کے لئے جہیز کا سامان لینے چترال شہر آئے ابوزار دل کا دورہ پڑنے سے جان بحق

چترال (ٹائمز آف چترال نیوز) چترال کے دور دارز گاؤں
مستوج کے علاقے پرکوسپ سے تعلق رکھنے والا ابوزار بیٹی کی شادی کے  لئے جہیز کا سامان خریدنے چترال شہر آیا لیکن واپس نہ جاسکا۔ تفصیلات کے مطابق گزشتہ دنوں پی آئی اے چوک کے قریب راستے میں انہیں دل کا دورہ پڑا، موقع پر موجود افراد انہیں فوری طور پر ہسپتال لے گئے ، تاہم اس سے پہلے انہیں موت واقع ہوچکی تھی۔ ان کے جیپ بیٹی کے جہیز کے سامان کے لئے 1 لاکھ سے زائد رقم موجود تھی جسے ورثا کے حوالے کردیا گیا۔ متوفی کی جسد خاکی ان کے آبائی گاؤں بھیج دی گئی۔


وزیراعلیٰ پرویز خٹک نومبر میں چترال بونی میں مستوج ضلع کی بحالی کا اعلان کریں گے: ایم پی اے بی بی فوذیہ


چترال (نمائنده : ٹائمز آف چترال) تحریک انصاف کی رہنما اور ایم پی اے چترال بی بی فوذیہ نے کہا ہے کہ وزیراعلیٰ خیبر پختونخواہ اگلے ماہ کی 7 تاریخ کو بونی میں ضلع مستوج کی بحالی کا اعلان کریں گے۔ ضلع مستوج کی بحالی چترالی عوام خصوصاً اپر چترال کی عوام کا دیرینہ خواب تھا۔

بی بی فوذیہ اور ڈی پی چترال یونیورسٹی جمعرات کو وزیر اعلیٰ سے ملاقات کی۔ ملاقات کے بعد بتایا کہ وزیر اعلیٰ نے مختلف منصوبوں کے لئے ہدایت جاری کردی ہیں۔ چترال یونیورسٹی کے لئے 88 کروڑ روپے بھی شامل ہیں۔ نئے ضلع کے حوالے سے انہوں نے بتایا کہ علاقے کے لوگوں کی خواہشات کے مطابق ضلع کا نام مستوج یا اپر چترال رکھا جائے گا۔ صوبائی حکومت اور چیرمین تحریک انصاف عمران خان ضلع کی بحالی میں سنجیدہ ہیں۔ انہوں نے مزید کہا کہ وزیر اعلیٰ نے چترال یونیورسٹی ملحقہ زرعی تحقیقی مرکز کے تمام املام کو یونیورسٹی کے ساتھ شامل کرنے کے لئے حکام کو ہدایات کردی ہیں۔ چترال یونیورسٹی میں کیلاش کمیونیٹی کے لئے خصوصی سکالر شپ دیا جائے گا۔

بی بی فوذیہ کی خصوصی درخواست پر وزیر اعلیٰ نے ایک پرائمری سکول اور ڈگری کالج کے قیام کی بھی منظوری دے دی ہے۔

مستوج، شندور، بونی اور بروغل روڈ کی مرمت کے لئے ایک کروڑ سکولوں کی بہتری کی بھی منظوری دے دی گئی: سردارحسین


پشاور/چترال (ٹائمز آف چترال نیوز) ایم پی اے مستوج سردار حسین نے حال ہی میں وزیر اعلیٰ پرویز خٹک سے ملاقات کی ہے، ملاقات میں دیگر امور کے ساتھ ساتھ مستوج ضلعے کی بحالی بی زیر بحث آئی۔ ملاقات کے بعد سردار حسین نے میڈیا کو بتایا کہ وزیر اعلیٰ مستوج ضلعے کی بحالی میں سنجیدہ نظر آتے ہیں اور جلد چترال آکر اس کا اعلان کریں گے۔ انہون نے مزید بتایا کہ پرویز خٹک سے ملاقات میں مستوج، شندور، بونی اور بروغل روڈ کی جلد مرمت کے لئے 10 ملین یعنی ایک کروڑ رپے دینے کا اعلان کیا ہے جبکہ سکولوں کی بہتری کی بھی منظوری دے دی ہے۔ سکولوں کی اپرگریڈیشن میں کھوت اور بریب کے ہائی سکولوں کو ہائر سکینڈری کا درجہ دیا جائے گا جبکہ چھ پرائمری سکولوں کو مڈل کا درجہ دیا جائے گا۔


19 اکتوبر، 2017

چترال میں سکول کی کمسن طالبہ کی خودکشی کی کوشش میں دریا میں چھلانگ: چوکیدار نے جان بچائی

چترال (رپورٹ : محکم الدین ) چترال شہر میں سکول کی طالبہ نے کیبل کار سے دریائے چترال میں چھلانگ لگا کر خودکُشی کی کوشش کی ۔ لیکن سکول کے چوکیدار اور ایک نوجوان نے جان پر کھیل کر اُسے ناکام بنا دیا ۔ طالبہ کو ڈی ایچ کیو ہسپتال چترال میں داخل کر دیا گیا ہے ۔ جہاں اُس کی حالت خطرے سے باہر بتائی جاتی ہے ۔ تفصیلات کے مطابق بدھ کی صبح دنین چترال سے تعلق رکھنے والی آٹھویں
جماعت کی طالبہ ذائبہ سید دُختر (ر) صوبیدار سیدالرحمن سکول جانے کیلئے گھر سے نکلی ۔ اور راستے میں سکول جانے کی بجائے اُلٹ راستے کا انتخاب کیا اور دنین میں کوسٹر اڈہ کے پاس لگائے گئے کیبل کار میں بیٹھ کر پہلے دریاء عبور کی اور واپس جاتے ہوئے کیبل کار سے دریاء میں چھلانگ لگائی اور خود کُشی کی کوشش کی ۔ تاہم طالبہ کے سکول کے چوکیدار اکبر نبی نے ایک اور نوجوان کی مدد سے جان پر کھیل کر اُسے بچا نے میں کامیاب ہو گئے ۔ طالبہ ذائبہ کو ڈی ایچ کیو ہسپتال چترال کے آئی سی یو میں داخل کردیا گیا ہے ۔ جہاں اُن کا علاج جارہی ہے ۔ ہسپتال کے ڈاکٹر اسرارالدین نے میڈیا سے بات کرتے ہوئے بتایا۔ کہ بچی کو فوری طور پر علاج کی سہولت فراہم کی گئی ہے ۔ اور وہ اب خطرے سے باہر ہے ۔ انہوں کہا ۔ کہ یہ اچھی بات ہے ۔ کہ چھلانگ لگانے کے باوجود بچی کو چوٹیں نہیں آئی ہیں ،تاہم پانی میں ڈوبنے کی وجہ سے ٹھنڈ کے باعث ابتدائی طور پر اُن کی حالت بہت خراب تھی ۔ جبکہ علاج کے بعد اُس کی حالت بہت بہتر ہو چکی ہے ۔ بچی کے والد نے میڈیا سے بات چیت کرتے ہوئے اس بات کو مسترد کیا ۔ کہ گھریلو نا چاقی یا کسی تشدد کی وجہ سے یہ واقع پیش ہوا ہے ۔ انہوں نے کہا ۔ کہ بچی ذہنی مریضہ ہیں ۔ جس پر اس قسم کا اثر ایک مرتبہ پہلے بھی ہوا تھا ۔ اور اب کے بار بھی خودکُشی کی یہ کو شش ذہنی تناؤ کی وجہ سے ہوا ہے ۔ انہوں نے کہا ۔ کہ وہ معمول کے مطابق اپنی سکول یونیفارم میں گھر سے نکلی ،لیکن راستے میں انہوں نے خود کُشی کا ارتکاب کیا ۔ جس میں خدا کے فضل سے وہ کامیاب نہ ہو سکے ۔تاہم اُن کی تیماردار بہن نے اس واقعے سے پہلے ذائبہ کی ذہنی تناؤ سے لاعلمی کا اظہار کیا ہے ۔ چترال میں جوانسال لڑکیوں کی خودکُشی کے واقعات تشویشناک صورت اختیار کر گئے ہیں ۔ جس کے تدارک کیلئے حکومتی سطح پر اقدامات کی شدید ضرورت ہے ۔


بابر سلطان، چترال سے تعلق رکھنے والا پہلا نیوز اینکر

بابر سلطان،  چترال سے تعلق رکھنے والا پہلا نیوز اینکر


چترال (رپورٹ : ابوالحسنین)  یوں ہر میدان میں چترالی نوجوان اپنا لوہا منوا چکے ہیں۔ 2015 کی ایک رپورٹ کے مطابق چترال تعلیم کی درجہ بندی میں پاکستان  کے تمام اضلاع میں 30 ویں نمبر پر رہا اور اس کا تعلیمی سکور 76.6 رہا۔  جو  کہ 2016 میں کم ہوکر 71.10 اور رینکنگ میں نمبر 47 پر آگیا۔  اور انرولمنٹ سکور 76.41 رہا۔  یوں  گوناں مسائل اور  سخت موسم کے باجود یہ سکور کم نہیں  لیکن اس میں امپرومنٹ کی گنجائش موجود ہے۔ 

چترالی ہر شعبہ ہائے زندگی میں آپ کو ملیں گے۔ ایسے ہی قابل سپوتوں میں ایک بابر سلطان ہیں جو ایک ابھرتا ہوں نیوز اینکر ہیں اور روز ٹیلی ویژن سے اپنے صحافتی کیریئر کا  آغاز نیوز اینکر کے طور پر کرچکے ہیں۔  بابر نمل یونیورسٹی اسلام آباد سے میڈیا اور ماس کمیونیکیشن میں  ماسٹرز کررہے ہیں۔  بابر کو بچپن سے نیوز اینکر بننے کا شوق تھا  ۔ اس سے قبل  وہ پاکستان نیشنل کونسل آف آرٹس سے  بھی منسلک رہے ہیں۔ بابر  اپنی تعلیم مکمل کرنے کے بعد ایکٹر کے طور پر بھی کام کرنا چاہتے ہیں۔  آٹھ سال کی عمر سے وہ  ریڈیو پاکستان پشاور میں  چترالی ، پشتوں   اور اردو کے پروگراموں میں جونیئر آرٹسٹ کے طورپر کام پرفارم کرچکے ہیں۔ 

بابر کو ایکٹر بننے کا شوق ہے اپنے اس شوق کو پورا کرنے کے لئے پہلے نیوز کاسٹر (اینکر) بننے کا فیصلہ کیا۔ کیونکہ ایکٹر کو بھی الفاظ ،مواقع اور  حالات کے مطابق  اپنا ایکسپریشن دینا پڑتا ہے جو کہ آگے چل کر ایکٹر بننے میں ان کی مدد کرسکتا ہے۔  اس مقصد  کو پورا کرنے کے لئے یعنی نیوز اینکر بننے کے لئے بابر نے گھر میں پریکٹس کرنی شروع کی۔ اپنی اردو  درست کرنے کے لئے  مسلسل مشق کئے۔ 7 سے 8 ماہ تک اپنی  ریڈنگ سکل، اردو اور ایکسپریشنز کے لئے کام کیا۔  2016 میں نمل یونیورسٹی میں میڈیا  اینڈ ماس کمیونیکیشن میں داخلہ لیا اور نمل ریڈیو میں خبریں پڑھنا شروع کیں۔ استاتذہ کی ہدایات پر  پی ٹی  وی  نیوز میں انٹرنشپ لیا  ، جہاں انہوں نے  مایہ ناز نیوز کاسٹر زبیر احمد صدیقی سے  نیوز کاسٹنگ سیکھ لی۔  اپریل 2017 میں بابر نے روز ٹیلی ویژن کو آڈیشن دیا، اور یہاں ان کی محنت رنگ لے آئی اور روز ٹی وی  نے انہیں نیوز کاسٹر کے طور پر ہائر کر لیا۔  اور یوں بابر پاکستان کے عمر ترین نیوز کاسٹر کے طور پر پاکستان کے قومی چینل سے وابستہ ہوگئے۔ بابر سلطان کی عمر ابھی 20 سے ہے۔ ہم  ان کی کامیابی کے لئے دعاگو ہیں۔ 

بابر سلطان کی ویڈیوز ملاحظہ کریں:  

18 اکتوبر، 2017

وزیر اعظم شاہد خاقان عباسی سے چترال سے رکن قومی اسمبلی افتخار الدین کی ملاقات

وزیر اعظم شاہد خاقان عباسی سے چترال سے رکن قومی اسمبلی  افتخار الدین کی ملاقات 

ملاقات میں چترال کے ترقیاتی منصوبوں کے حوالے سے بات چیت ہوئی۔  چترال کے عوام کی فلاح و بہبود اور علاقے کی تعمیر و ترقی کے حوالے سے اٹھائے جانے والے اقدامات اور ترقیاتی منصوبوں پر اپنے علاقے کی عوام کی جانب سے وزیر اعظم کا شکریہ ادا کرتے ہوئے ایم این اے افتخار الدین نے کہا کہ چترال کی عوام ترقیاتی منصوبوں کے اجرا اور ان پر عمل درآمد کے حوالے سے مسلم لیگ ن کی مشکور ہے اور ترقی کے اس سفر میں حکومت کے ساتھ ہے۔

کرٹیسی: پرائم منسٹر آفس ایف بی پیج



کراچی میں کرایہ کے تنازع پر X-23 منی بس کے کنڈیکٹر نے مسافر کو قتل کردیا

کراچی (نیوز ڈیسک) کراچی کے علاقے بہادر آباد میں منی بس روٹ نمبر X23 کے کنڈیکٹر نے کرائے پر ہونے والے معمولی تنازع پر تشدد کرکے مسافر کو ہلاک کردیا۔ ملزم نے لوہے کے ڈنڈے سے مقتول کو مارا۔ 


پولیس کے مطابق مقتول کی شناخت 30 سالہ عبدالرحمیں کے نام سے ہوئی ہے جسے ایکس 23 منی بس کے کنڈیکٹر نے قتل کردیا ہے۔ کنڈیکٹر کا نام عمر خان ہے۔ کرایے کے معمولی تناز پر عمرخان نے اسے قتل کردیا۔ 

یاد رہے منی بس کا زیادہ سے زیادہ کرایہ 20 روپے ہوتا ہے۔ 

پولیس کا کہنا تھا کہ تنازع کے دوران بس کے ڈرائیور نے مداخلت کی اور اس کے بعد تنازع شدت اختیار کرگیا اور ملزمان بس ڈرائیور اور اس کے کنڈیکٹر عمرخان نے عبدالرحمٰن پر تشدد کیا۔ پولیس کے مطابق عبدالرحمن کے سر پر شدید چوٹیں آئیں تھیں جس سے معلوم ہوتا تھا کہ ملزمان نے دھاتی آلے سے اس کے سر کو نشانہ بنایا تھا

پولیس نے واقعے کی تفصیلات بتاتے ہوئے کہا کہ مقتول کی شناخت 30 سالہ عبدالرحمٰن کے نام سے ہوئی ہے جس کا بہادر آباد میں روٹ ایکس 23 کی بس کے کنڈیکٹر عمر خان کے ساتھ کرایے پر معمولی تنازع ہوا تھا۔

مقتول سیکیوریٹی کمپنی میں ملازم تھا۔  پولیس نے ملزمان کو گرفتار کرلیا ہے

کروڑوں انسان غذائی قلت کا شکار جبکہ ہر سال 750 ارب ڈالرز کی غذا ضائع ہورہی ہے: رپورٹ

(ٹائمز آف چترال ویب ڈیسک) اقوم متحدہ کی ایک رپورٹ میں انکشاف ہوا ہے کہ دنیا میں ہر سال 750 ارب ڈالر کا کھانا ضائع کیا جاتا ہے۔ ایک تہائی غذا دنیا بھر میں ہر سال  کچرے میں چلی جاتی ہے جو کہ دو ارب افراد کا پیٹ بھرنے کے لیے ہو سکتاہے اس کی مالیت750 ارب ڈالرز کا ہوتا ہے ۔



یہ غذائیں کھیتوں سے میز تک پہنچنے کے ہر مرحلے میں ضائع کی جاتی ہیں اور اکثر اوقات تو ان کی شکل اور ضائقہ پسند نہ آنے پر کوڑے میں ڈال دیا جاتا ہے۔  کھیتوں میں اچھی نظر نہ آنے والی فصل کو سڑنے کے لیے چھوڑ دیا جاتا ہے، دکانوں میں لوگ داغ لگے پھلوں اور سبزیوں کو مسترد کردیتے ہیں اور گھروں میں ہم بچی ہوئی غذا دوبارہ کھانے سے انکار کردیتے ہیں۔ 

ورڈلڈ فوڈ ڈے اس لئے منایا جاتا ہے کہ اس معاملے کے حوالے سے شعور اجاکر کیا جائے، اس ضیاع کو روک کر دنیا سے بھوک کا خاتمہ کیا جاسکے۔

پاکستان میں گلیشیئر پگھل نہیں بڑھ رہے ہیں، دریاؤں میں پانی کی سات فیصد کمی کا خدشہ: بی بی سی کی رپورٹ


موسمیاتی تبدیلی کے زیرِ اثر دنیا بھر میں درجۂ حرارت بڑھنے کے باعث گلیشیئر پگھل رہے ہیں، لیکن پاکستان کے شمالی علاقوں کی برفانی چوٹیوں پر درجۂ حرارت کم ہونے کی وجہ سے گلیشیئر بڑھ رہے ہیں۔

عالمی سطح پر سائنس دانوں کے لیے تو یہ اچھی خبر ہو لیکن عام پاکستانیوں کے لیے یہ خبر اس لیے اچھی نہیں ہے کیونکہ گلیشیئر پگھلنے کی رفتار کم ہونے کی وجہ سے دریاؤں میں پانی کم آ رہا ہے اور آنے والے برسوں میں پاکستانی دریاؤں میں پانی کی سات فیصد تک کمی دیکھی جا سکتی ہے۔


یہ بات ایریزونا یونیورسٹی میں پاکستانی گلیشیئروں پر تحقیق کرنے والے سائنس دانوں کے ایک گروپ نے بدھ کے روز شائع ہونے والے اپنے تحقیقی مقالے میں بتائی ہے۔

ایک پاکستانی اور تین امریکی سائنس دانوں نے پاکستان کے ہمالیہ، قراقرم اور ہندو کش پہاڑوں پر واقع گلیشیئروں میں پچھلے 50 برسوں کے دوران ہونے والی تبدیلیوں کا ڈیٹا اکٹھا کر کے اس پر اپنی تحقیق کی بنیاد رکھی ہے۔

ایریزونا یونیورسٹی میں پاکستانی گلیشیئروں پر ڈاکٹریٹ کرنے والے فرخ بشیر نے اپنے تین امریکی پروفیسروں شُوبِن زِنگ، ہوشن گپتا اور پیٹر ہیزنبرگ کے ساتھ مل کر یہ تحقیق کی ہے۔

اس تحقیق پر مبنی فرخ بشیر کا مقالہ امریکی جیو فزیکل یونین نامی سائنسی جرنل میں شائع ہوا ہے جس میں دکھایا گیا ہے کہ پاکستانی گلیشیئروں پر موسمیاتی تبدیلی کا اثر ذرا مختلف انداز میں ہو رہا ہے۔

تحقیق سے ثابت ہوا ہے کہ پاکستانی پہاڑی چوٹیوں پر واقع گلیشیئر باقی دنیا کے گلیشیئروں کے برعکس بڑھ رہے ہیں۔
یہ گلیشیئر دنیا بھر میں بر اعظم انٹارکٹیکا کے علاوہ دنیا بھر میں سب سے بڑے گلیشیئر مانے جاتے ہیں اور پاکستان کو پانی کی فراہمی کا سب سے بڑا ذریعہ ہیں۔

اس وجہ سے اس امریکی تحقیق کا کہنا ہے کہ گلیشیئروں کے اپنی جگہ پر قائم رہنے یا بڑھنے کی وجہ سے ان گلیشیئروں سے نکلنے والے دریاؤں میں پانی کی مقدار بھی کم ہونے کا خطرہ ہے۔

رپورٹ کے خالق اور پاکستانی محکمۂ موسمیات کی جانب سے یونیورسٹی آف ایریزونا کے سکالر فرخ بشیر نے بی بی سی کو بتایا ہے کہ اس غیر معمولی صورتحال کی وجہ سے پاکستانی دریاؤں میں پانی کی فراہمی سات فیصد تک کم ہو سکتی ہے۔

سائنس دانوں کی ٹیم نے حساس آلات سے گلیشیئر پگھلنے کی رفتار جانچییاد رہے کہ یہ گلیشیئر پاکستان میں دریاؤں کے سب سے بڑے نظام سندھ کا منبع ہونے کے علاوہ بہت سے دیگر دریاؤں اور جھیلوں کے لیے بھی پانی فراہم کرتے ہیں۔
سائنس دان پاکستانی گلیشیئروں کے ماحول میں پائی جانے والی اس غیر معمولی صورتحال کو ’قراقرم ایناملی‘ کا نام دیتے ہیں۔ یعنی عالمی سطح پر موسمیاتی تبدیلی جو اثرات لا رہی ہے، پاکستان کے اس علاقے میں اس کے الٹ حالات دیکھے جا رہے ہیں۔

پاکستانی گلیشیئروں پر تحقیق کرنے والے سائنس دانوں کا کہنا ہے کہ گلیشیئروں بڑھنے کی وجہ درجۂ حرارت میں کمی کے علاوہ اس علاقے میں بادلوں اور نمی کا ہونا اور تیز ہواؤں کا نہ چلنا ہے۔

پاکستانی گلیشیئروں پر ہونے والی یہ سب سے بڑی اور منظم تحقیق ہے۔ اس دوران فرخ بشیر کی ٹیم کئی مرتبہ ان گلیشیئروں پر خود بھی گئی اور پاکستان کے محکمہ موسمیات کے 50 سالہ اعداد و شمار سے بھی مدد لی ہے۔


اصل سورس پر پڑھنے کے لئے یہاں کلک کریں

17 اکتوبر، 2017

گزشتہ دنوں پاک فوج کے کیپٹن سمیت 4 جوان شہید ، جبکہ 3 زخمی ہوئے


راولپنڈی (ویب ڈیسک) گزشتہ دنوں کرم ایجنسی میں بارودی مواد کے دھماکے کے نتیجے میں کیپٹن سمیت 4 سیکیورٹی اہلکار شہید اور 3 زخمی ہوگئے۔  پاک فوج کے شعبہ تعلقات عامہ ISPR  کے مطابق کرم ایجنسی کے سرحدی علاقے خرلاچی میں سرچ آپریشن کے دوران پہلے سے نصب بارودی مواد کے پھٹنے سے فوجی افسر سمیت 4 اہلکار شہید اور تین زخمی ہوگئے۔ شہید اور زخمی ہونے والے اہلکار کرم ایجنسی سے غیر ملکیوں کی بازیابی کے بعد وہاں اغوا کاروں کی تلاش کرنے والی سرچ آپریشن ٹیم کا حصہ تھے۔ 

آئی ایس پی آر کی جانب سے جاری کردی تفصیلات کے مطابق شہید فوجی جوانوں میں کیپٹن حسنین، سپاہی سعید باز، سپاہی قادر اور سپاہی جمعہ خان جب کہ زخمیوں میں نائیک انور ، سپاہی ظاہر اور لانس نائیک شیر افضل شامل ہیں۔ 

بارودی دھماکے میں شہید ہونے والے فوجی جوانوں کی نماز جنازہ ایف سی گراؤنڈ میں ادا کی گئی جس کے بعد میتیں ان کے آبائی علاقوں کو روانہ کردی گئی ہیں۔ شہدا کی نماز جنازہ میں کور کمانڈر پشاور نذیر احمد بٹ، جی او سی میجر جنرل اطہر عباسی، بریگیڈئیر علیم اختر، پولیٹیکل ایجنٹ بصیر خان اور سول انتظامیہ کے افسران نے شرکت کی۔ 



چترال : منشیات کے خلاف مہم۔ بھاری تعداد میں چرس اور شراب تلف کردی گئی

چترال ( ٹائمز آف چترال نیوز) منشیات کے خلاف مہم۔ بھاری تعداد میں چرس اور شراب تلف کردی گئی۔ بمبوریت، ریمبور، ایون اور کوغذی مین منشیات فروشوں کے خلاف کاروائیاں کی گئیں اور وافر مقداد میں چرس اور شراب برآمد کرکے تلف کردی گئی۔ یہ منشیات گزشتہ مہنیوں مختلف جگہوں سے چھاپوں کے دورات برآمد کی گئی تھیں۔ ایڈیشنل اسسٹنٹ کمشنر چترال رخسانہ جبین کی موجودگی میں تلف کردی گئیں۔ 


ایڈیشنل اے سی رخسانہ نے اس اس موقع پر کہا کہ چترال سے منشیات کو ختم کرنے کی کوشش کر رہے ہیں ، ہمارا ٹارگٹ منشیات کے وہ بڑے کاروباری ہیں جو منشیات کو اپنے چھوٹے منشیات فروشوں تک پہنچانے مختلف طریقے استعمال کرتے ہیں۔ انہوں نے مزید کہا  کہ ضلع کے اندر منشیات پر قابو پانے کیلئے ہر ممکن کوششیں کی جارہی ہیں۔ اورکافی حد تک اس میں کامیابی بھی ہوئی ہے ۔ تاہم منشیات کا مکمل خاتمہ عوام کے تعاون کے بغیر ممکن نہیں۔


چترال کے مسافر اڈوں میں سہولیات کا فقدان ۔ ڈپٹی کمشنر چترال ارشاد سودھر کا دورہ سہولیات فراہم کرنے کی ہدایت



چترال (نیوز ڈیسک :ٹائمز آف چترال) ٹائمز آف چترال نے گزشتہ دنوں اڈوں کے حوالے سے ایک خبر شائع کی تھی کہ چترال کے اڈوں دیگر سہولیات کے ساتھ واش روم کی سہولت بھی میسر نہیں ہے۔  شاید اسی خبر کا ٹوٹس لیتے ہوئے...

نئے تعینات ہونے والے ڈپٹی کمشنر چترال ارشاد سودھر بروزاتوار اتالیق بازارکے قریب اَڈے کا معائنہ کرنے پہنچ گئے۔ اَڈے کے اندرانتظارگاہ اورواش روم کامعائنہ کرکے اَڈہ اہلکاروں سختی سے ہدایات کردیں کہ ائندہ صفائی کامکمل خیال رکھا جائے تاکہ  مسافروں کو کسی قسم کی تکلیف نہ پہنچنے پائے ۔

اس موقع پر انہوں نے کہا کہ  ہم ’’صفائی نصف ایمان‘‘ کا زبان سے اقرار کرتے ہیں لیکن بدقسمتی سے عمل نہیں کرتے۔ معاشرے میں ہمارا رویہ اس کے بالکل الٹ ہے۔ ہم اپنا کوڑا کرکٹ گلیوں میں ڈال کرگندگی کا ڈھیر لگا دیتے ہیں۔ راہ چلتے بازاروں میں کھاتے پیتے ہوئے لفافے اور شاپنگ بیگ جگہ جگہ  پھینک دیتے ہیں ۔  ہمارے بچے ہمارے اس عمل کی تقلید کرتے ہیں اور یہی طرزِ عمل اپنا لیتے ہیں۔ 

ڈپٹی کمشنر  چترال نے اڈہ مالکان اور ٹرانسپورٹرز کو مسافروں کوہرقسم کی سہولیات دینے کی سختی سے ہدایت کی۔ اس موقع پر ڈی پی اوچترال سیدعلی اکبرشاہ، اسسٹنٹ کمشنر چترال عبدالاکرم ، ڈی ایم او چترال قادرناصراوردیگراہلکارڈپٹی کمشنر کے ہمراہ تھے۔


شہزادہ ریاض الدین عوام نیشنل پارٹی میں شامل ہوگئے

شہزادہ ریاض الدین عوام نیشنل پارٹی میں شامل ہوگئے

چترال: ذرائع کے مطابق چترال ٹاؤن سے تعلق رکھنے والے شہزادہ ریاض الدین عوامی نیشنل پارٹی میں شامل ہوئے ہیں۔ انہوں نے یہ اعلان عوامی نیشنل پارٹی کے دفتر میں پارٹی رہنماؤں سے ملاقات کے بعد کیا ۔



تازہ ترین

مشہور اشاعتیں

تازہ ترین خبریں

Recent Posts Widget